உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Khargone Clash: اسد الدین اویسی کا شیوراج حکومت پر تلخ تبصرہ ، کہی یہ بڑی بات

    Youtube Video

    Khargone Clash: اسد الدین اویسی نے لکھا کہ یاد رکھیں کہ آپ طاقت کے نشے میں مست ہو کر اور قانون شکنی کر کے غریبوں کے گھر برباد کر رہے ہیں ۔ آج حکومت تمہاری ہے کل نہیں رہے گی ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : مدھیہ پردیش کے کھرگون میں لوگوں کے مکانات اور دوکان منہدم کئے جانے پر ایم آئی ایم سربراہ اسدالدین اویسی نے ریاست کی بی جے پی حکومت کو نشانہ بنایا ہے ۔ اویسی نے ٹویٹ کیا ہے ، جس میں انھوں نے کہا ہے کہ ایم پی میں ہجوم ایک منصوبہ بند طریقے سے قانون کی حکمرانی پر غلبہ حاصل کرچکا ہے۔ انھوں نے ایم پی کے وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اگرچہ آپ کا نظریہ مساجد کی بے حرمتی اور بزرگوں پر حملوں کو جائز قرار دیتا ہے، لیکن یہ مت بھولیں کہ آپ آئینی عہدے پر بیٹھے ہیں، عوام کی جان و مال کی حفاظت آپ کی ذمہ داری ہے۔ اویسی نے مزید لکھا کہ یاد رکھیں کہ آپ طاقت کے نشے میں مست ہو کر اور قانون شکنی کر کے غریبوں کے گھر برباد کر رہے ہیں ۔ آج حکومت تمہاری ہے کل نہیں رہے گی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے : بی جے پی کی بڑی جیت، ایس پی کا نہیں کھلا کھاتہ، 40 سال بعد دوہرائی گئی یہ تاریخ


      قابل ذکر ہے کہ کھرگون میں رام نومی کے موقع پر ہوئے تشدد کے بعد ریاستی حکومت ناجائز قبضوں کے نام پر عام لوگوں کے مکانات اوردکانیں منہدم کررہی ہے۔ یہ کارروائی اُن علاقوں میں کی جارہی ہے جہاں رام نومی کے جلوس پر ایک مخصوص طبقہ پر مبینہ طور پر پتھراؤ کاالزام لگایا گیا ہے۔ اب ناجائز قبضوں کا خیال حکومت کو اب کیوں آیا ہے، اس کا جواب خود حکومت ہی دے سکتی ہے۔

       

      یہ بھی پڑھئے:  16سال کے نوجوان کی نکل آئی 'پونچھ'، دیکھ کر ڈاکٹرس بھی رہ گئے حیران، لوگوں نے بتایا ہنومان کا اوتار!


      اب تک سولہ مکانات اورانتیس دوکانوں کو منہدم کیا جاچکا ہے۔ فی الحال کھرگون میں پولیس کی بھاری نفری تعینات کی گئی ہے۔ پولیس اہلکاروں کی چھٹیوں کو منسوخ کردیا گیا ہے۔ اسکولوں اور کالجوں کے امتحانات ملتوی کردیئے گئے ہیں۔ اب تک تشدد معاملہ میں پولیس گیارہ ایف آئی آر درج کرچکی ہے۔

      دوسری جانب ریاست کے وزیرداخلہ نروتم مشرا کی جانب سے بیان آیا ہے کہ جہاں سے پتھراو ہوا تھا ، اُس جگہ کو پتھروں کے ڈھیرمیں تبدیل کردیں گے۔ کانگریس کے سینئر لیڈر دگ وجے سنگھ نے ٹویٹ کرتے ہوئے حکومت کی کارروائی پر سوال اٹھائے ہیں۔ تو وہیں کانگریس کا وفد آج کھرگون کا دورہ کرنے والا ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: