ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

کورونا وائرس : سماجی دوری سے ہورہے ہیں پریشان ، تو اپنائیں یہ طریقہ اور زندگی کو بنائیں خوشگوار

اس وقت دنیا بھر میں سماجی دوری کی بات کی جارہی ہے ۔ یعنی بھیڑ بھاڑ سے دور رہنا چاہئے تاکہ انفیکشن پر قابو پانے میں آسانی ہو ۔

  • Share this:
کورونا وائرس : سماجی دوری سے ہورہے ہیں پریشان ، تو اپنائیں یہ طریقہ اور زندگی کو بنائیں خوشگوار
کورونا وائرس : سماجی دوری سے ہورہے ہیں پریشان،تو اپنائیں یہ طریقہ ،زندگی کو بنائیں خوشگوار

کورونا وائرس کی وجہ سے اب تک دنیا بھر میں ہزاروں لوگوں کی موت ہوچکی ہے ۔ دنیا بھر کے سبھی ممالک نے کورونا وائرس کو لے کر ہائی الرٹ جاری کردیا ہے ۔ ڈبلیو ایچ او نے اس کو ایک عالمی وبا قرار دیا ہے ۔ بیرون ممالک سے آنے والے لوگوں کو کورنٹائن کیا جارہا ہے تاکہ کورونا وائرس کو پھیلنے سے روکا جاسکے ۔ بار بار ہاتھ دھونے اور صاف صفائی رکھنے کی ہدایت دی جارہی ہے ۔ لوگوں کو اس کے تئیں بیدار کیا جارہا ہے ۔


اس وقت دنیا بھر میں سماجی دوری کی بات کی جارہی ہے ۔ یعنی بھیڑ بھاڑ سے دور رہنا چاہئے تاکہ انفیکشن پر قابو پانے میں آسانی ہو ۔ ان حالات میں گھر میں بیٹھنا اور کورونا وائرس سے وابستہ سبھی طرح کی خبریں جان کر پریشان ہوجانا فطری بات ہے ۔ لیکن یہ حالت کسی کی بھی ذہنی صحت کیلئے اچھی نہیں ہے ۔ ایسے میں گھر میں رہتے ہوئے خود کو ذہنی طور پر صحتمند رکھنے کیلئے آپ کو کچھ نہ کچھ ضرور کرنا چاہئے ۔


اپنوں سے کریں چیٹنگ


انفیکشن کی وجہ سے گھر میں بند ہوجانا اور لوگوں سے ملنا جلنا کم ہوجانے پر تھوڑی پریشانی محسوس ہوسکتی ہے ۔ لوگوں سے دوری بنائے رکھنے کا مطلب یہ نہیں ہے کہ آپ ان سے اپنے رشتے ہی ختم کرلیں ۔ اپنوں سے آپ ویڈیو کال ، فون کال ، ٹیکسٹ میسیج کے ذریعہ جڑے رہ سکتے ہیں ۔ اس میں آپ کو بالکل بھی تنہائی کا احساس نہیں ہوگا ۔ علاوہ ازیں آپ کو ذہنی طور صحت مند رہنے میں بھی مدد ملے گی ۔ ساتھ ہی کسی طرح کی پریشانی کو اپنوں سے شیئر کرکے آپ آرام دہ بھی محسوس کرسکتے ہیں ۔

مصدقہ خبروں پر یقین کریں

اس وقت کورونا وائرس کو لے کر سوشل میڈیا پر بھی بہت سی ایسی خبریں گردش کررہی ہیں ، جن کی کوئی بنیاد نہیں ہے ۔ یہ صرف افواہ ہے ۔ ایسے میں انہیں خبروں پر یقین کریں ، جو مصدقہ ذرائع سے آئی ہوں ۔ حکومت ہند کی وزارت صحت ، عالمی ادارے اور سینٹر فار ڈیزیز کنٹرول جیسے اداروں کی طرف سے آنے والی خبروں پر ہی یقین کریں اور ان کے ذریعہ دی گئی ہدایات پر ہی عمل کریں ۔

پڑوسیوں سے بات چیت کریں

آج کے وقت میں سنگل فیملی ہونے کی وجہ سے بہت سارے کنبے اکیلے رہتے ہیں اور پھر کورونا وائرس کی وجہ سے گھر تک محدود رہ جانے کی وجہ سے تنہائی کا اور بھی زیادہ کا احساس ہوسکتا ہے ۔ اس صورت میں ڈپریشن ، دل سے وابستہ امراض ، کاگنیٹو فنکشن میں کمی جیسی پریشانیاں پیدا ہوسکتی ہیں ۔ ان سے بچنے کیلئے لوگوں سے مطلوبہ دوری کے ساتھ رابطہ بنائے رکھیں ۔ اپنے پڑوسیوں کے لوگوں سے بھی آپ اس سلسلہ میں بات چیت کرسکتے ہیں ۔

ورزش اور یوگا کریں

اس وقت آپ چہل قدمی کیلئے زیادہ دیر تک باہر نہ رہیں بلکہ ورزش و یوگا کریں ، جس کی وجہ سے خود کو ذہنی طور پر صحت مند رکھ سکتے ہیں ۔

ڈسکلمیر : اس تحریر میں دی گئی جانکاریاں اور معلومات عام تصورات پر مبنی ہیں ۔ نیوز 18 اردو ان کی تصدیق نہیں کرتا ہے ۔ ان پر عمل کرنے سے پہلے متعلقہ ایکسپرٹس سے رابطہ کریں۔
First published: Mar 23, 2020 07:35 PM IST