ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

جھارکھنڈ میں پھرشرپسند بھیڑ نے نوجوان کو بنایا نشانہ، پیٹ پیٹ کردیا نصف مردہ

سرائی کیلا کے حادثہ کے بعد محتاط  کوڈرما پولیس اس معاملے میں کارروائی کرنے میں مصروف ہوگئی ہے۔ مارپیٹ کرنے والے لوگوں کی شناخت کی جارہی ہے۔

  • Share this:
جھارکھنڈ میں پھرشرپسند بھیڑ نے نوجوان کو بنایا نشانہ، پیٹ پیٹ کردیا نصف مردہ
جھارکھنڈ کے کوڈرما میں چوری کےالزام میں مشتعل ہجوم نے ایک نوجوان کی پٹائی کرکے نصف مردہ کردیا۔

جھارکھنڈ میں سرائی کیلا میں موب لنچنگ کی آگ ابھی سرد بھی نہیں کہ کوڈرما میں ایک بار پھرسےایک نوجوان مشتعل ہجوم کے تشدد کا نشانہ بن گیا۔ کوڈرما کےتلیا تھانہ علاقہ کے جھنڈا چوک کےپاس بھیڑنے چوری کےالزام میں ایک نوجوان کوپکڑا اوراس کی جم کرپٹائی کرڈالی۔ وقت رہتےکچھ لوگوں نےاس معاملے میں بیچ بچاوکیا اورمتاثرہ نوجوان کوبچالیا۔ حالانکہ اس دوران نوجوان کوپیٹ پیٹ کرنصف مردہ کردیا گیا۔


سرائی کیلا کےحادثہ سے محتاط کوڈرما پولیس اس معاملے میں کارروائی کرنے میں مصروف ہوگئی ہے۔ مارپیٹ کرنے والے لوگوں کی شناخت کی جارہی ہے۔ ایس ڈی پی او راجندرپرساد نےبتایا کہ ویڈیوفوٹیج کے ذریعہ مارپیٹ کرنے والے لوگوں کی شناخت کی جارہی ہے۔ انہوں نےکہا کہ قانون کواپنے ہاتھ میں لینے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔


سرائی کیلا کے حادثہ سے پولیس متحاط


سرائی کیلا کی طرح اس معاملے میں بھی پٹائی کا ویڈیووائرل ہورہا ہے۔ پولیس کے پاس بھی یہ ویڈیو ہے۔ اسی کی بنیاد پرآگے کی تفتیش کی جارہی ہے۔ واضح رہے کہ سرائی کیلا کے کھرساوں تھانہ علاقہ کےدھاتکی ڈیہہ گاوں میں گزشتہ 17 جون کی رات کو موٹرسائیکل چوری کےالزام میں تبریزانصاری نامی نوجوان کو شرپسندوں نے باندھ کررات بھرپیٹا۔ صبح اسے پولیس کےحوالےکردیا۔ 22 جون کوتبریزکی سرائی کیلا صدراسپتال میں موت ہوگئی۔ اس حادثہ کی ایس آئی ٹی جانچ چل رہی ہے۔ اب تک 11 لوگوں کوگرفتارکیا گیا ہے۔

وزیراعظم بھی موب لنچنگ پرظاہرکرچکے ہیں افسوس

پارلیمنٹ سے لے کر سڑکوں تک یہ معاملہ اٹھایا گیا تھا۔ موب لنچنگ کے خلاف تمام سیاسی جماعتوں کے ا راکین پارلیمنٹ نے لوک سبھا اورراجیہ سبھا میں آوازاٹھائی تھی۔ ساتھ ہی سڑکوں پر بھی اس معاملے کو لے کر لوگ آگئے تھے۔ اس معاملے پروزیراعظم نریندرمودی نے راجیہ سبھا میں سرائی کیلا کےحادثہ پرافسوس کا اظہار کرتے ہوئےکہا کہ اس حادثہ سے پورے جھارکھنڈ کو بدنام کرنا صحیح نہیں ہے۔ انہوں نےکہا کہ اس معاملے کے قصورواروں کوسخت سزا ملنی چاہئے۔ انہوں نے موب لنچنگ کےاس حادثہ پرافسوس بھی ظاہرکیا تھا۔
مکیش کمارکی رپورٹ

First published: Jun 27, 2019 11:37 PM IST