ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

نیوز ایٹین اردو کی خبر کا اثر، محکمہ اقلیتی بہبود نے ائمہ و موذنین کی تنخواہ کے لئے جاری کی دو کروڑ کی گرانٹ

واضح رہے کہ مدھیہ پردیش میں ونڈر سسٹم کا نفاذ ہونے کے سبب اقلیتی اداروں کے ملازمین کو پانچ ماہ سے تنخواہ نہیں مل پارہی تھی۔

  • Share this:
نیوز ایٹین اردو کی خبر کا اثر، محکمہ اقلیتی بہبود نے ائمہ و موذنین کی تنخواہ کے لئے جاری کی دو کروڑ کی گرانٹ
بھوپال: محکمہ اقلیتی بہبود نے ائمہ و موذنین کی تنخواہ کے لئے جاری کی دو کروڑ کی گرانٹ

بھوپال۔ نیوز ایٹین اردو کی خبر نے ایک بار پھر اپنا اثر دکھایا ہے۔ ائمہ وموذنین ،دارالقضا،دارالافتا، مدرسہ حمیدیہ اور مساجد کمیٹی  کے ملازمین کی تنخواہوں کے مسائل کو لیکر نیوز ایٹین کی خبر کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے مدھیہ پردیش اقلیتی فلاح و بہبود نے دو کروڑ کی گرانٹ جاری کردی ہے۔ واضح رہے کہ مدھیہ پردیش میں ونڈر سسٹم کا نفاذ ہونے کے سبب  اقلیتی اداروں کے ملازمین کو پانچ ماہ سے تنخواہ نہیں مل پارہی تھی۔ ایک ہفتہ قبل اپنے مطالبات کو لیکر آئمہ وموذنین نے منترالیہ میں جہاں اعلی حکام سے ملاقات کی تھی وہیں انہوں نے مساجد کمیٹی کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے انتباہ دیا تھا کہ اگر ایک ہفتے میں تنخواہیں جاری نہیں ہوئیں تو وہ اپنے اہل خانہ کے ساتھ منترالیہ کےسا منے دھرنے پر بیٹھیں گے ۔

نیوزایٹین اردو کی خبر کے بعد محکمہ اقلیتی فلاح وبہبود نے دو کروڑ روپیہ کی گرانٹ تنخواہوں کے لئے جاری کردی ہے۔


مساجد کمیٹی کے مہتمم یاسر عرفات کہتے ہیں کہ خداکا شکرہے کہ تنخواہوں کو لیکر محکمہ اقلیتی فلاح و بہبود نے احکام جاری کردیا ہے۔دو کروڑ کی گرانٹ کا لیٹر جاری کیاگیا ہے۔ ان شااللہ دو چار دن کے اندر سبھی ائمہ وموذنین ،مساجد کمیٹی کے ملازمین ،دارالافتا،دارالقضا اور مساجد کمیٹی کے زیر انتظام چلنے والے اسکول اسٹاف کی تنخواہ ان کے اکاؤنٹ میں پہنچ جائے گی۔ نیوز ایٹین اردو کا اس سلسلہ میں جو کردار ہے وہ ناقابل فراموش ہے۔ اس کے لئے نیوز ایٹین اردو کی پوری ٹیم اور دوسرے نیک لوگوں کا جتنا بھی شکریہ ادا کیا جائے وہ کم ہے۔


مدھیہ پردیش کے وزیر برائے اقلیتی فلاح و بہبود رام کھلاون پٹیل کہتے ہیں کہ تنخواہوں میں تاخیر کے لئے سابقہ کمل ناتھ حکومت ذمہ دار ہے۔ سابقہ حکومت نے ونڈر سسٹم کا نفاذ کیا تھا۔ پورے معاملے کو آن لائن لانے میں وقت ضرور لگا مگر سبھی کی تنخواہوں کے لئے احکام جاری کردئے گئے ہیں ۔جب وزیر اقلیتی فلاح و بہبود سے یہ پوچھا گیاکہ حج کمیٹی ،وقف بورڈ کے ملازمین بھی کئی ماہ سے تنخواہوں سے محروم ہیں تو انہوں نے جواب دیاکہ کام جاری ہے سبھی کو جلد سے جلد تنخواہیں جاری ہو جائیں گی۔ بی جے پی سرکار سب کا ساتھ سب کا وکاس کی تعلیم پر عمل کرتی ہے ۔محکمہ کے ذریعہ اقلیتیوں کی ہمہ جہت ترقی کے لئے خاکہ تیار کیا جائے تاکہ انہیں روزگار کے زیادہ سے زیادہ مواقع مل سکیں اور یہ سماج جس کا کانگریس نے صرف ووٹ کے لئےاستعمال کیا ہے وہ بھی خوب ترقی کر سکے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Jan 28, 2021 10:07 PM IST