ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

جھارکھنڈ: ہیمنت سورین کو ملا بابو لال کا آشیرواد، بلاشرط حمایت کا اعلان

ہیمنت سورین نے جے وی ایم سپریمو بابو لال مرانڈی سے ملنے کے بعد نامہ نگاروں سے بات چیت میں کہاکہ ریاست کے لوگوں نے مہا گٹھ بندھن کو واضح مینڈیٹ دیا ہےاورانتخاب میں بابو لال مرانڈی اور ان کی پارٹی کے الگ ۔ الگ لڑنے کے باوجود پارٹیوں کے اہداف یکساں تھے۔

  • UNI
  • Last Updated: Dec 25, 2019 12:02 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جھارکھنڈ: ہیمنت سورین کو ملا بابو لال کا آشیرواد، بلاشرط حمایت کا  اعلان
ہیمنت سورین کو مل گیا بابو لال مرانڈی کا آشیرواد۔

رانچی:  جھارکھنڈ میں ایک بڑی سیاسی جماعت جھارکھنڈ ویکاس مورچہ( جے وی ایم ) نے جھارکھنڈ مکتی مورچہ ( جے ایم ایم ) کے لیڈر ہیمنت سورین کی قیادت میں بننے والی مہا گٹھ بندھن حکومت کوبغیرشرط حمایت دینےکا اعلان کیا جس کے بعد ریاست کے ہونے والے نئے وزیراعلیٰ نے پارٹی سپریمو بابولال مرانڈی سے ان کی رہائش پر مل کر آشیرواد لیا۔ ہیمنت سورین نے جے وی ایم سپریمو بابو لال مرانڈی سے ملنے کے بعد نامہ نگاروں سے بات چیت میں کہاکہ ریاست کے لوگوں نے مہا گٹھ بندھن کو واضح مینڈیٹ دیا ہےاورانتخاب میں بابو لال مرانڈی اور ان کی پارٹی کے الگ ۔ الگ لڑنے کے باوجود پارٹیوں کے اہداف یکساں تھے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کو بہترسمت دینےکیلئےایک ساتھ کام کرنا سبھی کی ذمہ داری ہے۔

جے وی ایم سپریموبابولال مرانڈی نےکہا کہ الگ ۔ الگ انتخاب لڑنےکے باوجود دونوں پارٹیوں کا ہدف، غریبوں، کسانوں، نوجوانوں اوراستحصال زدہ طبقوں کی بھلائی کیلئے یکساں طورکام کرنا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ان کی پارٹی ہیمنت سورین حکومت کو مکمل حمایت دے گی اوراس سے متعلق حمایت کا تحریری خط بھی دے گی۔ انہوں نے کہاکہ یہ حمایت بغیر کسی شرط کے ہوگی ۔ اس بات پرکہ ان کی پارٹی حکومت میں شامل ہوگی یا نہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ وزیراعلیٰ کا حق ہےکہ وہ کسے اپنی کابینہ میں شامل کرنا چاہتے ہیں۔

ہیمنت سورین نےکہا کہ انہوں نے گورنرسے وقت مانگا ہے تقریباً 8 بجے گورنر ہاﺅس پہنچنے اورحکومت تشکیل دینے کا دعوی کرنےکا ا مکان ہے۔ انہوں نے کہاکہ انہیں پورے ملک سے مبارک بادی کے پیغامات موصول ہورہے ہیں۔ انہوں نے دعوی ٰ کیا کہ لوگوں کی خواہش ہےکہ حلف تقریب شاندارطریقے سے ہو۔ جےایم ایم پارٹی کے لیڈرنے جے وی ایم کو حکومت میں شامل کرنے سے متعلق پوچھےگئےسوال کے جواب میں کہاکہ اس پر بعد میں غوروخوض کیاجائےگا۔ کیونکہ فی الحال حکومت کی تشکیل کا عمل چل رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ وہ کسی کا بھی خیرمقدم کرنےکیلئےتیارہیں جوایک ساتھ کام کرسکیں اورجھارکھنڈ کی ترقی کیلئے بھی سنجیدہ ہوں۔

First published: Dec 25, 2019 12:02 AM IST