ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Covid-19 Vaccine: ہندوستان کے پاس ہے کورونا ویکسین کا ذخیرہ ، کروڑوں ڈوز پہلے سے ہی ہیں تیار

سیرم انسٹی ٹویٹ آف انڈیا نے پہلے ہی ویکسین کی ساڑھے سات کروڑ ڈوز تیار کرلی ہے جبکہ امید کی جارہی ہے کہ جنوری کے پہلے ہفتہ میں دس کروڑ ڈوز تیار کر لی جائیں گی ۔

  • Share this:
Covid-19 Vaccine: ہندوستان کے پاس ہے کورونا ویکسین کا ذخیرہ ، کروڑوں ڈوز پہلے سے ہی ہیں تیار
ہندوستان کے پاس ہے کورونا ویکسین کا ذخیرہ ، کروڑوں ڈوز پہلے سے ہی ہیں تیار ۔ تصویر : اے پی ۔

نئے سال کی دستک ہوتے ہی باشندگان وطن کیلئے اچھی خبر ہے ۔ کورونا کی ویکسین کووی شیلڈ کو ایکسپرٹ پینل نے ایمرجنسی استعمال کیلئے منظوری دیدی ہے  اور اب کسی بھی وقت ویکسین لگانے کا کام ملک بھر میں شروع ہوجائے گا ۔ یہ ویکسین آکسفورڈ یونیورسٹی اور ایسٹریجینیکا کی ہے ، جس کو ہندوستان میں سیرم انسٹی ٹیوٹ آف انڈیا نے تیار کیا ہے ۔ امریکہ اور برطانیہ سمیت دنیا کے کئی ممالک میں کورونا کی ویکسین لگانے کا کام پہلے ہی شروع ہوچکا ہے ۔ امید کی جارہی ہے کہ ہمارے ملک میں بھی ٹیکہ کاری کی رفتاری تیزی سے آگے بڑھے گی ۔


سیرم انسٹی ٹویٹ آف انڈیا نے پہلے ہی ویکسین کی ساڑھے سات کروڑ ڈوز تیار کرلی ہے جبکہ امید کی جارہی ہے کہ جنوری کے پہلے ہفتہ میں دس کروڑ ڈوز تیار کر لی جائیں گی ۔ ایس آئی آئی کے ڈائریکٹر آف ریسرچ اینڈ ڈیولپمنٹ امیش شالی گرام نے گزشتہ دنوں ایک ویبینار میں کہا تھا کہ دنیا کے کسی بھی ملک میں کورونا کا اتنا بڑا اسٹاک نہیں ہوگا جتنا ہندوستان کے پاس ہے ۔ اسی ہفتہ ایس آئی آئی کے سربراہ آدر پونے والا نے کہا تھا کہ ان کے یہاں ویکسین کی جتنی بھی ڈوز تیار ہوں گی ، اس میں پچاس فیصد حصہ ہندوستان کا ہوگا جبکہ ویکسین کی باقی ڈوز ڈبلیو ایچ او کو دی جائے گی ۔


آدر پونے والا نے کہا کہ ہم نے ہمیشہ کہا ہے کہ ہم جتنی بھی ڈوز تیار کریں گے ، اس میں ہندوستان کی آدھی شراکت داری ہوگی ۔ اگر ہم ایک مہینے میں چھ سے سات کروڑ ڈوز تیار کرتے ہیں تو پھر وہ ہندوستان اور دوسرے ملکوں کو دی جائیں گی ۔ ہم امید کررہے ہیں کہ پہلے تقریبا پانچ کروڑ ڈوز ہندوستان کو ملیں گی ۔ مارچ تک ہر مہینے ایک کروڑ ڈوز تیار کی جائیں گی ۔ ویکسین بنانے کیلئے تیسری فیکٹری تیار ہورہی ہے ۔


سیرم انسٹی ٹیوٹ آف انڈیا امریکی کمپنی نوواکس کے ساتھ مل کر ایک اور ویکسین تیار کررہی ہے ۔ ہندوستان کو اس سے بھی پچاس فیصدی ڈوز ملیں گی ۔ حیدرآباد کی کمپنی بھارت بایوٹیک کی ویکسین کا تیسرے مرحلہ کا ٹرائل ان دنون چل رہا ہے ۔ امید کی جارہی ہے کہ یہ کمپنی بھی ایک سال میں تقریبا 30 کروڑ ڈوز تیار کرے گی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jan 02, 2021 03:31 PM IST