உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Coronavirus Omicron: کورونا کے نئے ویریئنٹ سے متعلق وزیر اعظم مودی فکر مند، بین الاقوامی پروازوں پر عائد ہوسکتی ہے پابندی

    کورونا کے نئے ویریئنٹ سے متعلق وزیر اعظم مودی فکر مند، بین الاقوامی پروازوں پر عائد ہوسکتی ہے پابندی

    کورونا کے نئے ویریئنٹ سے متعلق وزیر اعظم مودی فکر مند، بین الاقوامی پروازوں پر عائد ہوسکتی ہے پابندی

    coronavirus omicron: وزیر اعظم دفتر کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا کہ نریندر مودی نے نئے ویریئنٹ کو دیکھتے ہوئے ’پرو ایکٹیو‘ رہنے کی ضرورت کے بارے میں بتایا۔ پی ایم او کے مطابق، انہوں نے کہا، ’نئے خطرے کو دیکھتے ہوئے لوگوں کو زیادہ محتاط رہنے کی ضرورت ہے اور ماسک لگانے کے ساتھ ہی سوشل ڈیسٹنسنگ پر عمل کرنے جیسے مناسب احتیاط برتنے کی ضرورت ہے‘۔

    • Share this:
      نئی دہلی: کورونا وائرس کے نئے ویریئنٹ اومکران (Coronavirus Omicron) سے متعلق ہندوستان کی تشویش میں اضافہ ہوگیا ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی (PM Modi) نے ہفتہ کو اومکران سے متعلق ایک میٹنگ کی۔ اس میں انہوں نے کہا کہ ہمیں ’پروایکٹیو‘ رہنے کی ضرورت ہے۔ ساتھ ہی ممکنہ خطروں کو دیکھتے ہوئے انہوں نے افسران نے بین الاقوامی سفر کی پابندیوں میں نرمی دینے کے منصوبے کے جائزہ لینے کو کہا۔ وزیر اعظم نے لوگوں سے زیادہ محتاط رہنے، ماسک پہننے اور مناسب دوری سمیت بچاو کے تمام اقدامات پر عمل کرنے کی بھی اپیل کی۔

      وزیر اعظم دفتر کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا کہ نریندر مودی نے نئے ویریئنٹ کو دیکھتے ہوئے ’پرو ایکٹیو‘ رہنے کی ضرورت کے بارے میں بتایا۔ پی ایم او کے مطابق، انہوں نے کہا، ’نئے خطرے کو دیکھتے ہوئے لوگوں کو زیادہ محتاط رہنے کی ضرورت ہے اور ماسک لگانے کے ساتھ ہی سوشل ڈیسٹنسنگ پر عمل کرنے جیسے مناسب احتیاط برتنے کی ضرورت ہے‘۔

      پھر سے عائد ہوسکتی ہے سفری پابندی

      واضح رہے کہ حال کے دنوں میں کورونا کے معاملات کم ہونے کے بعد ہندوستان نے کئی ممالک پر سفری پابندی ہٹا لی تھی، لیکن اب وزیر اعظم مودی نے اس پر جائزہ لینے کو کہا ہے۔ انہوں نے میٹنگ میں کہا کہ جن ممالک سے نئے ویریئنٹ پھیلنے کا خطرہ ہے، انہیں الگ سے نامزدکیا جائے۔ ساتھ ہی انہوں نے خصوصی دھیان دیتے ہوئے سبھی بین الاقوامی آمد کی نگرانی اور قواعدوضوابط کے مطابق مسافروں کی جانچ کی ضرورت پر روشنی ڈالا۔

      جینوم کی ترتیب ضروری

      وزیر اعظم کو ملک میں کورونا کے تازہ حالات کے بارے میں جانکاری دی گئی۔ اس سلسلے میں وزیر اعظم نے احکامات دیئے کہ جینوم کی ترتیب کے نمونے بین الاقوامی مسافروں اور برادری سے ضوابط کے مطابق جمع کئے جائیں۔ ان کی آئی این ایس اے سی او جی (انڈین سارس-کووڈ2 کنسورٹیم آن جینومکس) کے تحت پہلے سے قائم لیبارٹریوں کا نیٹ ورک اور کووڈ-19 منیجمنٹ کے لئے نشان زد ابتدائی انتباہی علامات کے ذریعے جانچ کی جائے۔

      ٹیکہ کاری مہم پر بھی تبادلہ خیال

      میٹنگ کے دوران وزیر اعظم مودی کو ٹیکہ کاری مہم میں رفتار اور ’ہرگھر دستک‘ مہم کے تحت کی جا رہی کوششوں سے واقف کرایا گیا۔ پی ایم او کے مطابق، مودی نے دوسری خوراک کا دائرہ بڑھانے کا حکم دیا اور کہا کہ جن لوگوں کو پہلی خوراک ملی ہے، انہیں دوسری خوراک وقت پر دیا جانا چاہئے۔ ریاستوں کے ذریعہ یقینی کئے جانے کی ضرورت ہے۔ وزیر اعظم مودی کو وقت وقت پر ملک میں ہونے والے سیرو-پازیٹیویٹی اور عوامی طبی ردعمل میں اس کے اثر کے بارے میں بھی جانکاری دی گئی۔

       
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: