உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جنرل بپن راوت نے بتایا- چین کی کن چیزوں سے ہندوستان کو رہنا چاہئے الرٹ

    جنرل بپن راوت نے بتایا- چین کی کن چیزوں سے ہندوستان کو رہنا چاہئے الرٹ

    جنرل بپن راوت نے بتایا- چین کی کن چیزوں سے ہندوستان کو رہنا چاہئے الرٹ

    CDS Bipin Singh Rawat on China-Pakistan: چیف ڈیفنس چیف (سی ڈی ایس) جنرل بپن راوت (Bipin Singh Rawat) نے جمعہ کے روز کہا کہ ہندوستان کئی باہری سیکورٹی چیلنجز (Security Challenges) کا سامنا کر رہا ہے اور سب سے زیادہ سائبر اور خلائی شعبے میں چین کی تکنیکی ترقی ہے۔

    • Share this:
      بنگلورو: چیف ڈیفنس چیف (CDS) جنرل بپن راوت (Bipin Singh Rawat) نے جمعہ کے روز کہا کہ ہندوستان کئی باہری سیکورٹی چیلنجز (Security Challenges) کا سامنا کر رہا ہے اور سب سے زیادہ سائبر اور خلائی شعبے میں چین کی تکنیکی ترقی ہے۔ وہ ہندوستانی فضائیہ کے تین روزہ اجلاس کو خطاب کر رہے تھے، جس کا افتتاح 1971 کے ہندوستان-پاکستان جنگ میں جیت کے 50 سال پورے ہونے پر منائے جا رہے 'سنہری فتح سال' کے جشن میں وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے یہلنکا ہندوستانی فضائیہ اسٹیشن میں کیا تھا۔

      بپن راوت نے کہا، ’ہندوستان کو کئی باہری سیکورٹی چیلنجز کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے، جن میں گہرے علاقائی باہمی روابط، غیر حل شدہ سرحدی تنازعات کی وراثت، مسابقت کا کلچر اور ہندوستان کے اسٹریٹجک مقام کو کمزور کرنے کے چیلنجز شامل ہیں‘۔

      انہوں نے کہا کہ ہندوستان انڈو-پیسیفک خطہ خطہ علاقے میں زمینی اسٹریٹجک مقابلے کو بھی دیکھ رہا ہے، جس میں بحر ہند کے علاقے میں اسٹریٹجک اڈوں کی دوڑ اور شمالی دشمن چین کی جانب سے خطے میں 'بیلٹ اینڈ روڈ' پوسٹوں کی بڑھتی ہوئی فوج کاری بڑھانا شامل ہے۔ جنرل بپن راوت نے کہا، ’سائبر اور خلائی خطے میں چین کی تکنیکی رفتار سب سے زیادہ باعث تشویش ہے‘۔ انہوں نے کہا کہ شمالی سرحدوں پر ہوئی  جارحانہ کرنسی کے حالیہ حادثات چین کے توسیع پسند غیرملکی پالیسی کا مرکز بنی رہیں گی، جس کے بارے میں ہندوستان کو ہمیشہ محتاط رہنا ہوگا۔

      پاکستان پر کیا بولے سی ڈی ایس

      پاکستان کے موضوع پر سی ڈی ایس نے کہا کہ سرحد پار دہشت گرد کو مسلسل منظم کرنا، سوشل میڈیا پر ہندوستان مخالف بیان بازی اور ہندوستان کے اندر سماجی دشمنی پیدا کرنے کی کوشش، ہندوستان اور اس ملک کے درمیان اعتماد کی کھائی کو ’نہ بھرنے والے‘ معلوم ہوتے ہیں۔ اس موقع پر ہندوستانی فضائیہ کے سربراہ ایئر چیف مارشل وی آر چودھری، دفاعی سکریٹری اجے کمار اور کرناٹک کے وزیر محصولات آر اشوک سمیت دیگر لوگ موجود تھے۔ اس بات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ 1971 کے بعد سے دنیا میں چیزیں کیسے بدلی ہیں، اجے کمار نے آج کے  سیکورٹی منظر نامہ کا سامنا کرنے کے لئے ’کئی گنا زیادہ‘ تیار ہونے کی ضرورت پر زور دیا۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: