உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Mob Lynching Bill: جھارکھنڈ سرکار کے ماب لنچنگ بل کو گورنر نے بھیجا واپس، اٹھایا یہ بڑا سوال

    Jharkhand Mob Lynching Bill:  جھارکھنڈ اسمبلی سے پاس ہونے کے تقریبا دو ماہ بعد ماب لنچنگ بل منظوری کیلئے راج بھون بھیجا گیا تھا ۔ یہ بل گزشتہ سال 21 دسمبر کو اسمبلی سے پاس ہوا تھا ۔ حالانکہ اب اس بل کو گورنر نے سرکار کو واپس بھیج دیا ہے ۔

    Jharkhand Mob Lynching Bill: جھارکھنڈ اسمبلی سے پاس ہونے کے تقریبا دو ماہ بعد ماب لنچنگ بل منظوری کیلئے راج بھون بھیجا گیا تھا ۔ یہ بل گزشتہ سال 21 دسمبر کو اسمبلی سے پاس ہوا تھا ۔ حالانکہ اب اس بل کو گورنر نے سرکار کو واپس بھیج دیا ہے ۔

    Jharkhand Mob Lynching Bill: جھارکھنڈ اسمبلی سے پاس ہونے کے تقریبا دو ماہ بعد ماب لنچنگ بل منظوری کیلئے راج بھون بھیجا گیا تھا ۔ یہ بل گزشتہ سال 21 دسمبر کو اسمبلی سے پاس ہوا تھا ۔ حالانکہ اب اس بل کو گورنر نے سرکار کو واپس بھیج دیا ہے ۔

    • Share this:
      رانچی : جھارکھنڈ حکومت کے ماب لنچنگ بل کو راج بھون نے واپس کردیا ہے ۔ راج بھون نے بل کے ہندی اور انگریزی ورزن میں تفاوت پایا ہے ۔ ساتھ ہی بل میں دو یا دو سے زیادہ لوگوں کو بھیڑ مانا گیا ہے ، جبکہ راج بھون کا ماننا ہے کہ موجودہ بل میں بھیڑ کی تعریف قانون کے مطابق نہیں ہے ۔ بھیڑ کی تعریف کو پھر سے کرنے کی ضرورت ہے ۔

      جھارکھنڈ اسمبلی سے پاس ہونے کے تقریبا دو ماہ بعد ماب لنچنگ بل منظوری کیلئے راج بھون بھیجا گیا تھا ۔ یہ بل گزشتہ سال 21 دسمبر کو اسمبلی سے پاس ہوا تھا ۔ حالانکہ اب اس بل کو گورنر نے سرکار کو واپس بھیج دیا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: سنجے دت کی پرویز مشرف سے ملاقات کی تصویر وائرل، سوشل میڈیا پر بھڑکے لوگ


      سرکار کے اس بل میں جرمانہ کے ساتھ ساتھ املاک کی قرقی اور تین سال سے عمر قید تک کی سزا کا بندوبست ہے ۔ اگر ماب لنچنگ میں کسی کی موت ہوجاتی ہے تو قصوروار کو عمرقید تک کی سزا ہوگی ۔ سنگین چوٹ آنے پر دس سال سے عمر قید تک کی سزا کا بندوبست ہے ۔ اکسانے والوں کو بھی قصوروار مانا جائے گا اور انہیں تین سال کی سزا ہوگی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : پاکستان میں میٹنگ کیلئے او آئی سی نے حریت کانفرنس کو کیا مدعو، ہندوستان نے لگائی پھٹکار


      بی جے پی بتا رہی کالا قانون

      بی جے پی اس بل کی مسلسل مخالفت کررہی ہے ۔ اس کو کالا قانون بتا رہی ہے ۔ بل پاس ہونے کے دن بھی بی جے پی لیڈر سی پی سنگھ نے کہا تھا کہ ریاستی سرکار جلد بازی میں اقلیتوں کو خوش کرنے کیلئے یہ بل لا رہی ہے ۔

      پانچ سال میں 46 واقعات

      بتادیں کہ جھارکھنڈ میں گزشتہ پانچ سالوں میں ماب لنچنگ کے 46 واقعات پیش آئے ہیں ۔ ان میں سے گیارہ معاملات میں 51 لوگوں کو عمرقید کی سزا ہوچکی ہے ۔ حالانکہ ان واقعات میں کتنے لوگوں کی جان گئی ، یہ سرکار کی جانب سے نہیں بتایا گیا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: