جھبوا دھماکے میں بی جے پی لیڈر راجندر کے خلاف کیس درج

جھبوا۔ مدھیہ پردیش کے جھبوا میں ہوئے شدید دھماکے میں مرنے والوں کی تعداد 89 تک پہنچ گئی ہے جبکہ 100 سے زیادہ افراد زخمی ہیں۔

Sep 13, 2015 12:24 PM IST | Updated on: Sep 13, 2015 12:25 PM IST
جھبوا دھماکے میں بی جے پی لیڈر راجندر کے خلاف کیس درج

جھبوا۔ مدھیہ پردیش کے جھبوا میں ہوئے شدید دھماکے میں مرنے والوں کی تعداد 89 تک پہنچ گئی ہے جبکہ 100 سے زیادہ افراد زخمی ہیں۔ زخمیوں میں بہت سے لوگوں کی حالت نازک بتائی جا رہی ہے۔

آج وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان جائے حادثہ کا دورہ کرنے پہنچے جہاں انہیں لوگوں کی سخت مخالفت کا سامنا کرنا پڑا۔ حادثے کے بعد سیاست بھی شروع ہو گئی ہے۔ کانگریس نے آج جھابوا بند بلایا ہے۔ ادھر مدھیہ پردیش کانگریس صدر ارون یادو نے بی جے پی تاجر سیل کے صدر راجندر کساوا کے گھر ڈیٹونیٹر ملنے کا الزام لگایا ہے۔

Loading...

واقعہ کے بعد فرار چل رہے راجندر کساوا پر مقدمہ درج ہو گیا ہے۔ انہی کے گودام میں دھماکہ خیز مواد رکھے ہوئے تھے۔ غور طلب ہے کہ ہفتے کی صبح بس اسٹینڈ کے پاس واقع ایک ریستوران میں سلنڈر پھٹنے سے یہ خوفناک دھماکہ ہوا تھا۔

پولیس ذرائع کے مطابق دھماکے نے ریستوران کے ساتھ ایک گھر میں کان کنی میں استعمال ہونے والی دھماکہ خیز مواد کو اپنی زد میں لے لیا۔

Loading...