ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

مدھیہ پردیش : 27 فیصد اوبی سی ریزرویشن پر پابندی برقرار ، جبلپورہائی کورٹ کے فیصلہ پر کانگریس اور بی جے پی کے درمیان سیاست جاری

مدھیہ پردیش میں اوبی سی ریزرویشن میں اضافہ کا فیصلہ سابقہ کمل ناتھ حکومت نے کیا تھا ۔ کمل ناتھ حکومت نے اوبی سی ریزرویشن کو دس فیصد سے بڑھا کر ستائیس فیصد کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔ حکومت کے فیصلہ کے خلاف جبلپور ہائی کورٹ میں تیہتر عرضیاں دائر کی گئی تھیں ، جس پر جبلپور ہائی کورٹ میں آج سماعت کی گئی ۔

  • Share this:
مدھیہ پردیش : 27 فیصد اوبی سی ریزرویشن پر پابندی برقرار ، جبلپورہائی کورٹ کے فیصلہ پر کانگریس اور بی جے پی کے درمیان  سیاست جاری
مدھیہ پردیش : 27 فیصد اوبی سی ریزرویشن پر پابندی برقرار ، جبلپورہائی کورٹ کے فیصلہ پر کانگریس اور بی جے پی کے درمیان سیاست جاری

بھوپال : مدھیہ پردیش میں ستائیس فیصد اوبی سی ریزرویشن کے معاملہ میں جبلپور ہائی کورٹ نے سماعت کرتے ہوئے اوبی سی ریزریشن پر پابندی کو برقرار رکھا ہے۔ جبلپور ہائی کورٹ کی چیف جسٹس کی بینچ معاملے کی سماعت کرتے ہوئے حکومت کی درخواست پر میڈیکل افسرس کی تقرری کو چودہ فیصد اوبی سی ریزرویشن کی بنیاد پر کرنے کی اجازت دی ہے ۔ معاملہ کی اگلی سماعت دس اگست کو ہوگی ۔


واضح رہے کہ مدھیہ پردیش میں اوبی سی ریزرویشن میں اضافہ کا فیصلہ سابقہ کمل ناتھ حکومت نے کیا تھا ۔ کمل ناتھ حکومت نے اوبی سی ریزرویشن کو دس فیصد سے بڑھا کر ستائیس فیصد کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔ حکومت کے فیصلہ کے خلاف جبلپور ہائی کورٹ میں تیہتر عرضیاں دائر کی گئی تھیں ، جس پر جبلپور ہائی کورٹ میں آج سماعت کی گئی ۔


سینئر کانگریس لیڈر پی سی شرما کہتے ہیں کہ کانگریس نے اوبی سی کو ان کا حق دینے کے لئے ستائیس فیصد اوبی سی ریزرویشن اور دس فیصد سوورن طبقے کو ریزرویشن دینے کا اتنظام کیا تھا ، لیکن بی جے پی نے عدالت میں اوبی سی ریزرویشن کے معاملہ میں ٹھیک سے پیروی نہیں کی جس کی وجہ سے عدالت نے ابھی تک روک کو برقرار رکھا ہے۔ اس میں شیوراج سنگھ اور بی جے پی دونوں کی می بھگت ہے ۔ یہ نہیں چاہتے ہیں کہ اوبی سی کو مدھیہ پردیش میں ریزرویشن ملے ۔


وہیں مدھیہ پردیش کے وزیر برائے شہری ترقیات بھوپیندر سنگھ کہتے ہیں کہ کانگریس اوبی سی ریزرویشن کے معاملہ میں صرف سیاست کر رہی ہے ۔ کانگریس نے  پوری تیاری کے ساتھ اوبی سی ریزرویشن کے معاملہ کو پیش نہیں کیا ۔ اگر تیاری کے ساتھ پیش کیا ہوتا تو اس پر عدالت سے اسٹے نہیں ہوتا۔ جب عدالت میں اوبی سی ریزرویشن میں اسٹے ہوا تھا ، تب کانگریس حکومت کے اٹارنی جنرل بھی عدالت میں حاضر نہیں تھے۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کی ریاست میں سرکار آنے کے بعد اس نے اوبی سی ریزرویشن کو سنجیدگی سے لیا ہے اور بی جے پی یہ مانتی ہے کہ اوبی سی کو ستائیس فیصد ریزرویشن ملنا چاہیئے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت نے پوری سنجیدگی کے ساتھ عدالت میں اپنا موقف پیش کیا ہے۔ ہمارے سالیسٹر جنرل ہر پیشی میں حاضر ہوئے۔ بی جے پی  سنجیدگی کے ساتھ یہ چاہتی ہے کہ اوبی سی کو ستائیس فیصد ریزرویشن ملے ، یہ چاہتی ہے اور اس کے لئے عملی اقدامات کر رہی ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jul 13, 2021 08:47 PM IST