ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

مدھیہ پردیش : اسپتال کرتے رہے انتظار اور بی جے پی لیڈر آکسیجن ٹینکر کی کرتے رہے پوجا ، مچا ہنگامہ

جام نگر سے مدھیہ پردیش کے لئے جو آکسیجن ٹینکر روانہ کیا گیا ۔ جب وہ اندور پہنچا تو پہلے اسے روک کر اسے غباروں سے سجایا گیا ۔ آکسیجن ٹینکر کی آرتی اتاری گئی اور جب تک وزیر آنہیں گئے تب تک آکسیجن ٹینکر کو روکے رکھا گیا ۔

  • Share this:
مدھیہ پردیش : اسپتال کرتے رہے انتظار اور بی جے پی لیڈر آکسیجن ٹینکر کی کرتے رہے پوجا ، مچا ہنگامہ
مدھیہ پردیش : اسپتال کرتے رہے انتظار اور بی جے پی لیڈر آکسیجن ٹینکر کی کرتے رہے پوجا ، مچا ہنگامہ

بھوپال : مدھیہ پردیش میں کورونا کا قہر اس قدر تشویشناک شکل اختیار کر چکا ہے کہ اسپتالوں میں نئے مریضوں کے داخلے پر پابندی لگا دی ہے ۔ یہ تشویشناک صورتحال کسی ایک شہر میں نہیں بلکہ راجدھانی بھوپال اور اندور سمیت ریاست کے دوسرے شہروں میں بھی دیکھنے کو مل رہی ہیں ۔ اسپتالوں میں آکسیجن اور ریمڈیسیور انجیکشن کی کمی کے چلتے کتنے مریضوں کی موت ہوچکی ہے ۔ آکسیجن کی کمی کو لیکر حکومت کی سطح پر جنگی پیمانے پر کام کیا جا رہا ہے مگر کورونا کے اس قہر میں بھی کچھ لوگ پبلیسٹی کا کوئی موقعہ ہاتھ سے جانے نہیں دیتے ۔


اندور میں بھی کچھ ایساہی دیکھنے کو ملا ۔ جام نگر سے مدھیہ پردیش کے لئے جو آکسیجن ٹینکر روانہ کیا گیا ۔ جب وہ اندور پہنچا تو پہلے اسے روک کر اسے غباروں سے سجایا گیا ۔ آکسیجن ٹینکر کی آرتی اتاری گئی اور جب تک  وزیر آنہیں گئے تب تک آکسیجن ٹینکر کو روکے رکھا گیا ۔ کانگریس کاالزام ہے کہ تین گھنٹے تک آکسیجن ٹینکر کو روک کر بی جے پی لیڈران نے آرتی کی ہے اور پھر اسے روانہ کیا ، جو شرمناک ہے ۔


مدھیہ پردیش کانگریس ترجمان بھوپیندر گپتا کہتے ہیں کہ بی جے پی  لیڈر ہر جگہ آفت میں اپنی پبلیسٹی کا موقع تلاش کر لیتے ہیں ۔ پوری ریاست میں آکسیجن کو لیکر کہرام مچا ہوا اور آکسیجن کی کمی کے چلتے ایک پل مریضوں کورونا مریضوں پر آسمان بن کر ٹوٹ رہا ہے ، لیکن بی جے پی لیڈر آکسیجن ٹینکر روک کر پہلے اس کو سجاتے ہیں پھر آرتی کرتے ہیں اور تقریبا تین گھنٹے تک یہ شرمناک کام کرنے کے بعد ٹینکر روانہ کیا جاتا ہے ۔ شیوراج سنگھ جی نے آکسیجن ٹینکر کو ایمبولنس کا درجہ دیا ہے ۔


کہا گیا تھا کہ آکسیجن ٹینکر کے ساتھ سیکورٹی گارڈ چلے گا ، پھر یہ کون لوگ ہیں جنہوں نے آکیسجن ٹینکر روک کر گھنٹوں پوجا کی اس کے بعد روانہ کیا ۔ میری وزیر اعلی شیوراج سنگھ سے مانگ ہے کہ جو لوگ بھی اسے کے لئے ذمہ دار ہیں ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے اور ریاست کے اسپتالوں میں آکسیجن کی سپلائی یقینی بنایا جائے ۔

وہیں مدھیہ پردیش کے وزیر برائے میڈیکل ایجوکیشن وشواس سارنگ کہتے ہیں کہ جھوٹ بولنا کانگریس کا کام ہے ۔ حکومت اور بی جے پی ورکر ہر لمحہ کورونا مریضوں کے لئے فیلڈ میں کا م کر رہے ہیں ۔ کانگریس کا کوئی لیڈر کہیں پر نکل رہا ہو تو بتائیں ۔ یہ لوگ گھر میں بیٹھ کر صرف ٹویٹ کرتے ہیں اور بیان سوشل میڈیا پر جاری کرتے ہیں ۔ ریاست میں کہیں بھی آکسیجن کی کمی نہیں ہے ۔ حکومت کی سطح پر ہر ممکن کوشش جاری ہے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 26, 2021 08:02 PM IST