ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Farmers Protest : کسانوں نے ٹھکرائی امت شاہ کی تجویز ، چار بجے کریں گے پریس کانفرنس

کسان لیڈروں کی میٹنگ میں شامل سوراج پارٹی کے لیڈر یوگیندر یادو نے کہا کہ آج صبح پنجاب کی 30 کسان تنظیموں کی میٹنگ ہوئی ۔ امت شاہ جی کے بیان کے بعد کل رات داخلہ سکریٹری کی جانب سے بھیجے گئے خط میں زرعی قوانین پر بات چیت کیلئے سڑکیں خالی کرکے براڑی آنے کی جو شرط لگائی گئی تھی ، کسانوں نے اس کو نامنظور کردیا ہے ۔

  • Share this:
Farmers Protest : کسانوں نے ٹھکرائی امت شاہ کی تجویز ، چار بجے کریں گے پریس کانفرنس
Farmers Protest : کسانوں نے ٹھکرائی امت شاہ کی تجویز ، چار بجے کریں گے پریس کانفرنس

نئے زرعی قوانین کو واپس لینے اور اپنی فصل کیلئے ایم ایس پی کی ضمانت کے مطالبہ کو لے کر آندولن کررہے کسانوں نے مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی تجویز کو خارج کردیا ہے ۔ کسان لیڈر آج شام چار بجے سندھو بارڈر پر ایک پریس کانفرنس کرکے اب اپنی بات رکھیں گے ۔


کسان لیڈروں کی میٹنگ میں شامل سوراج پارٹی کے لیڈر یوگیندر یادو نے کہا کہ آج صبح پنجاب کی 30 کسان تنظیموں کی میٹنگ ہوئی ۔ امت شاہ جی کے بیان کے بعد کل رات داخلہ سکریٹری کی جانب سے بھیجے گئے خط میں زرعی قوانین پر بات چیت کیلئے سڑکیں خالی کرکے براڑی آنے کی جو شرط لگائی گئی تھی ، کسانوں نے اس کو نامنظور کردیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارا مقصد راستہ روک کر عوام کو پریشان کرنا نہیں ہے ، کسان دو مہینے سے یہ آندولن چلا رہے ہیں ، ایسے میں حکوت ایسی شرط لگا کر بھیجے گی تو ہم کیسے جائیں گے ۔


یادو نے بتایا کہ اسی معاملہ میں براڑی میں آج شام چار بجے کسان تنظیموں کے نمائندوں کی پریس کانفرنس ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ 26 تاریخ کو دہلی چلو کی جو کال تھی ، وہ مشترکہ کسان مورچہ کی طرف سے تھی ۔ مشترکہ کسان مورچہ میں ملک کی 450 کسان تنظیمیں شامل ہیں ۔ ان سبھی نے سات اراکین کی ایک کمیٹی بنائی ہے ، ان سات اراکین میں سے ایک میں ہوں ۔


قابل ذکر ہے کہ نئے زرعی قوانین کو واپس لینے اور اپنی فصل کیلئے ایم ایس پی کی ضمانت کے مطالبہ کو لے کر آندولن کررہے کسان بھاری تعداد میں دہلی کو دیگر ریاستوں سے جوڑنے والی سرحد پر ڈٹے ہوئے ہیں ۔ پنجاب سے آئے کسان ایک طرف جہاں دہلی کے سندھو اور ٹکری سرحد پر ڈیرہ ڈالے ہوئے ہیں تو وہیں اترپردیش کی سرحد پر بھی بھارتیہ کسان یونین لیڈر راکیش ٹکیٹ کی قیادت میں ہزاروں کی تعداد میں کسان جمع ہوگئے ہیں ۔ دراصل پنجاب ، ہریانہ ور اترپردیش کے ہزارون کسانوں نے ہفتہ کو دہلی کی طرف کوچ کیا اور دہلی کی مختلف سرحدوں پر ڈیرہ ڈال رکھا ہے اور یہاں وہ آگے کی حکمت عملی بنائیں گے ۔

راجدھانی دہلی کی سرحدوں پر ڈیرہ ڈالے مظاہرہ کررہے کسانوں نے سے مرکزی وزیر امت شاہ نے اپیل کی ہے کہ وہ آندولن ختم کریں اور انتظامیہ کے ذریعہ مختص کئے گئے مقام پر جاکر احتجاج کریں تب حکومت ان کے ساتھ تین دسمبر سے پہلے بھی بات چیت کرسکتی ہے ۔

ادھر پنجاب کے وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ نے ہفتہ کو کسانوں سے اپیل کی کہ وہ مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کی اپیل قبول کریں اور اپنے مظاہرہ کو طے مقام پر لے جائیں تاکہ ان کے ایشو کے جلد سے جلد حل ہونے کا راستہ نکل سکے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Nov 29, 2020 02:25 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading