உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مدھیہ پردیش : مدرسہ بورڈ کے طلبہ حکومت کی عدم توجہی کا شکار، سال خراب ہونے کا خطرہ

    مدھیہ پردیش : مدرسہ بورڈ کے طلبہ حکومت کی عدم توجہی کا شکار، سال خراب ہونے کا خطرہ

    مدھیہ پردیش : مدرسہ بورڈ کے طلبہ حکومت کی عدم توجہی کا شکار، سال خراب ہونے کا خطرہ

    حکومت کے احکام کے بعد سی بی ایس سی بورڈ، ایم پی بورڈ کے امتحانات کو منسوخ کر کے انٹرنل اسسمنٹ کی بنیاد پر نتائج کا اعلان کرنے کا فارمولہ تک بنا لیا گیا ہے وہیں دوسری جانب مدھیہ پردیش مدرسہ بورڈ طلبا کے امتحانات کو لے کر محکمہ تعلیم نے ابھی تک غور ہی نہیں کیا ہے۔

    • Share this:
    بھوپال : کورونا قہر میں حکومت کے احکام کے بعد سی بی ایس سی بورڈ، ایم پی بورڈ کے امتحانات کو منسوخ کر کے انٹرنل اسسمنٹ کی بنیاد پر نتائج کا اعلان کرنے کا فارمولہ تک بنا لیا گیا ہے وہیں دوسری جانب مدھیہ پردیش مدرسہ بورڈ  طلبا کے امتحانات کو لے کر محکمہ تعلیم نے ابھی تک غور ہی نہیں کیا ہے۔ حکومت کی عدم توجہی کے سبب جہاں طلبہ کا سال خراب ہونے کا سوال پیدا ہوگیا ہے وہیں طلبہ اور مدارس انتظامیہ نے حکومت کی عدم توجہی کے خلاف اب عدالت سے رجوع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

    مدھیہ پردیش مدرسہ کلیان سنگھ کے سکریٹری صہیب قریشی کہتے ہیں کہ بڑی عجیب بات ہے کہ ایک ہی ریاست میں کورونا قہر کے نام پر محکمہ تعلیم کے ذریعہ دسویں اور بارہویں بورڈ کے طلبہ کے امتحانات کو منسوخ کرتے ہوئے انٹرنل اسسمنٹ کی بنیاد پر ان کے نتائج کو جاری کرنے کا فارمولہ تک تیار کرلیا جاتا ہے اور اسی اسٹیٹ میں مدرسہ بورڈ طلبہ کے امتحانات کو لے کر ابھی تک غور ہی نہیں کیاگیا ہے ۔ طلبہ کے امتحانات کو لے کر ہم لوگ محکمہ تعلیم کے ڈائریکٹر، وزیر تعلیم اندر سنگھ پرمار اور راجیہ اوپن سکول کے ڈائریکٹر سے ملاقات کرچکے ہیں ، لیکن ابھی تک امتحانات کو لیکر کوئی واضح بات نہیں کی جا رہی ہے ۔

    صہیب قریشی کے مطابق آج کی ملاقات کے بعد کہا گیا کہ طلبہ کے امتحانات ہوں گے ۔ اب ایسے میں سوال یہ اٹھتا ہے کہ امتحانات کب ہوں گے اور اگست ستمبر میں امتحانات کا انعقاد ہوتا ہے تو نتیجہ کب آئے گا اور اگر دسمبر تک نتیجہ آتا ہے بھی ہے تو مدرسہ بورڈ طلبہ کو آگے کی کلاس میں کون داخلہ دےگا ۔ ہمارے طلبہ کا پورا سال خر اب ہو جائے گا۔ ہماری مانگ ہے کہ جس طرح سے حکومت نے دسویں اور بارہویں بورڈ کے طلبہ کے امتحانات کو منسوخ کر کے انٹرنل اسسمنٹ کی بنیاد پر نتیجہ جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے تو وہیں مدرسہ بورڈ طلبہ کو بھی سہولیات مہیا کی جائے ۔ نہیں تو ہم لوگ عدالت سے رجوع کرنے کے لئے مجبور ہوں گے  ۔

    وہیں مدھیہ پردیش کے وزیر برائے اسکول تعلیم اندر سنگھ پرمار کہتے ہیں کہ مدرسہ بورڈ طلبہ کے امتحانات کا معاملہ ابھی تک ہمارے سامنے نہیں آیا ہے ۔ آپ نے آج بتایا ہے  تو طلبہ کے مستقبل کے لئے جو بہتر ہو گا وہ قدم اٹھایا جائے گا ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: