ہوم » نیوز » وسطی ہندوستان

سافٹ ہندتوا کے راستے پر گامزن کانگریس نے لاک ڈاؤن میں ائمہ و موذنین کو کردیا نظر انداز

سابق وزیر اعلی کمل ناتھ نے سی ایم شیوراج سنگھ کو خط لکھ کر لاک ڈاؤن میں مٹھ اور مندر کے پجاریوں کی مشکلات کا نہ صرف خصوصیت کے ساتھ ذکر کیا ہے۔

  • Share this:
سافٹ ہندتوا کے راستے پر گامزن کانگریس نے لاک ڈاؤن میں ائمہ و موذنین کو کردیا نظر انداز
کمل ناتھ نے 22جنوری 2020 کو خصوصی اختیارات دیتے ہوئے سابق گورنر ڈاکٹر عزیز قریشی کو مدھیہ پردیش اردو اکادمی کا چیئرمین بنایا تھا۔

بھوپال: کورونا وائرس اور لاک ڈاؤن میں سماج کا کوئی ایک حصہ نہیں بلکہ تمام لوگ متاثر ہیں۔ امیر ہوں یا غریب کورونا کی وجہ سے نافذ لاک ڈاؤن نے سبھی کو اثر انداز کیا ہے۔ ایسے مشکل وقت میں جہاں سبھی کو ساتھ لے کر چلنےکی بات کی جا رہی ہے۔ وہیں سیاست بھی اپنا ہنر دکھا رہی ہے۔ مدھیہ پردیش کانگریس کے چیف اور سابق وزیر اعلی کمل ناتھ نے سی ایم شیوراج سنگھ کو خط لکھ کرلاک ڈاؤن میں مٹھ اور مندر کے پجاریوں کی مشکلات کا نہ صرف خصوصیت کے ساتھ ذکر کیا ہے بلکہ مٹھ اور مندر میں ہونے والی پوجا ارچنا کے اخراجات کے لئے 5000 ماہانہ اورمٹھ و مندر کےپجاریوں کے اخراجات کے لئے 7500 روپئے ماہانہ دینے کی اپیل کی ہے۔ یہی نہیں مدھیہ پردیش کانگریس چیف نے سی ایم شیوراج سنگھ سے آئندہ تین ماہ تک سرکاری طور پر مدد کرنے کی اپیل کی ہے۔


کمل ناتھ نے سی ایم شیوراج سنگھ کو خط لکھ کر لاک ڈاؤن میں مٹھ اور مندر کے پجاریوں کی مشکلات کا نہ صرف خصوصیت کے ساتھ ذکر کیا ہے۔
کمل ناتھ نے سی ایم شیوراج سنگھ کو خط لکھ کر لاک ڈاؤن میں مٹھ اور مندر کے پجاریوں کی مشکلات کا نہ صرف خصوصیت کے ساتھ ذکر کیا ہے۔


وہیں مدھیہ پردیش کانگریس چیف اور سابق سی ایم کمل ناتھ کے خط پر مدھیہ پردیش علما بورڈ کے صدر مولانا انس علی نے اپنے سخت ردعمل کا اظہار کیا ہے۔ مولانا انس علی کا کہنا ہے کہ ایسے مشکل وقت میں جب سبھی لوگ کورونا لاک ڈاؤن سے متاثر ہیں، ایسے میں صرف مندر اور مٹھ کی بات کر اور دیگر تمام مذاہب کے لوگوں کو نظر انداز کر کے کانگریس نے اپنے سافٹ ہندتو کے چہرے کو اجاگر کیا ہے۔


مندر اورمٹھ سے متعلق کمل ناتھ نے شیو راج سنگھ کو خط لکھا ہے۔ جبکہ ائمہ اور موذنین کو نظر انداز کردیا گیا ہے۔
مندر اورمٹھ سے متعلق کمل ناتھ نے شیو راج سنگھ کو خط لکھا ہے۔ جبکہ ائمہ اور موذنین کو نظر انداز کردیا گیا ہے۔


مولانا انس علی ندوی نے سی ایم شیوراج سنگھ سے مٹھ اور مندر کے پجاریوں کے ساتھ مساجد کے آئمہ وموزنین ،چرچ اور گرودواروں کے رہنماؤں کو بھی مدد دینے کی اپیل کی ہے۔ علما بورڈ کا کہنا ہے کہ کمل ناتھ ایم پی میں ہونے والی چوبیس سیٹوں کے ضمنی انتخابات کو سامنے رکھ کر مٹھ اور مندر کی بات کر رہے ہیں اور یہ بھول گئے ہیں کہ ان اسمبلی حلقوں میں مسلم ،آدیواسی اور دلت ووٹرس بھی ہیں اور انہیں نظر انداز کر کے کانگریس کبھی آگے نہیں بڑھ سکتی ہے۔
First published: May 14, 2020 06:26 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading