ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

اندور میں خاتون قیدی نے جیل کے باتھ روم میں کیا یہ ہوش اڑادینے والا کام، پولیس جانچ جاری

جہیز ہراساں کرنے(Dowry Harassment) کے الزامات کا سامنا کررہی 55 سالہ خاتون قیدی نے منگل کے روز ڈسٹرکٹ جیل (District Jail) میں مبینہ طور پر خود کو پھانسی لگاکر خودکشی کرلی۔

  • Share this:
اندور میں خاتون قیدی نے جیل کے باتھ روم میں کیا یہ ہوش اڑادینے والا کام، پولیس جانچ جاری
جہیز ہراساں کرنے(Dowry Harassment) کے الزامات کا سامنا کررہی 55 سالہ خاتون قیدی نے منگل کے روز ڈسٹرکٹ جیل (District Jail) میں مبینہ طور پر خود کو پھانسی لگاکر خودکشی کرلی۔

اندور (مدھیہ پردیش):  جہیز ہراساں کرنے(Dowry Harassment) کے الزامات کا سامنا کررہی 55 سالہ خاتون قیدی نے منگل کے روز ڈسٹرکٹ جیل  (District Jail) میں مبینہ طور پر خود کو پھانسی لگاکر خودکشی کرلی۔ سیونگیتاگنج پولیس اسٹیشن کے ایک افسر نے بتایا کہ ضلع جیل کے باتھ روم میں انجو سین (55) کی لاش لٹکی ہوئی ملی ہے۔ یہ پھندہ خاتون کی ساڑی اور بلاؤج سے بنایاگیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ پولیس اس کیس کے تمام پہلوؤں کی جانچ کر رہی ہے۔ خاتون کی لاش کو پوسٹمارٹم کے لئے بھیج دیاگیا ہے۔


اس درمیان ڈسٹرکٹ جیل سپرنٹنڈنٹ ادیتی چترودی نے بتایا کہ مبینہ طور پر خودکشی کرنے والی خاتون قیدی 25 جولائی 2019 سے اسی جیل میں بند تھی۔ وہ جہیز ہراساں کرنے کے الزامات کے تحت عدالتی مقدمے کا سامنا کررہی تھی۔ اس کیس میں ان کے شوہر اور بیٹے بھی ملزم ہیں۔ یہ دونوں بھی جیل میں بند ہیں۔


انہوں نےبتایا کہ، "اس قیدی خاتون  نے معمول کے مطابق منگل کی صبح جیل میں چائے۔ناشتہ کیا تھا۔ وہ جیل میں موجود دیگر خواتین قیدیوں کے ساتھ صبح کی نماز میں بھی شامل ہوئی تھیں۔"

First published: Apr 07, 2020 11:16 PM IST