فانی طوفان سے اب تک 16 افراد کی موت ، ایک کروڑ سے زیادہ افراد متاثر ، راحت و بازآبادکاری کام شروع

افسران کے مطابق طوفان سے مرنے والوں کی تعداد 16 تک پہنچ گئی ہے ۔ میوربھنج میں چار ، پوری ، بھونیشور اور جاج پور میں تین تین جبکہ کیونجھر ، نیاگڑھ اور کیندر پاڑا میں ایک ایک شخص کی موت ہوگئی ہے۔

May 05, 2019 08:21 AM IST | Updated on: May 05, 2019 08:21 AM IST
فانی طوفان سے اب تک 16 افراد کی موت ، ایک کروڑ سے زیادہ افراد متاثر ، راحت و بازآبادکاری کام شروع

فانی طوفان سے اب تک 16 افراد کی موت ، ایک کروڑ سے زیادہ افراد متاثر ، راحت و بازآبادکاری کام شروع

اوڈیشہ میں فانی طوفان کی زد میں آکر مرنے والوں کی تعداد 16 تک پہنچ گئی ہے۔ اوڈیشہ کے تقریبا 10 ہزار گاوں اور 52 شہری علاقوں میں راحت اور باز آبادکاری کے کام شروع کردئے گئے ہیں ۔ اس طوفان سے تقریبا ایک کروڑ افراد متاثر ہوئے ہیں ۔

افسران کے مطابق طوفان سے مرنے والوں کی تعداد 16 تک پہنچ گئی ہے ۔ میوربھنج میں چار ، پوری ، بھونیشور اور جاج پور میں تین تین جبکہ کیونجھر ، نیاگڑھ اور کیندر پاڑا میں ایک ایک شخص کی موت ہوگئی ہے۔

خیال رہے کہ فانی طوفان جمعہ کو ساحلی علاقہ سے ٹکرا یاتھا ۔ یہ طوفان سب سے طاقتور مانا جاتا ہے ۔ یہ گزشتہ 43 سالوں میں پہلی مرتبہ اوڈیشہ پہنچے والا پہلا اور گزشتہ 150 سالوں میں آئے تین سب سے طاقتور طوفانوں سے میں ایک طوفان ہے۔ خیال رہے کہ اس سے پہلے 1999 میں سپر سائیکلون آیا تھا ، جس کی وجہ سے دس ہزار افراد کی موت ہوگئی تھی ۔

افسران کے مطابق 240 کلو میٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے چل رہی ہواوں کی وجہ سے جمعہ کو پوری میں تیز بارش اور آندھی آئی تھی ۔ طوفان کمزور پڑنے اور مغربی بنگال پہنچنے سے پہلے اس کی زد میں آئے قصبوں اور گاووں میں بہت سے گھروں کی چھتیں اڑ گئیں اور کئی مکانات پوری طرح سے نیست و نابود ہوگئے۔

Loading...

Loading...