مدھیہ پردیش: کانگریس نے بی جے پی کو پھر دیا بڑا دھچکا

نئی دہلی۔ جھابوا-رتلام پارلیمانی سیٹ ہارنے کے بعد مدھیہ پردیش کے بلدیاتی اداروں کے انتخابات سے بھی حکمراں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے لئے بری خبر آئی ہے۔

Dec 26, 2015 03:11 PM IST | Updated on: Dec 26, 2015 03:11 PM IST
مدھیہ پردیش: کانگریس نے بی جے پی کو پھر دیا بڑا دھچکا

نئی دہلی۔ جھابوا-رتلام پارلیمانی سیٹ ہارنے کے بعد مدھیہ پردیش کے بلدیاتی اداروں کے انتخابات سے بھی حکمراں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے لئے بری خبر آئی ہے۔ نگرپالیکا اور نگر پریشد کے آٹھ مقامات پر ہوئے انتخابات میں کانگریس نے پانچ پر قبضہ جمایا جبکہ بی جے پی کو تین سیٹوں پر ہی اکتفا کرنا پڑا۔

کانگریس کے لئے زیادہ خوشی کی بات یہ ہے کہ پارٹی نے چار نشستیں بی جے پی سے چھینی ہیں۔ کانگریس نے بھیڑاگھاٹ، مجھولی، دھامنود، شاجاپور، اورچھا سیٹ پر قبضہ جمایا ہے وہیں بی جے پی نے شاه گنج، سيہور اور مندسور سیٹ پر اپنی جیت درج کی ہے۔

Loading...

مدھیہ پردیش کے کانگریس کے ترجمان کے کے مشرا نے کہا کہ یہ کارکنوں کی جیت ہے۔ میں ووٹروں کا شکریہ ادا کرنا چاہوں گا جنہوں نے اچھے دنوں کا دھوکہ کھانے کے بعد کانگریس صدر سونیا گاندھی اور نائب صدرراہل گاندھی میں اعتماد ظاہر کیا ہے۔

وہیں مدھیہ پردیش کے بی جے پی کے ترجمان ڈاکٹر ہتیش نے کہا کہ بلدیاتی انتخابات چھوٹے ہوتے ہیں۔ ووٹوں کی تقسیم زیادہ ہوتی ہے۔ مقامی ایشوزغالب ہوتے ہیں۔ ہم مینڈیٹ کا احترام کرتے ہیں۔

Loading...