உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مدھیہ پردیش : ہیڈ گوار اور دین دیال اپادھیائے کو میڈیکل ایجوکیشن نصاب میں پڑھانے کا فیصلہ

    مدھیہ پردیش : ہیڈ گوار اور دین دیال اپادھیائے کو میڈیکل ایجوکیشن نصاب میں پڑھانے کا فیصلہ

    مدھیہ پردیش : ہیڈ گوار اور دین دیال اپادھیائے کو میڈیکل ایجوکیشن نصاب میں پڑھانے کا فیصلہ

    شیوراج سنگھ حکومت کے ذریعہ میڈیکل ایجوکیشن کے نصاب میں کی جانے والی تبدیلی کو کانگریس نے اسے بی جے پی کے بھگوا ایجنڈا سے تعبیر کرتے ہوئے ویاپم بدعنوانی جیسے سانحہ سے تعبیرکیا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
    بھوپال : مدھیہ پردیش میں شیوراج سنگھ حکومت نے میڈیکل ایجوکیشن کے نصاب میں اب آرایس ایس کے بانی ہیڈگوار اور بی جے پی کے دین دیال اپادھیائے کی سوانح کو پڑھانے کا فیصلہ کیا ہے ۔ محکمہ میڈیکل ایجوکیشن نے میڈیکل ایجوکیشن کے فاؤنڈیشن کورس کو تیار کرنے کے لئے پانچ رکنی کمیٹی بھی تشکیل دیدی ہے ۔ شیوراج سنگھ حکومت کے ذریعہ میڈیکل ایجوکیشن کے نصاب میں کی جانے والی تبدیلی کو کانگریس نے اسے بی جے پی کے بھگوا ایجنڈا سے تعبیر کرتے ہوئے ویاپم بدعنوانی جیسے سانحہ سے تعبیرکیا ہے۔

    مدھیہ پردیش کے وزیر برائے میڈیکل ایجوکیشن وشواس سارنگ کہتے ہیں کہ میڈیکل ایجوکیشن کے نصاب میں ایتھکس کو بھی پڑھانا ہے اور ہم نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ ہمارے ملک کی وہ عظیم شخصیات جنہوں نے اس ملک کی تہذیب و ثقافت ،اس ملک کی وراثت اور اس ملک کے وچار کو آگے بڑھانے کا کام کیا ہے۔ جنہوں نے آزادی کی لڑائی میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور عظیم شخصیات نے آزادی کو قائم رکھنے کے لئے اپنی زندگیاں قربان کیں ، انہیں ہم میڈیکل ایجوکیشن کے نصاب میں شامل کر کے ڈاکٹرس کو پڑھائیں گے۔

    انہوں نے کہا کہ ہمارا ماننا ہے کہ اس ملک کو اگرترقی کی راہ پر گامزن کرنا ہے تو ہمیں ویلیو بیسڈ ایجوکیشن کو اپنانا ہوگا۔ اس لئے ہم نے طے کیا ہے کہ ڈاکٹر ہیڈگوار جو خود ایک ڈاکٹر تھے،جنہوں نے اس ملک کی آزادی میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔ جنہوں نے اس ملک میں ذہن سازی کرکے محبین وطن کو تیار کیا ان کو ہم پڑھائیں گے ۔اسی طرح سے پنڈت دین دیال اپادھیائے جن کی تعلیم کی پوری دنیا مرید ہے ان کو نصاب کا حصہ بنائیں گے ۔اسی طرح ڈاکٹر بھیم راؤ امبڈیکر جی جنہوں نے اس ملک کا آئین تخلیق کیا۔ اسی طرح سوامی ویویکا نندی جی ، مہارشی اروند چرک جی جیسی عظیم شخصیات کو نصاب کا حصہ بنارہے ہیں ۔ اس سال سے فاؤنڈیشن کورس میں ان عظیم شخصیات کی سوانح شامل نصاب ہوں گی ۔

    وہیں مدھیہ پردیش کانگریس نے شیوراج سنگھ حکومت کے ذریعہ میڈیکل ایجوکیشن نصاب کی تبدیلی کو بی جے پی کے بھگوا ایجنڈے سے تعبیر کیا ہے ۔ مدھیہ پردیش کانگریس کے ترجمان بھوپیندر گپتا کہتے ہیں کہ اسی شیوراج سنگھ حکومت نے میڈیکل ایجوکیشن کے میدان میں ایک ریکارڈ بنایا تھا کہ یہاں پر بنا امتحان دیئے بغیر بھی ڈاکٹر بنا جا سکتا ہے ۔ ویاپم کے توسط سے یہ بھی دنیا کو بتایا تھا کہ کوئی دوسرا شحص امتحان دے کر کسی تیسری کو بھی ڈاکٹر بنا سکتا ہے۔ اب ایک نیا تجربہ مدھیہ پردیش کے میڈیکل ایجوکیشن وزیر کر رہے ہیں کہ وہ آر ایس ایس کے لیڈران کے بارے میں میڈیکل ایجوکیشن کے طلبہ کو پڑھائیں گے اور ان کے نظریات کو پڑھنے سے پوری دنیا ہندوستان کو وشو گروتسلیم کرلے گی ۔ اگر آزادی کے آندولن کے بارے میں نئی نسل کو پڑھانے کی ضرورت ہے تو اسے اسکول تعلیم کے نصاب کا حصہ بنایا جانا چاہیئے اور آزادی کے ہیرو کی سچی تاریخ پڑھانا چاہیئے لیکن جہاں پر ماہرین کو پیدا کرنے کی ضرورت ہے،جس فیلڈ سے میڈیکل کے ماہرین کو تعلیم دی جانی ہے وہاں پراس پر اس طرح کا نصاب تیار کرنے کا مقصد کیا ہے یہ کسی سے چھپا نہیں ہے۔

    انہوں نے کہا کہ بہتر ہے کہ سرکار سبھی میڈیکل کالجوں میں شاخا لگائیں تو طلبا خود بتادیں گے کہ ہم انہیں پڑھنا چاہتے ہیں کہ نہیں ۔ ساری دنیا میں نصاب بنانے کا کام سبجیکٹ کے ماہرین کے ذریعہ کیا جاتا ہے ، لیکن مدھیہ پردیش میں شیوراج حکومت نے وزیروں کے ذریعہ نصاب بنانے کی پہل کی ہے ، جو اپنے آپ میں ایک بڑا انقلاب ہے ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: