ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

کورونا وائرس : مہاراشٹر میں متاثرین کی تعداد میں بڑا اضافہ ، وزیر صحت کی وارننگ ، کہا : تیسرے اسٹیج کی طرف بڑھ رہے ہیں ہم

مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیش ٹوپے نے کہا کہ اگر لوگ سنتے نہیں ہیں اور غیر ضروری طور پر پبلک ٹرانسپورٹ کا استعمال کرنا جاری رکھتے ہیں تو ہمیں کچھ اور سوچنا ہوگا ۔

  • Share this:
کورونا وائرس : مہاراشٹر میں متاثرین کی تعداد میں بڑا اضافہ ، وزیر صحت کی وارننگ ، کہا : تیسرے اسٹیج کی طرف بڑھ رہے ہیں ہم
کورونا وائرس : مہاراشٹر کے وزیر صحت کی وارننگ ، کہا : تیسرے اسٹیج کی طرف بڑھ رہے ہیں ہم

مہاراشٹر کے وزیر صحت راجیش ٹوپے نے ہفتہ کو کہا کہ ریاست میں کورونا وائرس سے متاثر لوگوں کی تعداد میں بڑا اضافہ ہوا ہے اور انہوں نے لوگوں سے اس وائرس کو پھیلنے سے روکنے کیلئے پبلک ٹرانسپورٹ کا استعمال کرنے سے گریز کرنے کی اپیل کی ہے ۔ صحافیوں سے بات چیت میں ٹوپے نے کہا کہ ریاست میں کورونا وائرس سے متاثر لوگوں کی تعداد 11 نئے معاملات کے ساتھ 63 ہوگئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 11 نئے معاملات میں سے 8 لوگوں نے بیرون ممالک کا دورہ کیا تھا بجکہ تین لوگ متاثر لوگوں کے رابطے میں آئے تھے ۔


وزیر صحت نے بتایا کہ 10 معاملات ممبئی میں سامنے آئے ہیں جبکہ ایک معاملہ پونے میں سامنے آیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ 52 سے بڑھ کر متاثرین کی تعداد کا 63 ہونا ایک بڑا اضافہ ہے ۔ کل مریضوں میں سے 13 سے 14 مریض وہ ہیں جو کورونا مریضوں کے رابطے میں آئے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ باقی سبھی باہر سے آئے معاملات ہیں ۔ وزیر صحت نے کہا کہ باہر سے آئے لوگوں کی وجہ سے یہ زیادہ پھیلا ہے ۔ میں لوگوں سے گھروں سے باہر نہ نکلنے کی اپیل کرتا ہوں ۔ انہیں سماجی دوری بناکر اور صاف صفائی رکھ کر احتیاط برتنی چاہئے ۔


وزیر صحت نے کہا کہ اگر پبلک ٹرانسپورٹ میں بھیڑ کم نہیں ہوئی تو انہیں بند کردیا جائے گا ۔ آئی ڈی کارڈ کی جانچ کرنے کے بعد پبلک ٹرانسپورٹ میں لوگوں کو سفر کرنے کی اجازت دینا بھی ایک متبادل ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ ممبئی میں مضافاتی ٹرین ضروری سرگرمیوں کیلئے ہی چلیں گی ۔ انہوں نے کہا کہ مریضوں کی تعداد میں اضافہ تشویش کی اہم وجہ ہے اور اس سے لڑنے میں لوگوں کے تعاون کی ضرورت ہے ۔


انہوں نے مزید کہا کہ اگر لوگ سنتے نہیں ہیں اور غیر ضروری طور پر پبلک ٹرانسپورٹ کا استعمال کرنا جاری رکھتے ہیں تو ہمیں کچھ اور سوچنا ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ ہم اس متعدی بیماری کے دوسرے مرحلے میں ہیں اور تیسری مرحلے کی جانب بڑھ رہے ہیں ۔
First published: Mar 21, 2020 04:27 PM IST