உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سہاگ رات میں ہی ایسا کام کرنے جارہی تھی دلہن بنی 15 سال کے بچے کی ماں، شوہر رہ گیا دنگ

    سہاگ رات میں ہی ایسا کام کرنے جارہی تھی دلہن بنی 15 سال کے بچے کی ماں، شوہر رہ گیا دنگ

    Looter Bride News: مدھیہ پردیش کے بھنڈ ضلع سے عجیب و غریب خبر سامنے آئی ہے ۔ یہاں معذور لڑکے سے لٹیری دلہن نے شادی کی ۔ دن بھر گھر میں ناچ گانا ہوتا رہا ، رسمیں ہوئیں اور آشیرواد لئے گئے ۔ پھر سہاگ رات میں خاتون چھت سے کود کر بھاگنے لگی ، لیکن پولیس نے اس کو اسی وقت پکڑ لیا ۔

    • Share this:
      بھنڈ : مدھیہ پردیش کے بھنڈ ضلع میں لٹیری دلہن کا معاملہ سامنے آیا ہے ۔ 15 سال کے بچے کی ماں پانچ ہزار کیلئے معذور سے فرضی شادی کرنے کیلئے تیار ہوگئی ۔ جبکہ پوری شادی کے نام پر 90 ہزار روپے کی ٹھگی کی گئی ۔ شادی میں ورمالا ، آشیرواد جیسی سبھی رسمیں ہوئیں ۔ خاتون شادی والی رات دلہن کے جوڑے میں ہی ساتھیوں کے ساتھ بھاگنے کی کوشش میں تھی ، لیکن گشت کررہے پولیس اہلکاروں نے اس کو گرفتار کرلیا ۔

      پولیس کے مطابق گورمی تھانہ علاقہ کے کچناو روڈ پر رہنے والا سونو جین ایک پاوں سے معذور ہے ، معذوری کی وجہ سے اس کی شادی نہیں ہورپاہی تھی ۔ سونو شادی کیلئے کئی لوگوں سے رابطہ کرچکا تھا ۔ اس دوران اس کی ملاقات گوالیار کے سمادھیا کالونی میں رہنے والے اودل کھٹیک سے ہوئی ۔ اودل نے شادی میں ایک لاکھ روپے کے اخراجات کی بات کہی اور اس کی ملاقات ایک خاتون سے کرائی ۔

      خاتون کودیکھ کر اس کا رشتہ 90 ہزار روپے میں طے ہوا ۔ 27 جولای کو اودل اپنے تین ساتھیوں کے ساتھ گورمی پہنچا ۔ ان کے ساتھ 40 سالہ خاتون انیتا بھی تھی ۔ اودل شادی کیلئے طے ہوئی رقم 90 ہزار لے کر چلاگیا اور اپنے گروپ کے دو ساتھیوں جتیندر اور ارون کو خاتون کا رشتہ دار بتا کر چھوڑ دیا ۔ دن بھر شادی کی رسمیں ہوئیں ، دولہا دلہن نے ایک دوسرے کو ورمالا پہنائی ، سات پھیرے لئے اور دونوں کی شادی ہوگئی ۔

      دلہن نے جتیندر کو اپنا بھائی اور ارون کو رشتہ دار بتایا ۔ دونوں نے صبح جانے کی خواہش ظاہر کی ۔ دونوں گھر کے باہر سوگئے ۔ دلہن نے رات 12 بجے سونو سے کہا کہ اس کی طبیعت خراب ہورہی ہے اور چھت پر جانا چاہتی ہے ۔ وہ شادی کے جوڑے میں چھت پر چلی گئی اور موقع دیکھ کر ٹین کی چادر پر کود کر بھاگنے کی کوشش کرنے لگی ۔ وہیں ٹین کے نیچے سو رہے اس کے دونوں ساتھی بھی اس کو لے کر بھاگنے کی کوشش میں تھے ، لیکن گھر کے باہر سڑک پر گشت کررہی پولیس ٹیم نے تینوں کو پکڑ لیا اور تھانے لے گئی ۔

      پولیس پوچھ گچھ میں خاتون نے اپنا جرم قبول کرلیا ۔ خاتون نے اس سودے میں پانچ ہزار روپے ملنے کی بات کہی ۔ اس نے اعتراف کیا کہ وہ ایک طلاق شدہ خاتون ہے اور اس کا ایک 15 سال کا بیٹا بھی ہے ۔ پولیس نے خاتون سمیت پانچ لوگوں کے خلاف معاملہ درج کرلیا ہے ۔ اس گروپ کا ماسٹرمائنڈ اودل اور اس کا ایک ساتھی ابھی فرار ہے ۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: