ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

مدھیہ پردیش : کانگریس کا 20 مئی کو شیوراج سرکار کےخلاف یوم سیاہ منانے کا اعلان

بھوپال ایم ایل اے عارف مسعود کہتے ہیں کہ کورونا قہر میں عوام کو طبی سہولیات فراہم کرنے کا معاملہ ہو، اسپتالوں میں بیڈ اور آکسیجن کے مہیاکرنے کی بات ہو یا پھر کورونا مریضوں کے لئے ضروری ریمڈیسور آکسیجن فراہم کرنے کی بات رہی ہو، شیوراج سرکار ہر محاذ پر ناکام رہی ہے ۔

  • Share this:
مدھیہ پردیش : کانگریس کا 20 مئی کو شیوراج سرکار کےخلاف یوم سیاہ منانے کا اعلان
مدھیہ پردیش : کانگریس کا 20 مئی کو شیوراج سرکار کےخلاف یوم سیاہ منانے کا اعلان

بھوپال : مدھیہ پردیش میں ایک جانب کورونا قہر ، بلیک فنگس کے مریضوں کی بڑھتی تعداد اور دواؤں کی قلت نے حکومت کی مشکلات میں اضافہ کررکھا ہے تو وہیں دوسری جانب سیاسی پارٹیاں حکومت کو گھیرنے کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتی ہیں ۔ کورونا مریضوں کے لئے اسپتالوں میں بیڈ کی کمی ، آکسیجن کی کمی اور ریمڈیسیور انجیکشن کی کالا بازاری کی شکایتوں پر شیوراج سنگھ حکومت نے کسی طور قابوپایا ہی تھا کہ بلیک فنگس کے مریضوں کے لئے ضروری انجیکشن کی کالا بازاری کے ساتھ اپوزیشن کے نشتر نے اس کی مشکلات میں اضافہ کردیا ہے۔ ناقص طبی خدمات ، دواؤں کی کالا بازاری اور بڑھتی مہنگائی کے خلاف کانگریس نے بیس مئی کو یوم سیاہ منانے کا فیصلہ کیا ہے ۔


بھوپال ایم ایل اے عارف مسعود کہتے ہیں کہ کورونا قہر میں عوام کو طبی سہولیات فراہم کرنے کا معاملہ ہو، اسپتالوں میں بیڈ اور آکسیجن کے مہیاکرنے کی بات ہو یا پھر کورونا مریضوں کے لئے ضروری ریمڈیسور آکسیجن فراہم کرنے کی بات رہی ہو، شیوراج سرکار ہر محاذ پر ناکام رہی ہے ۔ مہنگائی آسمان پر ہے اور سرکار میں شامل لوگوں کے نام جس طرح سے دواؤں کی کالا بازاری میں سامنے آرہے ہیں اور سرکار خاموش تماشائی بنی ہوئی ہے ، اس سے عوام کی مشکلات میں اور اضافہ ہوگیا ہے ۔


ساتھ ہی ساتھ عوام سے اپیل کی گئی ہے کہ چونکہ شہر میں کورونا کرفیو کا نفاذ ہے ، اس لئے اپنے اپنے گھروں میں رہتے ہوئے حکومت کے خلاف احتجاج میں شامل ہوں ۔ حکومت کی ناکامی کے خلاف اپنے گھروں پر کالے جھنڈے لگا کر اپنے اتحاد کا مظاہرہ کریں ۔ حکومت لاک ڈاؤن پر لاک ڈاؤن میں اضافہ کرتی جا رہی ہے ، لیکن اسے عوام کی مشکلات کا خیال نہیں ہے ۔ ہم نے کرائسس مینجمنٹ کمیٹی کا بائیکاٹ اسی لئے کیا ، کیونکہ اس میں عوامی نمائندوں کی بات سنی نہیں جاتی ہے بلکہ سرکار کا فیصلہ سنایا جاتا ہے ۔ کورونا قہر میں ہماری مانگ ہے کہ عوام کے بجلی اور پانی بل کو معاف کرنے کے ساتھ انہیں مفت راشن پہنچایا جائے ۔


وہیں مدھیہ پردیش کے وزیر برائے میڈیکل ایجوکیشن وشواس سارنگ کہتے ہیں کہ عوامی فلاح اور قومی مفاد کی باتیں کانگریس کے لوگوں کو اچھی نہیں لگتی ہیں ۔ کانگریس کی اعلی قیادت ہو یا نیچے کے لوگ ، یہ کہیں بھی عوام کے بیچ خدمت کرتے نظر نہیں آرہے ہیں ۔ کانگریس سے عوام بہت دور جا چکے ہیں ، تو کانگریس کے لوگ عوام کو گمراہ کررہے ہیں ۔  یہ لاشوں پر سیاست کرتے ہیں ۔ عوام سب جانتے ہیں یہ ان کے بہکاوے میں آنے والے نہیں ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 19, 2021 07:17 PM IST