ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

بڑوانی میں قابل اعتراض پوسٹ بھیجنے کے الزام میں وی ایچ پی لیڈر گرفتار

بڑواني: مدھیہ پردیش کے ضلع بڑواني میں ایک وهاٹسپ گروپ میں قابل اعتراض پوسٹ بھیجنے کے الزام میں وشو ہندو پریشد کے سیندھوا ضلع نائب صدر کو گرفتار کر لیا گیا۔

  • UNI
  • Last Updated: Jun 15, 2016 06:48 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
بڑوانی میں قابل اعتراض پوسٹ بھیجنے کے الزام میں وی ایچ پی لیڈر گرفتار
بڑواني: مدھیہ پردیش کے ضلع بڑواني میں ایک وهاٹسپ گروپ میں قابل اعتراض پوسٹ بھیجنے کے الزام میں وشو ہندو پریشد کے سیندھوا ضلع نائب صدر کو گرفتار کر لیا گیا۔

بڑواني: مدھیہ پردیش کے ضلع بڑواني میں ایک وهاٹسپ گروپ میں قابل اعتراض پوسٹ بھیجنے کے الزام میں وشو ہندو پریشد کے سیندھوا ضلع نائب صدر کو گرفتار کر لیا گیا۔ ورلا پولیس کے ذرائع کے مطابق سمیر شیخ نام کے شخص کی شکایت کی درخواست پر وشو ہندو پریشد کے سیندھوا ضلع نائب صدر سنجے بھاوسار کے خلاف کل رات مذہبی جذبات بھڑکانے اور آئی ٹی ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کر کے انہیں گرفتار کر لیا گیا۔ آج دوپہر کو سیندھوا کورٹ میں پیش کیا جائے گا۔

سنجے بھاوسار پر الزام ہے کہ انہوں نے کل دوپہر ’فرینڈس سرکل‘ نامی وهاٹسپ گروپ پر قابل اعتراض پوسٹ ڈالی تھی۔ اسی گروپ کے ایک رکن سمیر شیخ نے اس پوسٹ پر اعتراض کیا اور کل رات مقدمہ درج کرا دیا۔ پولیس کے ذرائع کے مطابق نائب صدر کی گرفتاری پر آج وی ایچ پی کے اعلان پر بلواڑي کی دکانیں بند رہیں جو سمجھانے کے بعد آہستہ آہستہ معمول کے مطابق کھل گئیں۔ وی ایچ پی کے کارکنوں نے آج دوپہر سیندھوا ضلع صدر پنکج جھور کی قیادت میں ورلا تھانے پر اپنا احتجاج بھی کیا۔ بلواڑي میں احتیاطاً اضافی پولیس فورس تعینات کیا گیا ہے۔

First published: Jun 15, 2016 06:48 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading