ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بڑی خبر: کورونا کی نئی لہر سے متعلق دہلی حکومت الرٹ، انٹری کے لئے نگیٹیو رپورٹ لازمی کردی

COVID-19 Update: دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ ڈپارٹمنٹ (DDMA) نے مدھیہ پردیش، مہاراشٹر، کیرل، چھتیس گڑھ اور پنجاب سے دہلی آنے والوں کے لئے آر ٹی - پی سی آر کی نگیٹیو رپورٹ (RT-PCR Negative Report) دکھانا لازمی کر دیا ہے۔

  • Share this:
بڑی خبر: کورونا کی نئی لہر سے متعلق دہلی حکومت الرٹ، انٹری کے لئے نگیٹیو رپورٹ لازمی کردی
کورونا کی نئی لہر سے متعلق دہلی حکومت الرٹ، انٹری کے لئے نگیٹیو رپورٹ لازمی کردی

نئی دہلی: ملک کی پانچ ریاستوں میں کورونا (Coronavirous) انفیکشن کے بڑھتے معاملوں کو دیکھتے ہوئے کئی ریاستی حکومتوں نے سخت اقدامات اٹھانے شروع کردیئے ہیں۔ دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ ڈپارٹمنٹ (DDMA) نے بھی مدھیہ پردیش، مہاراشٹر، کیرل، چھتیس گڑھ اور پنجاب سے دہلی آنے والوں کے لئے اب آرٹی - پی سی آر کی نگیٹیو رپورٹ (RT-PCR Negative Report) دکھانا لازمی کر دیا ہے۔ نیا ضابطہ 26 فروری یعنی جمعہ کی نصف شب سے نافذ ہو جائے گا اور 15 مارچ دوپہر 12 بجے تک نافذ رہے گا۔ واضح رہے کہ ان پانچ ریاستوں سے دہلی آنے والے ہر شخص کی رپورٹ 72 گھنٹے سے زیادہ پرانی نہیں ہونی چاہئے۔ یعنی آپ اگر ان ریاستوں سے دہلی میں آرہے ہیں تو ہر حالت میں آپ کی رپورٹ نگیٹیو ہونی چاہئے۔ اگر آپ کے پاس 72 گھنٹے سے پہلے کی نگیٹیو رپورٹ ہے تو بھی آپ کی انٹری دہلی میں نہیں ہوگی یا پھر کوارنٹائن کیا جاسکتا ہے۔ دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ ڈپارٹمنٹ (ڈی ڈی ایم اے) اس سے متعلق احکامات جاری کرنے جارہی ہے۔


ان پانچ ریاستوں کے لوگوں پر نافذ ہوگا ضابطہ


واضح رہے کہ مدھیہ پردیش، مہاراشٹر، کیرل، چھتیس گڑھ اور پنجاب میں کورونا معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ منگل کو جو پورے ملک میں کورونا کے جو اعدادوشمار آئے ہیں، اس میں 86 فیصد کورونا کے معاملے انہیں ریاستوں سے آئے ہیں۔ ان ریاستوں نے بھی کورونا کے بڑھتے معاملے کو دیکھتے ہوئے کئی فیصلے لئے ہیں۔ مہاراشٹر حکومت نے تو کورونا کے بڑھتے معاملے کو لے کر کئی سخت ضوابط نافذ کردیئے ہیں۔ مہاراشٹر میں سات دن کے اندر کورونا پر کنٹرول نہیں کیا گیا تو ریاستی حکومت سخت فیصلے لے سکتی ہے۔


مدھیہ پردیش، مہاراشٹر، کیرل، چھتیس گڑھ اور پنجاب میں کورونا معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ منگل کو جو پورے ملک میں کورونا کے جو اعدادوشمار آئے ہیں، اس میں 86 فیصد کورونا کے معاملے انہیں ریاستوں سے آئے ہیں۔
مدھیہ پردیش، مہاراشٹر، کیرل، چھتیس گڑھ اور پنجاب میں کورونا معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ منگل کو جو پورے ملک میں کورونا کے جو اعدادوشمار آئے ہیں، اس میں 86 فیصد کورونا کے معاملے انہیں ریاستوں سے آئے ہیں۔


نگیٹیو رپورٹ کے بعد ہی ٹکٹ یا بورڈنگ پاس

دہلی حکومت کے ذرائع کے مطابق، ان پانچ ریاستوں کے نوڈل انچارج کو کہا گیا ہے کہ مسافروں کو سفر کرنے سے پہلے نگیٹیو رپورٹ چیک کریں۔ رپورٹ نگیٹیو کے بعد ہی ٹکٹ یا بوڈنگ پاس جاری کریں۔ نیا ضابطہ 26 فروری جمعہ کو نصف شب نافذ ہوگا اور 15 مارچ دوپہر 12 بجے تک نافذ رہے گا۔

کل ملاکر ان پانچ ریاستوں نے دوسری ریاستوں کی بھی تشویش میں اضافہ کردیا ہے۔ وزارت صحت کی تشویش اس کو لے کر بھی بڑھ گئی ہے کہ ان ریاستوں کی وجہ سے دوسری ریاستوں میں کہیں کورونا کے معاملے بڑھ نہ جائیں۔ اس لئے آئندہ کچھ دنوں میں ریلوے اور فلائٹ کے ساتھ ساتھ پبلک ٹرانسپورٹ کو لے کربھی کئی احکامات جاری کرسکتے ہیں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Feb 24, 2021 10:26 AM IST