உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Bhopal News: مساجد کمیٹی پر مرجر ایگریمنٹ کی خلاف ورزی کرنے کا الزام، جانئے کیا ہے پورا معاملہ

    Bhopal News: مساجد کمیٹی پر مرجر ایگریمنٹ کی خلاف ورزی کرنے کا الزام، جانئے کیا ہے پورا معاملہ

    Bhopal News: مساجد کمیٹی پر مرجر ایگریمنٹ کی خلاف ورزی کرنے کا الزام، جانئے کیا ہے پورا معاملہ

    Madhya Pradesh News : جمعیت علما کا کہنا ہے کہ ریاست بھوپال جوموجودہ میں راجدھانی بھوپال کے ساتھ رائیسین اور سیہور اضلاع پر مشتمل تھی اس کی سبھی مساجد میں امام اور موذن کے ساتھ پیش امام کا تقرر کیا جانا تھا ، مگر مساجد کمیٹی کے ذریعہ پیش امام کی تقرری کو پوری طرح سے فراموش کردیا گیا ہے۔

    • Share this:
    بھوپال : بھوپال میں مساجد کمیٹی کا قیام انڈین یونین اور ریاست بھوپال کے بیچ ہوئے انضمام ریاست کے معاہدے کے تحت عمل میں آیا تھا۔ بھوپال کے آخری فرمانروا نواب حمید اللہ خان اور انڈین یونین کے بیچ ہوئے ہوئے معاہدے کے مطابق حکومت کو ریاست بھوپال کی مساجد کے ائمہ وموذنین اور پیش امام کی تقرری کے ساتھ انہیں ماہانہ نذرانہ بھی پیش کرنا تھا ، لیکن انیس سو انچاس میں ریاست بھوپال اور انڈین یونین کے بیچ ہوئے معاہدے کو مدھیہ پردیش کی سبھی حکومتیں صد فیصد نافذ کرنے سے قاصررہیں ۔ جمعیت علما کا کہنا ہے کہ ریاست بھوپال جوموجودہ میں راجدھانی بھوپال کے ساتھ رائیسین اور سیہور اضلاع پر مشتمل تھی اس کی سبھی مساجد میں امام اور موذن کے ساتھ پیش امام کا تقرر کیا جانا تھا ، مگر مساجد کمیٹی کے ذریعہ پیش امام کی تقرری کو پوری طرح سے فراموش کردیا گیا ہے۔ جمعیت علما کے وفد نے مساجد کمیٹی کے انچارج سکریٹری سے ملاقات کرکے مساجد کمیٹی کے زیر انتظام سبھی مساجد میں مرجر ایگریمنٹ کے مطابق سبھی مساجد میں امام ، موذن کے ساتھ پیش امام کی تقرری کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔

    جمعیت علما ضلع بھوپال کے صدر حافظ محمد اسمعیل بیگ کہتے ہیں کہ اسے وقت کی ستم ظریفی کہا جائے یا مساجد کمیٹی کے ذمہ داران کی نا اہلی کہ آج تک مساجد کمیٹی کے ذریعہ آزادی کے ستر سال بعد بھی مرجر ایگریمنٹ کا صد فیصد نفاذ نہیں کیا جا سکا۔مساجد کمیٹی کی زیر انتظام قریب پانچ سو مساجد ہیں ان میں پیش امام کا تقرر نہیں کئے جانے سے مسلم سماج کا بڑا نقصان ہو رہا ہے ۔ ہم نے مساجد کمیٹی کے انچارج سکریٹری یاسر عرفات سے ملاقات کرکے انہیں مساجد کمیٹی کی سبھی مساجد میں امام وموذن کے ساتھ پیش امام کی تقرری کئے جانے کا مطالبہ کیا ہے ۔

    انہوں نے کہا کہ اس مطالبہ کو لیکر ہم لوگ اقلیتی وزیر سے بھی ملاقات کریں گے اور اگر ہمارے مطالبات پورے نہیں ہوتے ہیں تو سات مارچ سے شروع ہونے والے اسمبلی سیشن کے موقع پر بھی مطالبات کو لیکر دھرنادیں گے ۔ اسی کے ساتھ ہم نے امام و موذنین کی تنخواہ کو ریگولر جاری کرنے اور انہیں رمضان پیکج دینے کا بھی مطالبہ کیا ہے ۔ کئی کئی ماہ میں ائمہ وموذنین کو تنحواہیں جاری ہونے سے انہیں مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

    وہیں مساجد کمیٹی کے انچارج سکریٹری یاسر عرفات کا کہنا ہے کہ فروری ماہ کی تنخواہ سبھی ائمہ وموذنین کو آج جاری کردی گئی ہے ۔ کچھ لوگوں کے ذریعہ مساجد میں پیش امام کی تقرری کو لیکر میمورنڈم دیا گیا ہے ۔ میمورنڈم کو اعلی حکام تک بھیج دیا گیا ہے ۔ محکمہ اقلیتی فلاح و بہبود کے اعلی حکام جو فیصلہ کریں گے اس پر عمل کیا جائے گا ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: