உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مسلم پرسنل لا بورڈ خواتین ونگ نے طلاق ثلاثہ پرحکومت کے موقف کی مخالفت کی ، بل واپس لینےکا مطالبہ

    طلاق ثلاثہ مخالف بل کےخلاف آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کی خواتین ونگ لگاتار متحرک ہے اور اجلاس ومظاہروں کا ملک بھر میں اہتمام کر رہی ہے۔

    طلاق ثلاثہ مخالف بل کےخلاف آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کی خواتین ونگ لگاتار متحرک ہے اور اجلاس ومظاہروں کا ملک بھر میں اہتمام کر رہی ہے۔

    طلاق ثلاثہ مخالف بل کےخلاف آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کی خواتین ونگ لگاتار متحرک ہے اور اجلاس ومظاہروں کا ملک بھر میں اہتمام کر رہی ہے۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:
      بھوپال : طلاق ثلاثہ مخالف بل کےخلاف آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کی خواتین ونگ لگاتار متحرک ہے اور اجلاس ومظاہروں کا ملک بھر میں اہتمام کر رہی ہے۔ ایسا ہی ایک جلسہ 20 فروری کو بھوپال میں بھی ہونا طے پایا ہے۔ آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ خواتین ونگ نے حکومت کے ذریعہ لائے جانے والے وومنس پروٹیکشن بل کو مسلم پرسنل لا میں مداخلت سے تعبیر کیا ہے۔
      بھوپال میں منعقدہ پریس کانفرنس میں مسلم پرسنل لا بورڈ کی خواتین ونگ کی اراکین نےطلاق ثلاثہ کے نام پرحکومت کےموقف کوغلط ٹھہراتےہوئےاس بل کو جلد سے جلد واپس لینےکا مطالبہ کیا ہے۔ خواتین ونگ نے اس سلسلہ میں 20 فروری کو بھوپال کے نیلم پارک میں بڑے اجلاس کے انعقاد کا اعلان کیا ہے ۔ اجلاس میں قرار داد پاس کرنے کے بعد گورنر کے توسط سے صدر جمہوریہ کے نام میمورنڈم بھی بھیجا جائے گا۔
      First published: