ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

مدھیہ پردیش: گورنر نے کمل ناتھ سے فلور ٹیسٹ میں ہاتھ اٹھا کر ووٹنگ کرانے کے لئے کیوں کہا

گورنر نے کمل ناتھ کو گزشتہ روز لکھے گئے خط کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ انہیں بی جے پی کے نمائندوں اور قانون ساز اسمبلی سکریٹریٹ سے ملی اطلاع سے معلوم ہوا ہے کہ اس وقت اسمبلی میں بٹن دبانے کا کوئی نظام موجود نہیں ہے۔ اس عمل کی وجہ سے ووٹنگ ممکن نہیں ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Mar 16, 2020 11:44 AM IST
  • Share this:
مدھیہ پردیش: گورنر نے کمل ناتھ سے فلور ٹیسٹ میں ہاتھ اٹھا کر ووٹنگ کرانے کے لئے کیوں کہا
مدھیہ پردیش: گورنر نے کمل ناتھ سے فلور ٹیسٹ میں ہاتھ اٹھا کر ووٹنگ کرانے کے لئے کیوں کہا

بھوپال۔ مدھیہ پردیش کے گورنر لال جی ٹنڈن نے اسمبلی میں اپنی اکثریت ثابت کرنے کے لئے وزیر اعلی کمل ناتھ کو ہدایت نامہ بھیجنے کے ایک دن بعد ایک اور خط لکھا ہے جس میں اعتماد کے ووٹ سے متعلق ووٹنگ کا عمل ’ہاتھ اٹھا کر‘ کرانے کی ہدایت دی گئی ہے۔ گورنر نے کمل ناتھ کو گزشتہ روز لکھے گئے خط کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ انہیں بی جے پی کے نمائندوں اور قانون ساز اسمبلی سکریٹریٹ سے ملی اطلاع سے معلوم ہوا ہے کہ اس وقت اسمبلی میں بٹن دبانے کا کوئی نظام موجود نہیں ہے۔ اس عمل کی وجہ سے ووٹنگ ممکن نہیں ہے۔


لہذا گورنر نے اعتماد کے ووٹ ’ہاتھ اٹھا کر‘ کرنے کی ہدایت دی ہے۔ یہ بھی ہدایت کی گئی ہے کہ ووٹنگ کا عمل کسی اور طریقے سے نہیں ہونا چاہئے۔ اس سے قبل گذشتہ رات ٹنڈن نے وزیر اعلی کو ایک خط لکھ کر 16 مارچ سے شروع ہونے والے بجٹ اجلاس کے پہلے ہی دن (گورنر) کے خطاب کے بعد ایوان میں اپنی اکثریت ثابت کرنے کی ہدایت دی ہے۔


گورنر نے لکھا ہے ، ’میں اس بات پر قائل ہوں کہ پہلی نظر میں آپ کی حکومت نے ایوان کا اعتماد کھو دیا ہے اور آپ کی حکومت اقلیت میں ہے۔ یہ صورتحال بہت سنگین ہے ، لہذا آئینی طور پر لازمی اور جمہوری اقدار کا تحفظ ضروری ہے کہ آپ 16 مارچ کو میرے خطاب کے فورا بعد ہی قانون ساز اسمبلی میں اعتماد کا ووٹ حاصل کریں۔


دریں اثنا، مدھیہ پردیش کے وزیر پی سی شرما نے کہا ہے کہ ہم فلور ٹیسٹ کا سامنا کرنے کے لئے تیار ہیں لیکن اسمبلی فلور مکمل نہیں ہے۔ کانگریس کے 16 ارکان اسمبلی لاپتہ ہیں جس کی اطلاع وزیر اعلیٰ کمل ناتھ نے وزیر داخلہ امت شاہ کو دے دی ہے۔

First published: Mar 16, 2020 11:43 AM IST