உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    مدھیہ پردیش : قومی یکہجتی کی علامت کے طور پر منایاگیا رکشا بندھن کا تہوار

    مدھیہ پردیش : قومی یکہجتی کی علامت کے طور پر منایاگیا رکشا بندھن کا تہوار

    مدھیہ پردیش : قومی یکہجتی کی علامت کے طور پر منایاگیا رکشا بندھن کا تہوار

    گورنر ہاؤس میں ریاست کے گورنر منگوبھائی پٹیل کی کلائی پر معصوم بچیوں نے راکھی باندھی تو سی ایم ہاؤس میں وزیر اعلی شیوراج سنگھ معبصوم بچیوں سے کلائی پر راکھی بندھوائی اور انہیں اپنی دعاؤں سے نوازا ۔

    • Share this:
    بھوپال : مدھیہ پردیش میں رکشا بندھن کا تہوار قومی یکجہتی کی مضبوط علامت کے طور پر منایا گیا ۔ راج بھون سے لیکر سی ایم ہاؤس تک رکشا بندھن تہوار کی دھوم رہی ہے۔ گورنر ہاؤس میں ریاست کے گورنر منگوبھائی پٹیل کی کلائی پر معصوم بچیوں نے راکھی باندھی تو سی ایم ہاؤس میں وزیر اعلی شیوراج سنگھ معبصوم بچیوں سے کلائی پر راکھی بندھوائی اور انہیں اپنی دعاؤں سے نوازا ۔ اسی طرح بھوپال گاندھی بھون میں سرودھرم سدبھاؤنا منچ کے زیر اہتمام رکشا بندھن پر پروگرام کاانعقاد کیابگیا ، جس میں بلا لحاظ قوم وملت سبھی قوموموں کے لوگوں نے شرکت کی اور کثرت میں وحدت کو ہندوستان کی روح سے تعبیر کیا گیا۔

    وزیر اعلی شیوراج سنگھ کہتے ہیں کہ آج کا دن عہد کرنے کا دن ہے ۔ ہم نے بھی عہد کیا ہے کہ ہم اپنی ریاست میں ماؤں، بہنوں اور بیٹیوں کو ہر طرح سے تحفظ فراہم کریں گے ۔ بیٹیوں کی تعلیم اور ہمہ جہت ترقی کے لئے کئی اسکیمیں بنائی گئی ہیں ۔ لاڈلی لکشمی یوجنا، کنیا دان یوجنا اورنکاح یوجنا کو بھی بنایا گیا ہے ، جس سے سبھی لوگ استفادہ کر رہے ہیں ۔

    سرودھرم سدبھاؤنا منچ کے زیر اہتمام بھوپال گاندھی بھون میں منعقدہ پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے منچ کے سکریٹری حاجی محمد ہارون نے کہا کہ کثرت میں وحدت ہمارے ملک ہندوستان کی شان ہے ۔ رکشا بندھن کو ہم لوگ قومی یکجہتی کی علامت کے طور پر منا رہے ہیں ۔ دنیا کے سبھی مذاہب بہنوں اور بیٹیوں کے حقوق کی بات کرتے ہیں ۔ آج کا دن ہمیں اپنے فرائض پر غور کرنے کی تعلیم دیتا ہے ۔ ہم اپنے فرائض کو ادا کریں گے ، تو بہنوں اور بیٹیوں کو حقوق خود بخود مل جائیں گے ۔

    سرو دھرم سد بھاؤنا منچ کے جنرل سکریٹری بودھ دھرم کے مذہبی رہنما بھنتیے شاکیہ پتر ساگر کہتے ہیں کہ ہم سماج میں جس طرح سے کدورتیں بڑھ رہی ہیں اس کو دور کرنے کی ضرورت ہے ۔ سرو درھرم سدبھاونا منچ رکشا بندھن کے مقدس تہوار پر پروگرام کا انعقاد کیا ہے۔ تاکہ سبھی قوموں کے بیچ اتحاد واتفاق کا رشتہ قائم ہو ۔ انسانیت کا فروغ آپسی رواداری سے ہوتا ہے ۔ سبھی لوگ مل کر رہیں اور بھائی بہنوں کے حقوق کو ادا کریں ۔

    وہیں منچ کے نائب صدر پنڈٹ مہیندر شرما کہتے ہیں کہ ہندوستان تو تیج تہوار کا ملک ہے لیکن اس میں رکشا بندھن کا تہوار سب سے الگ ہے ۔ یہ تہوار صرف بھائی بہن کے رشتے ہی مضبوط نہیں کرتا ہے بلکہ انسانیت کے رشتہ کو بھی مضبوط کرتا ہے ۔ جب انسانیت کا رشتہ مضبوط ہوگا توترقی کے راستے خود بخود کھلیں گے ۔ عیسائی مذھب کے مذہبی رہنما فادر آنند مٹنگل کہتے ہیں کہ آج کا دن سبق کو یاد کرنے کا ہے ۔ بھائی بہن میں سال بھر کے اندر اگر کہیں کوئی من موٹاؤ ہو جاتا ہے ،گلے شکوے ہوجاتے ہیں تو اسے بھلا کر آگے بڑھنے کا دن ہے ۔ راکھی کا معمولی دھاگہ زندگی کے مضبوط رشتے کا بندھن ہوتا ہے ۔

    گروچرن ارورا کہتے ہیں کہ رکشابندھن کا مقدس تہوار اپنی خوشیوں کو دوسرے کی خوشیوں پر قربان کر دینے کا نام ہے۔ آج ہم لوگوں نے یہاں پر یہی عہد کیا ہے کہ ہندوستان کے کسی بھی مذہب کی بہن بیٹی ہو اس کی حفاظت کے لئے سب مل کر کام کریں گے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: