ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

کورونا قہر میں بھوپال حمیدیہ اسپتال سے Remdesivir Injections چوری ہونے کا معاملہ

واضح رہے کہ دو ماہ قبل بھوپال کے حیمدیہ اسپتال سے آٹھ سو اسپتال سے آٹھ سو پینسٹھ معاملے چوری ہوئے تھے۔

  • Share this:

کورونا قہر میں بھوپال bhopal کے سب سے بڑے سرکاری حمیدیہ اسپتال (Govt Hamidia Hospita) سے سیکڑوں ریمڈیسور انجیکشن (Remdesivir Injections) چوری ہونے کے معاملے میں جبلپور ہائی کورٹ کے ذریعہ چالان پیش کئے جانے کا حکم جاری کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ دو ماہ قبل بھوپال کے حیمدیہ اسپتال سے آٹھ سو اسپتال سے آٹھ سو پینسٹھ معاملے چوری ہوئے تھے۔ اس معاملے میں بھوپال کے تھانہ کوہ فضا میں معاملہ درج ہونے کے دو ماہ بعد بھی جب حکومت کی پشت پناہی میں پولیس کے ذریعہ کوئی کاروائی نہیں کی گئی تو بھوپال ایم ایل اے عارف مسعود نے معاملے کو لیکر جبلپور ہائی کورٹ سے رجوع کیاتھا۔ عارف مسعود کی عرضی پر سماعت کرتے ہوئے جبلپور ہائی کورٹ نے دفعہ ایک سو تیہتر تعزیرات ہند کے تحت متعلقہ عدالت میں چالان پیش کرنے کی ہدایت دی ہے۔

بھوپال ایم ایل اے عارف مسعود نے ریمڈیسور انجیکشن چوری کے معاملے میں جبلپور ہائی کورٹ کے احکام پر اپنی خوشی کا اظہارکرتے ہوئے کہا ہے کہ ہائی کورٹ کے احکام کے بعد اب خاطیوں کے چہرے بے نقاب ہونگے ۔ ریمڈیسور انجیکشن ایسے وقت میں چوری کئے گئے تھے جب ریاست میں انجیکشن کی قلت تھی اور انجیکشن کی قلت کے سبب کئی مریضوں کی موت ہوگئی تھی۔


حمیدیہ اسپتال سے جو آٹھ سو پینسٹھ انجیکشن چوری ہوئے تھے اس کی سازباز میں با اثر لوگوں کا ہاتھ ہے ۔یہی وجہ ہے کہ معاملے کے دو ماہ بیتنے کے بعد بھی پولیس کے ذریعہ ابتک ان کے خلاف کوئی کاروائی نہیں کی گئی ہے بلکہ معاملہ پر خاتمہ لگانے کی تیاری چل رہی تھی۔انجیکشن کی تفصیل اسپتال کے اسٹور رجسٹرمیں درج ہے ۔ یہ رجسٹر کرائم برانچ کے قبضے میں ہے جس میں کچھ سیاست دانوں کے ساتھ بڑے نوکر شاہوں کے ذریعہ انجیکشن لئے جانے کا تذکرہ ہے ۔ آج تک اس معاملے میں کسی کو گرفتار نہیں کیاجانا بتاتا ہے کہ اس کے پیچھے سازشیں چل رہی ہے ۔مجھے امید ہے کہ ہائی کورٹ کے احکام کے بعد سچ سامنے آئے گا۔

بھوپال سے مہتاب عالم کی رپورٹ

Published by: Sana Naeem
First published: Jun 25, 2021 03:51 PM IST