وياپم گھپلہ: سی بی آئی کی اب تک کی سب سے بڑی کارروائی، 587 ملزمان پر ایف آئی آر

بھوپال۔ مدھیہ پردیش وياپم گھوٹالے کی جانچ کر رہی سی بی آئی نے پی ایم ٹی امتحان 2012 میں ہوئی گڑبڑی اور اوایم آر شیٹ سے چھیڑ چھاڑ کے معاملے میں ایف آئی آر درج کی ہے۔

Aug 01, 2015 03:54 PM IST | Updated on: Aug 01, 2015 03:55 PM IST
وياپم گھپلہ: سی بی آئی کی اب تک کی سب سے بڑی کارروائی، 587 ملزمان پر ایف آئی آر

بھوپال۔ مدھیہ پردیش وياپم گھوٹالے کی جانچ کر رہی سی بی آئی نے پی ایم ٹی امتحان 2012 میں ہوئی گڑبڑی اور اوایم آر شیٹ سے چھیڑ چھاڑ کے معاملے میں ایف آئی آر درج کی ہے۔ سی بی آئی نے کل 587 لوگوں کو ملزم بنایا ہے۔ ساتھ ہی سی بی آئی نے وياپم معاملے میں ملزم رہے وکاس سنگھ کی موت کے معاملے میں ابتدائی جانچ درج کر لی ہے۔

سی بی آئی نے ایک سرکاری بیان جاری کر کے اطلاع دیتے ہوئے کہا کہ سب پر رول نمبر میں ردوبدل اور اوایم آر شیٹ میں تبدیلی کرنے کا الزام ہے۔ ملزمان میں اس وقت کے تکنیکی تعلیم کے وزیر لكشمی کانت شرما کے او ایس ڈی او پی شکلا، وياپم کے اس وقت کے امتحان کنٹرولر پنکج ترویدی، سابق سسٹم انالسٹ نتن مہندرا اور سابق اسسٹنٹ پروگرامر سی کے مشرا اور اجے سین بھی شامل ہیں۔

Loading...

سپریم کورٹ کے حکم کے بعد وياپم معاملے کی تحقیقات کر رہی سی بی آئی اب تک 19 ایف آئی آر درج کر چکی ہے۔

ایس ٹی ایف نے دو سال پہلے درج کیا تھا معاملہ

سی بی آئی سے پہلے وياپم گھوٹالے کی جانچ کر رہی ایس ٹی ایف نے پی ایم ٹی امتحان 2012 میں ہوئی بدعنوانیوں کو لے کر 30 اکتوبر 2013 کو کیس درج کیا تھا۔ ایس ٹی ایف نے درجنوں ملزمان کی گرفتاری بھی کی تھی۔ ان میں سے زیادہ تر ابھی جیل میں بند ہیں۔

ایک اور موت کا وياپم کنکشن

سی بی آئی نے وياپم معاملے میں وکاس سنگھ کی موت کے معاملے کی تفتیش بھی شروع کر دی ہے۔ وکاس سنگھ کی موت 21 نومبر 2009 کو ہوئی تھی۔ اندور کے نزدیک مہو کے ویٹنری کالج کے طالب علم رہے وکاس کے خلاف گوالیار، ساگر اور جبل پور میں تین ایف آئی آر درج ہے۔  اب چھ سال بعد سی بی آئی اس کی موت کی راز کی ٹوٹی کڑیوں کو شامل کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔ یہ پتہ لگایا جائے گا کہ وکاس کی موت کا وياپم گھوٹالے سے کوئی کنکشن تو نہیں ہے۔

20 اموات تحقیقات کے دائرے میں

وياپم معاملے میں ایس ٹی ایف کی جانچ شروع ہونے سے لے کر اب تک 48 لوگوں کی موت ہو چکی ہے۔ سپریم کورٹ نے 9 جولائی کو وياپم کی جانچ سی بی آئی کو سونپی تھی۔ سی بی آئی اب تک اس معاملے میں کل 20 اموات کو جانچ کے دائرے میں لے چکی ہے، جس میں صحافی اکشے سنگھ کی موت بھی شامل ہے۔ اسی کے ساتھ جانچ ٹیم نے 19 نئی ایف آئی آر بھی درج کی ہے۔ وہیں، اندور میڈیکل کالج کی طالبہ نمرتا ڈامور کی موت کے معاملے میں نامعلوم ملزم کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

491 ملزم اب بھی فرار

ابھی تک تحقیقات کر رہی ایس ٹی ایف نے وياپم گھوٹالے کے سلسلے میں کل 55 معاملے درج کیے تھے۔ اس معاملے میں اب تک 2100 ملزمان کی گرفتاری ہو چکی ہے، وہیں 491 ملزم اب بھی فرار ہیں۔ ایس ٹی ایف اس معاملے کے 1200 ملزمان کے چالان بھی پیش کر چکی ہے۔

 

 

Loading...