ہوم » نیوز » مغربی ہندوستان

مہاراشٹر : مسلم اکثریتی شہر مالیگاوں میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ 

ڈاکٹر سعید فارانی نے کہا کہ منصورہ یونانی میڈیکل کالج کو کووڈ 19 مریضوں کو رکھنے اور ان کا علاج کرنے کیلئے مختص کرنے کو ہری جھنڈی دیکھادی گئی ہے ۔

  • Share this:
مہاراشٹر : مسلم اکثریتی شہر مالیگاوں میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ 
مہاراشٹر : مسلم اکثریتی شہر مالیگاوں میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں اضافہ 

پاورلوم کیلئے مشہور ریاست مہاراشٹر کا مسلم اکثریتی شہر مالیگاؤں کورونا کی زد میں ہے ۔ مالیگاوں میں کورونا پازیٹیو مریضوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ درج کیا جارہا ہے ۔ مالیگاوں میونسپل کارپوریشن کے محمکہ صحت کی تفصیلات کے مطابق 36 سے زیادہ شہریوں کو کورونا پازیٹیو پایا گیا ہے ۔ ان میں سے دو افراد کورونا وائرس کی وجہ سے لقمہ اجل بن چکے ہیں ۔ شہر میں بیرون سے آنے والے تقریبا 280 افراد کو ہوم کوارنٹائن کیا گیا ہے ۔ جبکہ 155 سے زیادہ مریضوں کی نگہداشت مالیگاؤں کے سول اسپتال میں کی جارہی ہے ۔


مالیگاوں کی خراب ہوتی صورت حال کو دیکھتے ہوئے سابق مرکزی وزیر برائے مملکت اور ممبر پارلیمنٹ سبھاش بھامرے نے وزیر اعلیٰ مہاراشٹر کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے مالیگاؤں کو ہائی رسک زون میں قرار دینے کا مطالبہ کیا ہے ۔ جبکہ مقامی ایم آئی ایم کے رکن اسمبلی مفتی محمد اسماعیل نے مالیگاؤں کو ہائی رسک زون قرار دینے کی مخالفت کی ہے ۔ مالیگاوں کے معروف معالج ڈاکٹر سعید فارانی نے نیوز 18 اردو سے بات کرتے ہوئے کہاکہ مالیگاؤں میں کورونا وائرس متاثرہ مریضوں سے رشتہ داروں اور روزانہ ملنے جلنے والے افراد میں پھیلا ہے ۔ شہر میں پولیس اور ذمہ داران کی جانب سے گھروں میں رہنے اور فاصلہ بنانے کی اپیل مسلسل کی جارہی ہے ۔


ڈاکٹر سعید فارانی نے کہا کہ منصورہ یونانی میڈیکل کالج کو کووڈ 19 مریضوں کو رکھنے اور ان کا علاج کرنے کیلئے مختص کرنے کو ہری جھنڈی دیکھادی گئی ہے ۔ مالیگاوں میونسپل کارپوریشن کے ڈپٹی میونسپل کمشنر اور سوشل ایمرجنسی سروسز انچارج افسر  نتن کاپڑنیس نے نیوز 18 اردو سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مالیگاؤں کے معروف تعلیمی ادارے مالیگاؤں ہائی اسکول اینڈ جونیٹر کالج ، اے ٹی ٹی اور جے اے ٹی اسکول اینڈ جونیئر کالج ، جیون اسپتال اور دیگر اہم عمارتوں کو کارپوریشن نے کووڈ 19 کئیر سینٹر میں تبدیل کرنے کیلئے حاصل کیا ہے ۔ نتن کاپڑنیس کے مطابق مالیگاوں کے بیشتر علاقوں میں میونسپل کارپوریشن کی ٹیم مریضوں کی شناخت کیلئے گشت کررہی ہے ، لیکن انہیں کئی جگہوں پر عوام کی مخالفت اور عدم تعاون کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔جبکہ شہر کے معروف ڈاکٹر ، سماجی کارکنان اور علما عوام سے سرکاری افسران اور پولیس کے ساتھ تعاون کرنے اور صبر وتحمل کا مظاہرہ کرتے ہوئے گھروں میں رہنے کی اپیل کررہے ہیں ۔


جانکاروں کے مطابق شہر میں کورونا وائرس کے متعلق جھوٹی افواہوں نے شہریوں کا زیادہ نقصان کیا ہے ۔ ایک طبقہ کورونا وائرس کو سوشل میڈیا پر سازش قرار دینے کی کوشش کررہا ہے ، تو کچھ لوگ کورونا وائرس کی وجہ سے ہونے والی اموات پر یقین کرنے کیلئے تیار نہیں ہیں ۔ لوگوں میں عام اس قسم کے رجحانات بیماری پر قابو پانے میں سب سے بڑی رکاوٹ ہیں ۔ جبکہ مالیگاوں شہر کے معروف معالج اور سرجن ڈاکٹر سعید فارانی کا کہنا ہے کہ سوشل میڈیا اور ویڈیو گرافی کے ذریعے کووڈ 19 کے خلاف مہم کے اب مثبت نتائج سامنے آرہے ہیں اور عوام کا سپورٹ بھی دستیاب ہورہا ہے ۔
First published: Apr 15, 2020 06:01 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading