உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    MPBSE 12th Result 2021 : بورڈ نتائج سے ناخوش طلبہ کو ملے گا ایک موقع، ستمبر میں ہوگا خصوصی امتحان

    MPBSE 12th Result 2021 : بورڈ نتائج سے ناخوش طلبہ کو ملے گا ایک موقع، ستمبر میں ہوگا خصوصی امتحان

    مدھیہ پردیش کے وزیر برائے اسکول تعلیم اندر سنگھ پرمار کہتے ہیں کہ بارہویں بورڈ کے نتائج کا اعلان کیا گیا ہے۔ نتائج کو بیسٹ آف فائیو کی بنیاد پر جاری کیا گیا ہے۔

    • Share this:
    بھوپال : مدھیہ پردیش بارہویں بورڈ کے نتائج کا اعلان کردیا گیا ہے ۔ بارہویں بورڈ کے نتائج کا اعلان مد ھیہ پردیش کے وزیر برائے اسکول تعلیم اندر سنگھ پرمار نے کیا ہے ۔ بارہویں بورڈ کے امتحان میں سات لاکھ پچاس ہزار طلبہ شامل ہوئے تھے ۔ بورڈ کی تاریخ میں یہ پہلا موقعہ ہے ، جب بارہویں بورڈ کے امتحانات میں کوئی بھی طالب علم فیل نہیں ہوا ہے ۔ بلکہ سبھی طلبہ پاس ہوئے ہیں ۔ یہی نہیں بورڈ کی تاریخ میں یہ بھی پہلا موقع ہے ، جب ٹاپر اور ٹاپ ٹن طلبہ کی میرٹ لسٹ جاری نہیں کی گئی ہے ۔ بورڈ نے نتائج کا اعلان انٹرنل اسسمنٹ پری بورڈ کی بنیاد پر کیا ہے ۔ بیسٹ آف فائیو کی بنیاد پر بورڈ نے نتائج کو جاری کیا ہے ۔

    واضح رہے کہ کورونا قہر کے سبب حکومت نے دسویں اور بارہویں بورڈ کے امتحانات کا انعقاد نہیں کرانے کا فیصلہ کیا تھا ۔ دسویں بورڈ کے نتائج کا اعلان پہلے ہی کیا جا چکا ہے ۔ آج بارہویں بورڈ کے نتائج کا اعلان کیا گیا ہے ۔ بورڈ کے نتائج کو لیکر جہاں طلبہ میں خوشی دیکھی جا رہی ہے تو وہیں کچھ ایسے بھی طلبہ ہیں نتائج کے پیٹرن سے خوش نہیں ہیں ۔

    یہاں چیک کرسکتے ہیں اپنا ریزلٹ

    مدھیہ پردیش کے وزیر برائے اسکول تعلیم اندر سنگھ پرمار کہتے ہیں کہ بارہویں بورڈ کے نتائج کا اعلان کیا گیا ہے۔ نتائج کو بیسٹ آف فائیو کی بنیاد پر جاری کیا گیا ہے۔ بورڈ امتحان میں چھ لاکھ چھپن ہزار ایک سو اڑتالیس طلبہ شریک ہوئے تھے ۔ بورڈ امتحان باون فیصد طلبہ فرسٹ ڈویزن ، چالیس فیصد طلبہ سیکنڈ ڈویزن اور  سات فیصد  طلبہ ٹھرڈ ڈیویزن سے پاس ہوئے ہیں ۔ یہ سبھی لوگ جانتے ہیں کہ کورونا قہر کے سبب بورڈ امتحان کا انعقاد نہیں کرانے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔

    اسی کے ساتھ جو طلبا بورڈ امتحان کے نتائج سے خوش نہیں ہیں یا اپنی رینکنگ کو لیکر انہیں اطمینان نہیں ہے اور وہ اپنی رینکنگ میں سدھار کر سکتے ہیں ، ان کے لئے  بورڈ کے ذریعہ ستمبر میں خصوصی امتحان کا انعقاد ہوگا ۔ یہ طلبا یکم اگست سے دس اگست کے بیچ ایم پی آن لائن سے فارم داخل کر سکتے ہیں ۔ حکومت کو طلبہ کی صحت کے ساتھ ان کی تعلیم کی بھی فکر ہے ۔ گیارہویں اور بارہویں کی کلاس کو چھبیس جولائی سے پچاس فیصد کے ساتھ کووڈ ضابطہ کے بیچ شروع کیا جا چکا ہے ۔ نویں اور دوسری کلاس کو شروع کرنے کو لے کر غور جاری ہے ۔ اگست کے پہلے ہفتے میں اس کا اعلان کردیا جائے گا ۔

    بارہویں بورڈ کے نتائج میں بھوپال کے عظیم خان فرسٹ ڈویزن سے پاس تو ہوگئے ہیں ، لیکن نتائج کو لے کر خوش نہیں ہیں ۔ عظیم کا کہنا ہے کہ کورونا قہر میں ان کے والدین نے ان کی تعلیم کو لے کر خصوصی کوچنگ کا نہ صرف انتظام کیا تھا بلکہ کورونا قہر میں گھر سے باہر کی دنیا کیا ہوتی ہے،  انہیں معلوم نہیں ۔ عظیم کہتے ہیں وہ اپنا نام میرٹ لسٹ میں دیکھنا چاہتے تھے ، مگر افسوس وہ حواب چکنا چور ہوگیا ۔ حکومت نے سبھی کو ایک صف میں کھڑا کردیا اور سب پاس ہوگئے ہیں ۔

    وہیں انکت کہتے ہیں کہ اس نتیجہ کو کیا کہیں جہاں پر کوئی فیل ہی نہیں بلکہ سب پاس ہیں ۔ جب سب پاس ہیں تو امتحان کیسا ؟ حکومت کو کم سے کم میرٹ لسٹ تو جاری کرنا چاہئے تھا ۔ طلبہ کے بیچ مقابلہ ضروری ہے ۔ اب اس کے پیچھے حکومت کی جو بھی منشا ہو وہ تو وہ جانے لیکن پڑھنے والے طلبہ کے لئے اچھا نہیں ہے۔

    وہیں راشد کہتے ہیں کہ ہم حکومت کو مبارکباد دینا چاہیں گے کہ کورونا قہر میں اس نے خاص انتظام کر کے طلبہ کو خاص موقع دیا ہے ۔ وہ طلبہ جو کورونا قہر میں ذہنی تناؤ کا شکار تھے وہ سب پاس ہو گئے ہیں اور جنہیں اچھی پڑھائی کا موقعہ ملا تھا ، انہوں نے فرسٹ ڈویزن میں نام درج کروایا ہے ۔ میری رائے سے سبھی اتفاق کریں یہ ضروری تو نہیں ہے ، مگر میں بہت خوش ہوں ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: