ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

جھارکھنڈ اسمبلی انتخابات : چوتھے مرحلہ میں 15 اسمبلی سیٹوں پر سخت سیکورٹی کے درمیان ووٹنگ جاری

جھارکھنڈ میں چوتھے مرحلے کی 15 اسمبلی سیٹوں کے لئے سخت سکیورٹی انتظامات کے درمیان ووٹنگ جاری ہے ۔

  • Share this:
جھارکھنڈ اسمبلی انتخابات : چوتھے مرحلہ میں 15 اسمبلی سیٹوں پر سخت سیکورٹی کے درمیان ووٹنگ جاری
جھارکھنڈ : چوتھے مرحلہ میں 15 اسمبلی سیٹوں پر سخت سیکورٹی کے درمیان ووٹنگ جاری

جھارکھنڈ میں چوتھے مرحلے کی 15 اسمبلی سیٹوں کے لئے سخت سکیورٹی انتظامات کے درمیان ووٹنگ جاری ہے ۔ صبح 11 بجے تک 28.55 فیصد ووٹنگ ہوئی ۔ ووٹنگ صبح سات بجے شروع ہوئی ، جو شام پانچ بجے تک جاری رہے گی ۔ ریاستی الیکشن دفتر ذرائع نے یہاں بتایا کہ چوتھے مرحلے کے لئے مدھوپور، دیوگھر (ریزرو)، بگودر، جموا ( ریزرو)، گندے، گریڈیہہ، ڈمري، بوکارو، چندركياري ( ریزرو )، سندري، نرسا، دھنباد، جھریا، ٹنڈي اور باگھ مارا میں سخت حفاظتی انتظامات کے درمیان آج صبح سات بجے پولنگ شروع ہو گئی ، جو میں شام پانچ بجے تک چلے گی ۔


ان پندرہ سیٹوں میں سے بگودر، جموا، گریڈیہہ، ڈمري اور ٹنڈي اسمبلی حلقہ میں صبح سات بجے سے شام تین بجے تک رائے دہندگان اپنے ووٹ کے حق کا استعمال کر سکیں گے ۔ وہیں، مدھو پور، دیوگھر، گنڈے ، بوکارو، چندن كياري، سندري، نرسا، دھنباد، جھریا اور باگھ مارا سیٹ کے لئے صبح سات سے شام پانچ بجے تک پولنگ ہوگی ۔ جن اسمبلی سیٹوں کے لیے ووٹنگ کے اختتام کا وقت شام تین اور پانچ بجے تک ہے، وہاں اس وقت تک موجود تمام ووٹر ووٹ ڈال سکیں گے۔


چوتھے مرحلے میں 23 خواتین سمیت کل 221 امیدوار انتخابی میدان میں ہیں ۔ اس کے تحت بوکارو سیٹ سے سب سے زیادہ 25 امیدوار انتخابی میدان میں ہیں تو نرسا سیٹ کے لئے سب سے کم آٹھ امیدوار انتخاب لڑ رہے ہیں ۔ ان کی قسمت کا فیصلہ 4785009 ووٹر آج شام پانچ بجے تک 6101 پولنگ مراکز پر اپنے ووٹ کے حق کا استعمال کر کے الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) میں قید کر دیں گے ۔ ووٹروں میں 2540794 مرد، 2244134 خواتین 81 خواجہ سرا اور 95795 نئے ووٹر شامل ہیں۔ شہری علاقے میں 1805 اور دیہی علاقوں میں 4296 پولنگ بوتھ بنائے گئے ہیں ۔


ریاستی الیکشن دفتر ذرائع نے بتایا کہ الیکشن کے متعلق 2122 پولنگ مراکزپر ویب كاسٹنگ کا انتظامات کیا گیا ہے ۔ وہیں، 183 ماڈل پولنگ اسٹیشن اور 70 خواتین آپریٹنگ پولنگ مراکز بنائے گئے ہیں ۔ انتخابات میں ریزرو سمیت کل 9902 بیلٹ یونٹ، 7628 کنٹرول یونٹ اور 7931 ووٹر ویری فائبل پیپر آڈٹ ٹریل (وي وی پیٹ ) کا استعمال کیا جا رہے ۔

جن اسمبلی سیٹوں کے لئے 16 یا اس سے زیادہ امیدوار ہیں، وہاں دو ای وی ایم کا استعمال کیا جا رہا ہے ۔ اس کے تحت بوکارو، سندري، دھنباد اور جھریا میں ایک سے زیادہ ای وی ایم کا استعمال ہو رہا ہے ۔ ووٹنگ کے سلسلے میں سکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں ۔ اس مرحلے میں جن اسمبلی سیٹوں کے لیے انتخابات ہو رہا ہے، اس میں سے کئی نکسل متاثرہ ہیں ۔ اس کی وجہ سے انتہائی حساس اور حساس پولنگ مراکز کی حفاظت کے لئے پولیس فورس تعینات کی گئی ہے ۔

پولنگ مراکز کو نکسل اور غیر نکسل بنیاد پر حساس اور انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنوں کے زمرے میں رکھا گیا ہے ۔ نکسل متاثرہ علاقوں میں 587 انتہائی حساس اور 405 حساس پولنگ ا سٹیشن ہیں ۔ وہیں، غیر نکسل علاقوں میں انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنوں کی تعداد 546 اور حساس پولنگ اسٹیشنوں کی تعداد 2665 ہے ۔ ان کے علاوہ عام پولنگ مراکز کی تعداد 1898 ہے ۔ حساس اور انتہائی حساس پولنگ اسٹیشنوں میں سکیورٹی فورس کے جوان تعینات کئے گئے ہیں ۔
First published: Dec 16, 2019 11:30 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading