ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

سالگرہ کے بہانے گھر بلاکر گرل فرینڈ کے ساتھ کیا ایسا انتہائی گھنونا کام ، لاک ڈاون میں ہوئی تھی دوستی

متاثرہ لڑکی ودیشا کی رہنے والی ہے جبکہ ملزم رائیسین کا ہے ۔ لاک ڈاون کے دوران بھوپال آکر دونوں ایک ہی دوکان میں کام کررہے تھے ۔ لڑکی نے لڑکے کے خلاف آبروریزی اور بلیک میلنگ کا معاملہ درج کرایا ہے ۔

  • Share this:
سالگرہ کے بہانے گھر بلاکر گرل فرینڈ کے ساتھ کیا ایسا انتہائی گھنونا کام ، لاک ڈاون میں ہوئی تھی دوستی
سالگرہ کے بہانے گھر بلاکر گرل فرینڈ کے ساتھ کیا ایسا انتہائی گھنونا کام ، لاک ڈاون میں ہوئی تھی دوستی

مدھیہ پردیش میں سرکار کے سبھی دعووں کے باوجود جرائم کے واقعات تھمنے کا نام نہیں رہے ہیں ۔ خاص طور پر لڑکیوں کی آبروریزی کے واقعات پولیس کیلئے چیلنج بن رہے ہیں ۔ راجدھانی کے لوگ ابھی جہانگیر آؓباد کے واقعہ کو بھولے بھی نہیں تھے کہ اشوکا گارڈن علاقہ میں پھر ایک لڑکی ہوس کا شکار ہوگئی ہے ۔ لڑکی کے دوست نے سالگرہ کے بہانے اس کو بلایا اور پھر اس کی آبروریزی کی ۔ لڑکی نے نوجوان کے خلاف آبروریزی اور بلیک میلنگ کا معاملہ درج کرایا ہے ۔


ایس ایس پی راجیش سنگھ بھدوریا نے بتایا کہ لڑکی ودیشا ضلع کی رہنے والی ہے جبکہ لڑکا رام شیام گرجر رائیسین ضلع کا رہنے والا ہے ۔ دونوں لاک ڈٓون کے وقت اپنے گاوں سے بھوپال آئے اور ایک ہی دوکان میں کام کرنے لگے ۔ کام کرتے کرتے دونوں کی دوستی ہوگئی ۔


دوستی گہری ہوگئی اور ملزم رام شیام گرجر روزانہ لڑکی کو اس کے گھر تک بائیک سے چھوڑنے جانے لگا ۔ یہ سلسلہ تقریبا تین مہینوں تک چلتا رہا ۔ لڑکی نے پولیس کو بتایا کہ ملزم نے اس کو سالگرہ کے بہانے کمرے پر بلایا تھا ۔ یہاں پہنچی تو اس کا برتھ ڈے نہیں بلکہ موقع دیکھ کر اس نے زبردستی جنسی تعلقات بنائے ۔ یہی نہیں ، ملزم نے لڑکی کی تصاویر بھی کھینچ لی ۔ اس کے بعد سوشل میڈیا پر انہیں وائرل کرنے کی دھمکی دے کر تین سے چار مرتبہ آبروریزی کی ۔ ملزم شیام گرجر ابھی پولیس کی گرفت سے دور ہے ۔ پولیس کا کہنا ہے کہ جلد ہی ملزم کو گرفتار کرلیا جائے گا ۔


خیال رہے کہ دو دن پہلے ہی جہانگیر آباد میں بھی ایک لڑکے نے خاتون کی آبروریزی کی تھی ۔ ملزم نے دیر رات 35 سال کی خاتون کا منہ دبایا اور گھسیٹ کر دکان میں لے گیا ۔ اس کے بعد اس کے ساتھ مار پیٹ کی اور آبروریزی کی ۔ پولیس نے ملزم کو گرفتار کرلیا تھا ۔ پولیس کا دعوی تھا کہ ملزم نے اپنا جرم قبول بھی کرلیا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jan 17, 2021 05:38 PM IST