ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

انوکھی شادی : دبئی میں تھے دولہا اور دلہن ، میرٹھ سے قاضی نے آن لائن پڑھایا نکاح ، شادی بنی موضوع بحث

گزشتہ ماہ وسیم کے نکاح کی تاریخ طے کی گئی تھی ، لیکن کورونا انفیکشن کی وبا کے بعد لاک ڈاؤن کے سبب ان کے والدین نہ تو دبئی جا سکے اور نہ ہی ان کے فرزند میرٹھ آسکے ۔

  • Share this:
انوکھی شادی : دبئی میں تھے دولہا اور دلہن ، میرٹھ سے قاضی نے آن لائن پڑھایا نکاح ، شادی بنی موضوع بحث
انوکھی شادی : دبئی میں تھے دولہا اور دلہن ، میرٹھ سے قاضی نے آن لائن پڑھایا نکاح ، شادی بنی موضوع بحث

ملک میں لاک ڈاؤن کے دوران جہاں سبھی طرح کی کاروباری ، تعلیمی اور مذہبی سرگرمیاں بند ہیں اور شادی تقریبات بھی ملتوی کی جا رہی ہیں ۔ تاہم کچھ افراد اس دوران بھی نکاح کی رسم بڑی سادگی سے ادا کر رہے ہیں ۔ میرٹھ میں بھی ایک ایسا نکاح کیا گیا ، جس میں دولہا اور دلہن تو بیرونی ملک میں تھے اور نکاح میرٹھ میں پڑھایا گیا ۔ یہی نہیں نکاح میں تحفہ کے طور پر پیش کی گئی رقم کو نکاح پڑھانے والے مولوی نے غریبوں کی امداد کے لئے عطیہ کردیا ۔


میرٹھ کے شاہ پیر گیٹ علاقہ کے رہنے والے ندیم احمد صدیقی کے فرزند وسیم احمد دبئی میں ایک کمپنی میں ملازمت کرتے ہیں ۔ گزشتہ ماہ وسیم کے نکاح کی تاریخ طے کی گئی تھی ، لیکن کورونا انفیکشن کی وبا کے بعد لاک ڈاؤن کے سبب ان کے والدین نہ تو دبئی جا سکے اور نہ ہی ان کے فرزند میرٹھ آسکے ۔ ایسے میں شادی کی تقریبات کو ملتوی کرنا پڑا ۔ تاہم دولہا و دلہن نے طے کیا کہ وہ شادی کی مختلف رسومات کی بجائے سادگی سے نکاح کی رسم ادائیگی کو انجام دیں گے ۔


دولہا و دلہن کے فیصلے سے ان کے والدین بھی خوش ہوگئے اور آن لائن ہی نکاح کی رسم ادا کی گئی ۔ دبئی میں موجود دولہا و دلہن کا نکاح میرٹھ میں شہر نائب قاضی زین الراشدین نے پڑھایا اور نکاح پڑھانے کے عوض میں تحفے کے طور پر ملی پانچ ہزار روپے کی رقم کو غریبوں کی امداد کے لیے عطیہ کر دیا ۔ نوجوان جوڑے نے اس نکاح کے ذریعہ جہاں شادی میں کی جانے والی فضول خرچی کو ختم کرنے کا پیغام دیا ، وہیں نکاح پڑھانے کے عوض میں تحفے کے طور پر حاصل ہونے والی رقم کو غریبوں کیلئے عطیہ کرکے نائب شہر قاضی نے بھی ایک نظیر پیش کی ہے ۔

First published: Apr 20, 2020 08:59 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading