ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

سی اے اے کی مخالفت میں بی جے پی کونسلر عثمان پٹیل کا استعفیٰ

مدھیہ پردیش کے اندور کےكھجرانا علاقے سے بی جے پی کےکونسلر عثمان پٹیل نے بی جے پی کے شہر صدرگوپی كرشن کو اپنا استعفیٰ سونپ دیا۔

  • Share this:
سی اے اے کی مخالفت میں بی جے پی کونسلر عثمان پٹیل کا استعفیٰ
سی اے اے کی مخالفت میں بی جے پی کونسلرکا استعفیٰ: تصویر: ٹوئٹر

اندور: مدھیہ پردیش کے اندور کےكھجرانا علاقے سے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ایک کونسلر نے شہریت ترمیمی قانون (سی اے اے) کی مخالفت میں آج یہاں پارٹی کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا۔ شہر کے كھجرانا علاقے سے کونسلر عثمان پٹیل نے بی جے پی کے شہر صدرگوپی كرشن کو اپنا استعفیٰ سونپ دیا۔ انہوں نےکہا کہ وہ سی اےاے، این آر سی اور این پی آر کی مخالفت کرتے ہیں۔ اسی کی مخالفت انہوں نے اپنا استعفیٰ دیا ہے۔


مدھیہ پردیش کے اندور کے كھجرانا علاقے سے بی جے پی کےایک کونسلر نےشہریت ترمیمی قانون کی مخالفت میں آج یہاں پارٹی کی رکنیت سے استعفی دے دیا۔
مدھیہ پردیش کے اندور کے كھجرانا علاقے سے بی جے پی کےایک کونسلر نےشہریت ترمیمی قانون کی مخالفت میں آج یہاں پارٹی کی رکنیت سے استعفی دے دیا۔


بی جے پی نگر صدر گوپي كرشن نے بتایا کہ بی جے پی کے تمام کارکنوں کو پارٹی میں شامل ہونے اور چھوڑنےکا حق ہے۔ انہوں نے کہا کہ عثمان پٹیل پارٹی کے سینئرلیڈر تھے، بدقسمتی ہےکہ وہ ملک کے مفاد میں بنے قانون کو سمجھ نہیں سکے۔ واضح رہے کہ شہریت ترمیمی قانون کے خلاف پورے ملک میں بڑے پیمانے پراحتجاج ہورہا ہے۔ یہی نہیں دہلی کے اسمبلی انتخابات میں بھی یہ موضوع بن گیا۔ دہلی کے شاہین باغ علاقے میں جاری احتجاج کو انتخابی موضوع بھی بنایا گیا۔


نیوز ایجنسی یو این آئی کے ان پٹ کے ساتھ
First published: Feb 08, 2020 02:14 PM IST