உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    چوڑی والے کی پٹائی کے بہانے تھانہ گھیرنے والوں کا نکلا پاکستانی کنکشن

    وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا کہنا ہے کہ جن لوگوں نے چوڑی والا کی پیٹائی کو لیکر اندور کے تھانہ بان گنگا کا رات میں گھیراؤ کیا تھا ان میں سےجن چار لوگوں کو گرفتار کیاگیا ہے وہ نہ صرف اندور میں بڑی واردات کرنے والے تھے بلکہ ان کے کنکشن پاکستان سے جڑے ہوئے ہیں ۔

    وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا کہنا ہے کہ جن لوگوں نے چوڑی والا کی پیٹائی کو لیکر اندور کے تھانہ بان گنگا کا رات میں گھیراؤ کیا تھا ان میں سےجن چار لوگوں کو گرفتار کیاگیا ہے وہ نہ صرف اندور میں بڑی واردات کرنے والے تھے بلکہ ان کے کنکشن پاکستان سے جڑے ہوئے ہیں ۔

    وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا کہنا ہے کہ جن لوگوں نے چوڑی والا کی پیٹائی کو لیکر اندور کے تھانہ بان گنگا کا رات میں گھیراؤ کیا تھا ان میں سےجن چار لوگوں کو گرفتار کیاگیا ہے وہ نہ صرف اندور میں بڑی واردات کرنے والے تھے بلکہ ان کے کنکشن پاکستان سے جڑے ہوئے ہیں ۔

    • Share this:
    اندور تھانہ بان گنگا کے گووند نگر علاقہ میں چوڑی فروش تسلیم کی چند لوگوں  کے ذریعہ کی جانے والی پیٹائی سبھی کو یاد ہوگی لیکن اب اس معاملے میں مدھیہ پردیش حکومت نے ایک نئے انکشاف کا اعلان کیا ہے ۔ وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا کہنا ہے کہ جن لوگوں نے چوڑی والا کی پیٹائی کو لیکر اندور کے تھانہ بان گنگا کا رات میں گھیراؤ کیا تھا ان میں سےجن چار لوگوں کو گرفتار کیاگیا ہے وہ نہ صرف اندور میں بڑی واردات کرنے والے تھے بلکہ ان کے کنکشن پاکستان سے جڑے ہوئے ہیں ۔ وزیر داخلہ نے گرفتار کئے گئے لوگوں کے تار پاکستان سے جڑنے کے ساتھ اسد الدین اویسی کی پارٹی سے جوڑے ہونے کا بھی انکشاف کیا ہے۔
    واضح رہے کہ تیئس اگست کو اندور بان گنگا کے گووند نگر علاقہ میں اتر پردیش کے ہردوئی کے رہنے والے تسلیم کی چند لوگوں نے اس لئے پیٹائی کی تھی کہ تسلیم ایک ہندو بستی میں چوڑی بیچ رہا تھا اور اس نے اپنی پہچان چھپائی تھی ۔ جب یہ بات اندور کے عام لوگوں کو معلوم ہوئی تھی تو اسی رات بڑی تعداد میں لوگوں نے تھانہ بان گنگا اندور کا گھیراؤ کرکے شرپسند عناصر کے خلاف کاروائی کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔واقعہ کے ایک ہفتے بعد آج وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا نے اندوAll Postsر تھانہ بان گنگا کا گھیراؤ کرنے والوں میں چار لوگوں کا لنک پاکستان سے جوڑے ہونے کے ساتھ اسد الدین اویسی کی پارٹی سے جڑے ہونے کا انکشاف کیا ہے ۔
    وزیر داخلہ ڈاکٹر نروتم مشرا کا کہتے ہیں کہ چوڑی والا کے واقعہ کے بعد جن لوگوں کے ذریعہ تھانہ کا گھیراؤ کیاتھاان میں سے التمش سمیت چار لوگوں کو گرفتار کیاگیا ہے ۔ان کے پاس سے قابل اعتراض ویڈیواور آڈیو ملے ہیں جو صوبہ کے امن و سکون کو خراب کرنے کے لئے کافی ہیں۔جو وہ وقت وقت پر جاری کرتا۔اس کے تار پاکستان سے جڑے ہونے کے ثبوت اس کے وہاٹس اپ اور فیس بک سے برآمد ہوئی ہیں۔چار لوگوں کی گرفتاری دفعہ ایک سو ترپن کے تحت کی گئی ہے  اور ان چاروں لوگوں سے تفتیش جاری ہے ۔اسد الدین اویسی کی پارٹی سے بھی گرفتار کئے گئے لوگوں کے تعلق ہیں ۔

    وہیں کانگریس ایم ایل اے عارف مسعود نے پورے معاملے کی سی بی آئی جانچ کا مطالبہ کیا ہے ۔ عارف مسعود کا کہنا ہے کہ حکومت کی نیت صاف ہے تو اسے اندور،اجین،ریوا اور دوسرے شہروں میں جو ہجومی تشدد ہوا ہے اس کی سی بی آئی جانچ کرانا چاہیے ۔ اندور میں پولیس نروتم مشرا کے اندور پہنچنے سے قبل چوڑی والا کو لیکر الگ کہانی بتاتی ہے اور جب نروتم  مشرا پہنچتے ہیں تو دوسری کہانی پیش کی جاتی ہے ۔ حکومت کا جو رویہ سے اس سے شر پسندوں کے حوصلہ بلند ہو رہے ہیں ۔
    بھوپال سے مہتاب عالم پی رپورٹ
    Published by:Sana Naeem
    First published: