ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جامعہ تشدد : قومی انسانی حقوق کمیشن کی ٹیم نے یونیورسٹی کی لائبریری کا دورہ کیا ، افسران کے ساتھ بھی میٹنگ

جامعہ ملیہ اسلامیہ تشدد معاملہ کی جانچ کیلئے قومی انسانی حقوق کمیشن (این ایچ آر سی )کی ٹیم جمعہ کو یونیورسٹی کی لائبریری پہنچی ۔

  • UNI
  • Last Updated: Dec 20, 2019 10:10 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جامعہ تشدد : قومی انسانی حقوق کمیشن کی ٹیم نے یونیورسٹی کی لائبریری کا دورہ کیا ، افسران کے ساتھ بھی میٹنگ
جامعہ تشدد : قومی انسانی حقوق کمیشن کی ٹیم نے یونیورسٹی کی لائبریری کا دورہ کیا

جامعہ ملیہ اسلامیہ تشدد معاملہ کی جانچ کیلئے قومی انسانی حقوق کمیشن (این ایچ آر سی )کی ٹیم جمعہ کو یونیورسٹی کی لائبریری پہنچی ۔ این ایچ آر سی کی سات رکنی اس ٹیم کی قیادت انڈین پولیس سروس (آئی پی ایس) کی سینئر افسر منزل سینی کررہی تھیں ۔ متھراروڈ اور نیوفرینڈس کالونی کے پاس مظاہرے کےدوران 15دسمبر کو ہوئے تشددکے بعد ہجوم کا پیچھا کرتے ہوئے پولیس جامعہ کی طرف گئی اور اس دوران لائبریری میں گھس کر طلبہ کے ساتھ مارپیٹ کی اور توڑپھوڑ کی تھی۔


جامعہ ٹیچرز ایسوسی ایشن کے جنرل سکریٹری ماجد جمیل نے کہا کہ این ایچ آرسی کی ٹیم نے ذاکر حسین لائبریری کا معائنہ کیا ، جہاں اتوار کو پولیس نے مبینہ طورپر کارروائی کی تھی ۔اس کے علاوہ ٹیم نے ایڈمنسٹریٹیو بلاک میں جامعہ کے افسران کے ساتھ میٹنگ بھی کی ۔


خیال رہے کہ جامعہ میں آٹھویں دن بھی بڑی تعداد میں لوگ مظاہرہ کررہے ہیں ۔ جامعہ نگر علاقہ میں جمعہ کی نماز ادا کرنے کے بعد بڑے مظاہرے کے اندیشہ کے پیش نظر پولیس فورس تعینات کی گئی تھی ، لیکن کسی طرح کے کسی ناخوشگوار واقعہ کی اطلاع نہیں ہے ۔


جامعہ ملیہ اسلامیہ کے نزدیک پولیس اہلکار مارچ کرتے ہوئے ۔ فائل فوٹو ۔ پی ٹی آئی ۔
جامعہ ملیہ اسلامیہ کے نزدیک پولیس اہلکار مارچ کرتے ہوئے ۔ فائل فوٹو ۔ پی ٹی آئی ۔


جنوب مشرقی ضلع کے پولیس کمشنر نے کہا کہ احتیاط کے طورپر شاہین باغ اور جلینا کے پاس سلامتی دستوں کو تعینات کیاگیا ۔ لیکن سبھی جگہ امن وامان قائم رہا ۔ جامعہ اور شاہین باغ میں لوگ پرامن طریقہ سے مظاہرہ کررہے ہیں ۔
First published: Dec 20, 2019 09:53 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading