ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

جیوترادتیہ سندھیاکی کار پر پتھر سے حملہ، صوبے میں قانونی نظام کا خاتمہ: شیوراج

بی جے پے میں شامل ہوئے سندھیا کے قافلے کو بھوپال میں کالے جھنڈے دکھائے جانے اور ان کے خلاف ہوئی نعرے بازی کو لیکر شیوراج سنگھ چوہان نے کہا کہ ان کی گاڑی کوروکنے کی کوشش کی گئی۔ ساتھ ہی پتھر بھی پھینکے گئے۔ ایسے میں قانونی نظام پوری طرح سے ختم ہوگیا ہے یہ کہنا غلط نہیں ہے۔

  • Share this:
جیوترادتیہ سندھیاکی کار پر پتھر سے حملہ، صوبے میں قانونی نظام کا خاتمہ: شیوراج
بی جے پے میں شامل ہوئے سندھیا کے قافلے کو بھوپال میں کالے جھنڈے دکھائے جانے اور ان کے خلاف ہوئی نعرے بازی کو لیکر شیوراج سنگھ چوہان نے کہا کہ ان کی گاڑی کوروکنے کی کوشش کی گئی۔ ساتھ ہی پتھر بھی پھینکے گئے۔ ایسے میں قانونی نظام پوری طرح سے ختم ہوگیا ہے یہ کہنا غلط نہیں ہے۔

بھوپال مدھیہ پردیش کے سابق وزیر اعلی اور بی جے پی کے سینئر لیڈر شیو راج سنگھ چوہان نے جمعہ کو ریاست کی کانگریس حکومت کو نشانہ بنایا تھا۔ انہوں نے کہا کہ صوبے میں  قانونی نظام کا خاتمہ ہوگیا ہے۔ بی جے پے میں شامل ہوئے سندھیا کے قافلے کو بھوپال میں کالے جھنڈے دکھائے جانے اور ان کے خلاف ہوئی نعرے بازی کو لیکر شیوراج سنگھ چوہان نے کہا کہ ان کی گاڑی کوروکنے کی کوشش کی گئی۔ ساتھ ہی پتھر بھی پھینکے گئے۔ ایسے میں قانونی نظام پوری طرح سے ختم ہوگیا ہے یہ کہنا غلط نہیں ہے۔

اس دوران  شیوراج سنگھ چوہان نے کہا کہ اگر ریاست میں جیوترادتیہ سندھیاکے ساتھ ایسا ہی کچھ ہوسکتا ہے تو اس کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ صورتحال کس حد تک خراب ہے۔ تو یہ کہنا درست ہوگا کہ ان تمام وجوہات کی وجہ سے حکومت اپنی اکثریت کو کھو یاہے۔ اس کے ساتھ ہی سندھیاکو دکھائے گئے کالے جھنڈوں اور ان کے قافلے پر ہوئے پتھراؤ کو لیکر شیوراج سنگھ چوہان نےجانچ کی مانگ کی ہے۔


First published: Mar 14, 2020 07:49 AM IST