ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

مزدوروں سے بھری پک اپ گاڑی پلٹی، گیارہ مزدوروں کی موت، پندرہ زخمی

مدھیہ پردیش کے جبل پور ضلع کے چرگواں تھانہ علاقے میں مزدوروں سے بھری ہوئی ایک پک اپ گاڑی بے قابو ہوکر پلٹ گئی، جس سے اس میں سوار گیارہ مزدوروں کی موت ہو گئی اور 15 دیگر زخمی ہو گئے۔

  • UNI
  • Last Updated: May 11, 2017 03:14 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
مزدوروں سے بھری پک اپ گاڑی پلٹی، گیارہ مزدوروں کی موت، پندرہ زخمی
تصویر: ای ٹی وی

جبل پور۔ مدھیہ پردیش کے جبل پور ضلع کے چرگواں تھانہ علاقے میں مزدوروں سے بھری ہوئی ایک پک اپ گاڑی بے قابو ہوکر پلٹ گئی، جس سے اس میں سوار گیارہ مزدوروں کی موت ہو گئی اور 15 دیگر زخمی ہو گئے، جنہیں اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے ۔ ڈپٹی پولیس سپرنٹنڈنٹ ’برگی‘ منجیت چاولہ نے بتایا کہ مہاراشٹر کے گوديا ضلع کے رہنےوالے35 مزدوروں کو تیندو پتہ توڑنے کے لئے چرگواں لایا جا رہا تھا۔ سبھی مزدور کل رات تلوارا گھاٹ پہنچے۔ جنہیں محکمہ جنگلات کی پک اپ گاڑی سے چرگواں لے جایا جا رہا تھا۔ تبھی جمنيا گاؤں کے قریب پک اپ گاڑی بے قابو ہوکر پلیا سے دس فٹ گہرائی میں گر گئی۔ حادثے میں بدھرام راوت (45)، چنی لال(35)، گجیش (33)، پردیپ (18)، رام ناتھ (33)، تلارام (30)، سمیشور (32)، لچھو چودھری (30)، چھگن كامڑے (43) ، شنکر مسكولے (40) اور سنتو (50) کی موت ہو گئی۔


جبکہ جے پال، ولاس، بھارو راوت، نریش، بابوراو سمیت 15 مزدور زخمی ہو گئے۔ زخمیوں کو سرکاری میڈیکل اسپتال میں داخل کیا گیا ہے۔ پولیس نے گاڑی کے ڈرائیور پرہلاد کو گرفتار کر لیا ہے۔ گاڑی میں فوریسٹ گارڈ بھوپندر سنگھ بھی سوار تھا جو حادثےکے بعد فرار ہو گیا۔ کلیکٹر مہیش چندر چودھری نے بتایا کہ وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان نےہلاک شدگان کے لواحقین کو ایک- ایک لاکھ روپے اور شدید زخمی مزدوروں کو 50-50 ہزار روپے اور اسپتال میں داخل زخمیوں کو 25-25 ہزار روپے کی مالی مدد فراہم کرنے کا اعلان کیا ہے۔ ضلع انتظامیہ کی طرف سے سڑک حادثے میں مدد کے طورپر15-15 ہزار روپے کی مالی مدد کی جائے گی۔

First published: May 11, 2017 03:14 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading