ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

وائرل آڈیو سے مصیبت میں پھنس گئے لالو پرساد یادو ، بنگلہ سے ریمس کئے گئے منتقل

بہار کے سابق وزیر اعلی اور آر جے ڈی سپریمو لالو پرساد یادو کو پھر سے ریمس میں منتقل کردیا گیا ہے ۔

  • Share this:
وائرل آڈیو سے مصیبت میں پھنس گئے لالو پرساد یادو ، بنگلہ سے ریمس کئے گئے منتقل
وائرل آڈیو سے مصیبت میں پھنس گئے لالو پرساد یادو ، بنگلہ سے ریمس کئے گئے منتقل

بہار کے سابق وزیر اعلی اور آر جے ڈی سپریمو لالو پرساد یادو کا مبینہ آڈیو وائرل ہونے کے بعد سیاست زوروں پر ہے ۔ اب ایک مرتبہ پھر کیلی بنگلہ سے لالو پرساد کو راجیندر انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائسنسز منتقل کردیا گیا ہے ۔ دوسری طرف مبینہ وائرل آڈیو معاملہ کو لے کر جھارکھنڈ کے جیل آئی جی نے جانچ کے احکامات دئے ہیں ۔ آئی جی نے رانچی ڈی سی اور ایس ایس پی کے ساتھ ہی رانچی جیل کے سپرنٹنڈنٹ کو بھی کہا کہ جو میڈیا میں آڈیو چل رہا ہے ، اس کی جانچ کرکے رپورٹ سونپی جائے ۔ جیل آئی جی نے یہ بھی کہا کہ سیکورٹی کے معاملہ میں لاپروائی ٹھیک نہیں ہے ۔ ایسے معاملات میں شکایت پر ذمہ داروں کے خلاف سخت کارروائی کی جاسکتی ہے ۔


آئی جی کی طرف سے لالو پرساد یادو کی سیکورٹی میں تعینات جوانوں کو بھی ہدایت جاری کی گئی ہے ، جس میں کہا گیا ہے کہ اجازت کے بغیر کوئی بھی لالو یادو سے نہیں مل سکتا ہے ۔ اگر کوئی اجازت کے بغیر ملاقات کرتا ہے تو سیکورٹی اہلکاروں کے خلاف کارروائی ہوگی ۔




بتادیں کہ بہار میں اسمبلی اسپیکر کے انتخابات سے پہلے لالو پرساد یادو کا ایک مبینہ آڈیو وائرل ہوگیا ، جس میں لالو پرساد یادو پر سنگین الزامات لگے ہیں ۔ معاملہ کو لے کر بہار کی سیاست گرماگئی ہے ۔ بی جے پی اور جے ڈی یو کے لیڈروں نے وائرل آڈیو کو لے کر شدید رد عمل کا اظہار کیا ہے ۔

خرید و فروخت کا الزام

مبینہ آڈیو وائرل ہونے کے بعد لالو پرساد یادو پر مخالف سیاسی پارٹیاں سنگین الزامات عائد کررہی ہیں ۔ کہا جارہا ہے کہ اسمبلی اسپیکر کے الیکشن سے پہلے لالو پرساد نے بی جے پی ممبران اسمبلی کو خریدنے کی کوشش کی ۔ بی جے پی کے سینئر لیڈر سشیل مودی نے کئی الزامات لگائے ہیں ۔ پارٹی کے دیگر لیڈروں نے بھی معاملہ کو لے کر آر جے ڈی لیڈروں پر نشانہ سادھا ہے۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Nov 26, 2020 07:15 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading