وزیراعظم مودی سے ملے شرد پوار، کانگریس ہوئی ناراض، کہی یہ بڑی بات

 مہاراشٹرمیں چل رہی سیاسی رسہ کشی کولے کرکانگریس نے کہا کہ یہ وزیراعظم نریندرمودی سے ملنے کا صحیح اورمناسب وقت نہیں ہے۔

Nov 20, 2019 07:07 PM IST | Updated on: Nov 20, 2019 07:07 PM IST
وزیراعظم مودی سے ملے شرد پوار، کانگریس ہوئی ناراض، کہی یہ بڑی بات

وزیراعظم مودی سے ملے شرد پوار، کانگریس ہوئی ناراض

نئی دہلی: این سی پی سربراہ شرد پواراوروزیراعظم نریندرمودی کی ملاقات پراب کانگریس نے ناراضگی ظاہرکی ہے۔ مہاراشٹرمیں سیاسی گھمسان کے درمیان شرد پواراوروزیراعظم مودی کے درمیان بدھ کو کسانوں کے مسائل کولے کرملاقات کی تھی، لیکن اس ملاقات کے وقت کوکانگریس نے غلط بتایا ہے۔ کانگریس کے مطابق این سی پی سربراہ کو اس وقت وزیراعظم سے ملنے نہیں جانا چاہئے تھا۔

واضح رہےکہ وزیراعظم مودی کی ملاقات سے ٹھیک قبل شرد پوار نے کچھ بھی بتانے سے انکارکردیا تھا۔ شرد پوارنے کہا تھا کہ وزیراعظم مودی سے ملنے جارہا ہوں، لیکن کس موضوع پریہ میں آپ کو کیسے بتا سکتا ہوں۔ اس کے بعد وہ بغیرکچھ بولے آگے بڑھ گئے تھے۔ بعد میں وزیراعظم مودی اورشرد پوارکے درمیان بدھ کے روزدوپہر میں میٹنگ ہوئی تھی۔

سونیا گاندھی نے دیا تھا ناراضگی کا اشارہ

Loading...

کانگریس کی ناراضگی کا اشارہ پارٹی کی عبوری صدرسونیا گاندھی نے دیئے تھے۔ جب این سی پی اورشیوسینا کے ساتھ اتحاد کولے کر مہاراشٹرمیں حکومت بنانے کے بارے میں ان سے پوچھا گیا تووہ 'نوکمنٹس' (کوئی ردعمل نہیں) کہتے ہوئے آگے بڑھ گئی تھیں۔ سونیا گاندھی کا یہ ردعمل اسی دوران آیا تھا جب این سی پی سربراہ شرد پواروزیراعظم نریندر مودی کےساتھ میٹنگ کرنے جارہے تھے۔

شیوسینا میں بھی زبردست اختلاف

خبرہے کہ شیوسینا میں اندرونی طورپرسب کچھ ٹھیک نہیں ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ کانگریس اوراین سی پی کے ساتھ شیوسینا کے جانے کولے کراراکین  اسمبلی میں ناراضگی پائی جا رہی ہےاوروہ ایسا نہیں چاہتے ہیں۔ ایسے میں یہ بھی بات سامنے آرہی ہے کہ شیوسینا میں اس کولے کرپھوٹ پڑسکتی ہے۔ حالانکہ اراکین اسمبلی کو منانے کی کوشش کی جارہی ہے اور اس کام میں پارٹی کے ہی سینئرلیڈرمنوہرجوشی لگے ہوئے ہیں۔ اطلاعات کے مطابق، ناراض اراکین اسمبلی کسی بھی حال میں ہندتوا کا موضوع نہیں چھوڑنا چاہتے ہیں۔ بتایا جارہا ہے کہ اراکین اسمبلی کومنانے کے لئے منوہرجوشی پوری کوشش کررہے ہیں اوراب وہ ان 17 اراکین اسمبلی کولے کرپارٹی سربراہ ادھوٹھاکرے سے ملنے ماتوشری پہنچ گئے ہیں۔ یہ سبھی اراکین اسمبلی مغربی مہاراشٹراورمراٹھ واڑہ علاقے کے ہیں۔ سبھی اراکین اسمبلی کا کہنا ہےکہ پارٹی ہمیشہ ہندتوا کے موضوع پرچلی ہے اورایسے میں کانگریس - این سی پی کا ساتھ لینا صحیح نہیں ہے۔ ناراض اراکین اسمبلی کسی بھی حال میں ہندتوا کا موضوع نہیں چھوڑنا چاہتے ہیں۔

Loading...