உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Madhya Pradesh: ایم پی کی مسلم قیادت کو نشانہ بنانے پر شروع ہوئی اویسی کی مخالفت

    Madhya Pradesh: ایم پی کی مسلم قیادت کو نشانہ بنانے پر شروع ہوئی اویسی کی مخالفت

    Madhya Pradesh: ایم پی کی مسلم قیادت کو نشانہ بنانے پر شروع ہوئی اویسی کی مخالفت

    Bhopal News : مدھیہ پردیش کی مسلم پسماندگی اور ایک پارٹی سے وابستہ مسلم قیادت کو آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے قومی صدر اسد الدین اویسی کے ذریعہ تنقید کا نشانہ بنائے جانے پر مدھیہ پردیش کی مسلم سماجی تنظیموں نے اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے ۔

    • Share this:
    بھوپال : مدھیہ پردیش کے بلدیاتی انتخابات میں مجلس اتحاد المسلمین کی آمد کے بعد صوبہ کی مسلم قیادت کو لیکر سیاست شروع ہوگئی ہے۔ مدھیہ پردیش کی مسلم پسماندگی اور ایک پارٹی سے وابستہ مسلم قیادت کو آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے قومی صدر اسد الدین اویسی کے ذریعہ تنقید کا نشانہ بنائے جانے پر مدھیہ پردیش کی مسلم سماجی تنظیموں نے اپنے سخت رد عمل کا اظہار کیا ہے ۔ مسلم تنظیموں کا کہنا ہے کہ آزادی سے قبل اور آزادی کے بعد بھی مدھیہ پردیش کے مسلمانوں کے ہر مسائل میں یہاں کی مسلم قیادت ہی کھڑی رہی ہے ۔ اویسی نے بیان تو دیدیا لیکن آج تک ایم پی کے مسلمانوں کے زمینی مسائل جاننے کے لئے کبھی نہیں آئے ہیں ۔

     

    یہ بھی پڑھئے : مسلمانوں کی پسماندگی کیلئے کانگریس اور BJP دونوں کی پالسیاں ذمہ دار


    واضح رہے کہ مدھیہ پردیش کے بلدیاتی انتخابات میں پہلی بار اے آئی ایم آئی ایم نے اپنے امیدوار کھڑے کئے ہیں ۔ مجلس کے امیدواروں کو کامیاب بنانے کے لئے مجلس کے قومی صدر کے ذریعہ مدھیہ پردیش میں انتخابی جلسوں کا انعقاد کیا جا رہا ہے ۔ بھوپال  میں انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے مجلس کے قومی صدر اسد الدین اویسی نے کہا کہ اپنی قیادت کو پیدا کیجئے تاکہ جمہوریت میں آپ کی آواز بلند ہوسکے ۔ ورنہ یاد رکھئے اگر آپ اسی طرح سیاسی سیکولرازم کی غلامی کریں گے  تو جس طرح سے چالیس سال سے آپ کا استحصال ہو رہا ہے اسی طرح سے آپ کے نوجوانوں کا استحصال ہوگا ۔ یہاں پر آپ لوگوں نے جن کو اپنا قائد بنایا تھا، انہوں نے آپ کے لئے برسوں کی قیادت کے بعد بھی کچھ نہیں کیا۔

     

    یہ بھی پڑھئے: Eid Al Adha 2022: ماہ ذوالحجہ کا چاند نظر آگیا، 10 جولائی کو عیدالاضحٰی


    وہیں خان عبدالغفار خان ویلفیئر سوسائٹی نے اسد الدین اویسی کے بیان سے ناراض ہوکر بھوپال نیومارکیٹ انڈین کافی ہاؤس میں پریس کانفرنس کا انعقاد کیا اور مجلس کے قومی صدر کے بیان کی مذمت کی ۔ خان عبد الغفار خان ویلفیئر سوسائٹی ایم پی کے صدر غازی عبد الصمد کا کہنا ہے کہ اویسی صاحب کو یہ نہیں معلوم ہے کہ مدھیہ پردیش کی مذہبی ، سماجی اور سیاسی قیادت نے مسلم قوم کے لئے کیا کیا ہے ۔ کھرگون اور سیندھوا کی بات تو یہ بیان میں کہہ رہے ہیں، لیکن آج تک انہوں نے مدھیہ پردیش میں جہاں کہیں بھی تشدد ہوا ہے، کسی مقام کا دورہ نہیں کیا ہے ۔

    انہوں نے مزید کہا کہ وہ مدھیہ پردیش میں اپنی سیاسی زمین تلاش کر رہے ہیں تو وہ اپنا کام کریں، مگر مسلم قیادت کو اپنے مفاد کے لئے بدنام نہ کریں۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: