ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

شمال۔مشرقی دہلی میں زندگی معمول کی طرف لوٹتی آئی نظر، اب تک 34 کی موت

فساد متاثرہ دہلی میں حالات معمول کی طرف لوٹتے دکھائی دے رہے ہیں۔ بابر پور،موج پور، جعفرآبا اور سلیم پور میں آج صبح سڑکوں پر گاڑیاں نظرآئیں۔تاہم دکانیں اور کاروباری مراکز بند ہیں۔بس اور میٹرو خدمات بھی شروع ہوگئی ہیں۔ امن و امان کی برقراری کے لیے سکیورٹی کے سخت بندوبست کیے گئے ہیں۔

  • Share this:

فساد متاثرہ دہلی میں حالات معمول کی طرف لوٹتے دکھائی دے رہے ہیں۔ بابر پور،موج پور، جعفرآبا اور سلیم پور میں آج صبح سڑکوں پر گاڑیاں نظرآئیں۔تاہم دکانیں اور کاروباری مراکز بند ہیں۔بس اور میٹرو خدمات بھی شروع ہوگئی ہیں۔ امن و امان کی برقراری کے لیے سکیورٹی کے سخت بندوبست کیے گئے ہیں۔ امن میں رخنہ ڈالنے والے عناصر پرخاص نگاہ رکھی جارہی ہے ۔ادھر قومی سلامتی مشیر اجیت ڈوبھال امن بحالی کی کوششوں میں مصروف ہیں ۔شمال مشرقی دہلی کی صورتحال پر اجیت ڈوبھال مسلسل نظر رکھے ہوئے ہیں ۔ اس درمیان تشدد میں مرنے والوں کی تعداد چوتیس ہو گئی ہے ۔


راجدھانی دہلی کے مشرقی علاقے (North East Delhi) میں دو دن کے تشدد ((Delhi Violence)) کے بعد اب ماحول بہتر ہو رہا ہے۔ دہلی میں بھڑکے تشدد میںپر قابو پانے کیلئے پولیس نےدیر رات تک فلیگ مارچ کیا۔ کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے بچنے کے لئے چپے۔چپے پر پولیس کی تعیناتی کی گئی ہے۔


بتایا جاتا ہے کہ تشدد میں 56 پولیس اہلکاروں سمیت 200 کے قریب افراد زخمی ہوئے ہیں۔ واقعے کے بعد آئی بی ملازم کی لاش نالے سے برآمد کی گئی۔ قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال (NSA Ajit Doval ) نے بدھ کے روز تشدد سے متاثرعلاقوں کا دورہ کیا۔ دہلی پولیس کے مطابق، تشدد کے معاملے میں اب تک 106 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے اور 18 ایف آئی آر درج کی جاچکی ہیں۔


راجدھانی دہلی میں صورتحال پر قابو پانے کا کام قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال کو دیا گیا ہے۔ ڈوبھال نے مخلوط آبادی والے علاقے میں جاکر مقامی لوگوں سے ملاقات کی۔ انہوں نے کہا جو کچھ ہوا وہ ہوا۔ انشااللہ، جلد ہی امن پیدا ہوگا۔ انہوں نے دہلی پولیس کمشنر امولیا پٹنائک اور نئے مقرر کردہ اسپیشل کمشنر ایس این سریواستو کے ساتھ کئی مرتبہ میٹنگ بھی کی۔



First published: Feb 27, 2020 02:32 PM IST