ہوم » نیوز » No Category

نیشنل ہیرالڈ معاملے میں مظاہرہ کرنے والے 30 کانگریسی کارکنان گرفتار

بھوپال: نیشنل ہیرالڈ معاملے میں مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال کے روشن پورا چوراہے پر آج بغیر اجازت احتجاج و مظاہرہ کرنے والے کانگریس کے 30 کارکنوں کو گرفتار کر لیا گیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Dec 19, 2015 05:42 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
نیشنل ہیرالڈ معاملے میں مظاہرہ کرنے والے 30 کانگریسی کارکنان گرفتار
بھوپال: نیشنل ہیرالڈ معاملے میں مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال کے روشن پورا چوراہے پر آج بغیر اجازت احتجاج و مظاہرہ کرنے والے کانگریس کے 30 کارکنوں کو گرفتار کر لیا گیا۔

بھوپال: نیشنل ہیرالڈ معاملے میں مدھیہ پردیش کی راجدھانی بھوپال کے روشن پورا چوراہے پر آج بغیر اجازت احتجاج و مظاہرہ کرنے والے کانگریس کے 30 کارکنوں کو گرفتار کر لیا گیا۔


جهانگيرآباد کے پولیس سپرنٹنڈنٹ سلیم خان نے بتایا کہ بغیر اجازت کے احتجاج کرنے والے کانگریس کے 30 کارکنوں کو گرفتار کیا گیا ہے جن میں چار خواتین بھی شامل ہیں۔ تاہم بعد میں پولیس نے تمام کارکنوں کو رہا کر دیا ۔


دوسری طرف ریاستی کانگریس کے ترجمان کے کے مشرا نے بتایا کہ نیشنل ہیرالڈ معاملے پر کانگریس کارکن وزیر اعظم نریندر مودی کا پتلا لے کر جا رہے تھے تبھی پولیس نے انہیں گرفتار کر لیا۔ انہوں نے الزام لگایا کہ نیشنل ہیرالڈ کے معاملے میں مرکز کی حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی)انتقامی جذبے سے کانگریس صدر سونیا گاندھی اور نائب صدر راہل گاندھی کو پھنسانے کی کوشش کر رہی ہے۔


انہوں نے بتایا کہ اس معاملے میں آج ریاست بھر میں کانگریس کے کارکنان احتجاج و مظاہرہ کر رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ سيهور ضلع ہیڈکوارٹر میں کانگریس کے ریاستی صدر ارون یادو کی قیادت میں کانگریسی کارکنان احتجاج کرنے جا رہے تھے تبھی پولیس نے انہیں روکا اور ان کے قبضے سے وزیر اعظم کا پتلا چھین لیا۔

First published: Dec 19, 2015 05:42 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading