உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Coronavirus in India: کورونا کے معاملوں میں اضافہ پرمرکز نے جتائی تشویش، 10ریاستوں کےلیے جاری کیں یہ ہدایات

    کورونا کی تیسری لہر کا خطرہ ۔(تصویر:shutterstock)۔

    مرکزی حکومت نے ایسی 10 ریاستوں کے 46 اضلاع کو سخت کنٹینمنٹ زون بنانے کا حکم دیا ہے۔ ان اضلاع میں مثبت معاملوں کی شرح 10 فیصد سے زیادہ ہے ، یعنی ہر سو نمونوں کی جانچ میں ، 10 سے زیادہ لوگ کورونا سے متاثر ہو رہے ہیں۔

    • Share this:
      نئی دہلی: ملک بھر میں کورونا کی دوسری لہر بہت پہلے ختم ہو چکی ہے۔ لیکن تیسری لہر(Coronavirus 3rd Wave)کے بارے میں بار بار اشارے مل رہے ہیں۔ ان دنوں تقریباًہرروز کورونا کے 40 ہزارسے زائد نئے کیس سامنے آرہے ہیں۔ کچھ ریاستوں میں صورتحال تشویشناک ہے۔ مرکزی حکومت نے ایسی 10 ریاستوں کے 46 اضلاع کو سخت کنٹینمنٹ زون بنانے کا حکم دیا ہے۔ ان اضلاع میں مثبت معاملوں کی شرح 10 فیصد سے زیادہ ہے ، یعنی ہر سو نمونوں کی جانچ میں ، 10 سے زیادہ لوگ کورونا سے متاثر ہو رہے ہیں۔ مرکز نے بھیڑ کو کم کرنے کے لیے ایسے اضلاع میں لوگوں کی نقل و حرکت پر سخت پابندیاں لگانے کی ہدایت دی ہے۔

      ہفتہ کو دہلی میں کورونا کی موجودہ صورتحال کے حوالے سے ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ منعقد ہوئی۔ اس میں سکریٹری صحت راجیش بھوشن نے کیرالا ، مہاراشٹر ، کرناٹک ، تمل ناڈو ، اڈیشہ ، آسام ، میزورم ، میگھالیہ ، آندھرا پردیش اور منی پور میں کورونا کی موجودہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔ بعد میں،مرکزی وزیر صحت منسکھ مانڈویا ن نے بھی کورونا وباء کی موجودہ حالات پر تشویش کا اظہارکیاہے۔


      مرکزی حکومت کا مانناہے کہ ان 10 ریاستوں میں کورونا کے 80 فیصد مریض گھریلو تنہائی میں ہیں۔ اس لیے مرکز نے اس بات پر تشویش کا اظہار کیا ہے کہ آیا ریاستی حکومتیں ایسے مریضوں پر نظر رکھے ہوئے ہے یا نہیں۔ حکومت کو خدشہ ہے کہ ایسے لوگ گھر سے نکل کرتیزی سے کورونا پھیل سکتاہے۔ پچھلے چند ہفتوں سے کیرالا اور کچھ شمالی ریاستوں میں کورونا کے نئے معاملوں میں زبردست اضافہ ہوا ہے۔ یہاں مثبت معاملوں کی شرح ملک کے مقابلے میں بہت زیادہ ہے۔

      ان ریاستوں میں مثبت معاملوں کی شرح ہے زیادہ

      میزورم میں صورتحال بدتر ہے۔ یہاں مثبت معاملوں کی شرح 22 فیصد سے زیادہ ہے۔ منی پور میں 16.5 فیصد اس کے بعد کیرالا کا نمبرآتاہے۔ یہاں ہر سو نمونوں کی جانچ میں 12 افراد کورونا سے متاثر ہو رہے ہیں۔ مہاراشٹر میں یہاں مثبت معاملوں کی شرح اب بھی 3.48 فیصد ہے۔ اس کے علاوہ ، اڈیشہ میں 2.36 ، اور آندھرا پردیش میں 2.7 فیصد مثبت معاملوں کی شرح ریکارڈ کی گئی ہے۔
      Published by:Mirzaghani Baig
      First published: