ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

ماہ رمضان میں کشمیری طلبہ کو ان کے گھر بھیجنے کا مطالبہ ، مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کو لکھا گیا خط

مدھیہ پردیش کے بھوپال ، اندوراور گوالیار میں جموں و کشمیر کے طلبہ بڑی تعداد میں تعلیم حاصل کرتے ہیں ۔

  • Share this:
ماہ رمضان میں کشمیری طلبہ کو ان کے گھر بھیجنے کا مطالبہ ، مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کو لکھا گیا خط
امیت شاہ نے فوجیوں کی شہیدوں پر کہا- درد کو الفاظ میں بیان نہیں کیا جاسکتا

پورے ملک میں کورونا وائرس کے قہر کی وجہ سے جہاں لاک ڈاؤن سخت سے سخت کیا جا رہا ہے وہیں مختلف ریاستوں میں لاک ڈاؤن کے سبب پھنسے طلبہ کو ان کے وطن بھیجنے کا مطالبہ بھی زور پکڑتا جا رہا ہے ۔ اتر پردیش ، مدھیہ پردیش اور دوسری ریاستوں نے ملک کے مختلف صوبوں میں زیر تعلیم اپنے طلبہ کو وطن واپس لانے کا سلسلہ بھی شروع کردیا ہے ۔ کانگریس کے سینئر لیڈر اور مدھیہ پردیش کے سابق وزیر اعلی  دگ وجے سنگھ نے مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کو خط لکھ کر مدھیہ پردیش کے مختلف اضلاع میں زیر تعلیم کشمیری طلبہ کو ماہ رمضان میں ان کے وطن بھیجنے کا مطالبہ کیا ہے ۔


دگ وجے سنگھ نے اپنے خط میں حوالہ دیتے ہوئے لکھا ہے کہ جس طرح سے جنوبی ہند کے تیرتھ یاتریوں کو اور راجستھان کے کوٹہ سے مدھیہ پردیش کے ہزاروں طلبہ کو ان کے گھر بھیجنے کا کام کیا گیا ہے ، اسی طرح سے مدھیہ پردیش کے مختلف اضلاع میں تعلیم حاصل کرنے والے جموں اینڈ کشمیر کے طلبہ کو بھی ان کے گھر بھیجنے کے لئے قدم اٹھایا جائے ۔ دگ وجے سنگھ نے اپنے خط میں یہ بھی لکھا ہے کہ ان طلبہ کو مقررہ پروٹوکول کے مطابق جموں اینڈ کشمیر لے جاکر پہلے انہیں کوارنٹائن کیا جائے اور اس کے بعد انہیں ان کے گھر کے لئے روانہ کیا جائے ۔




واضح رہے کہ مدھیہ پردیش کے  بھوپال ، اندوراور گوالیار میں جموں و کشمیر کے طلبہ بڑی تعداد میں تعلیم حاصل کرتے ہیں ۔ دگ وجے سنگھ نے اپنے خط میں حوالہ دیتے ہوئے لکھا کہ موجودہ میں مدھیہ پردیش میں جموں و کشمیر کے طلبہ کی تعداد چار سو کے قریب ہے  اور مشکل کی اس گھڑی میں حکومت کے ذریعہ اگر انہیں ان کے گھر بھیج دیا جاتا ہے ، تو ان پر او ران کے والدین پر ایک بڑا احسان ہوگا ۔
First published: Apr 23, 2020 11:31 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading