ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت نے گورنر کو سونپا استعفیٰ، دھن سنگھ راوت ہوسکتے ہیں اتراکھنڈ کے نئے وزیر اعلیٰ

اتراکھنڈ کے وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت نے استعفیٰ دے دیا ہے۔ آج شام 4 بجے کے بعد راج بھون پہنچ کر وزیر اہوئعلیٰ راوت نے اپنا استعفیٰ گورنر کو سونپ دیا۔

  • Share this:
وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت نے گورنر کو سونپا استعفیٰ، دھن سنگھ راوت ہوسکتے ہیں اتراکھنڈ کے نئے وزیر اعلیٰ
وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت نے گورنر کو سونپا استعفیٰ

نئی دہلی: اتراکھنڈ کے وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت نے استعفیٰ دے دیا ہے۔ آج شام 4 بجے کے بعد راج بھون پہنچ کر وزیر اہوئعلیٰ راوت نے اپنا استعفیٰ گورنر کو سونپ دیا۔ اس کے ساتھ ہی گزشتہ کچھ دنوں سے جاری قیادت تبدیلی کا بحران اب ختم ہوتا ہوا نظر آرہا ہے۔ اسمبلی انتخابات سے ایک سال پہلے اچانک پیدا ہوئے اس بحران کے درمیان پہلی بار رکن اسمبلی بننے والے دھن سنگھ راوت ریاست کے اگلے وزیر اعلیٰ ہوسکتے ہیں۔ خبر یہ بھی ہے کہ ان کے ساتھ بی جے پی لیڈر پشکر سنگھ دھامی کو ریاست کے نائب وزیراعلیٰ کی ذمہ داری سونپی جا سکتی ہے۔


حکومت میں جاری بحران کے درمیان آج دوپہر بعد وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت نے ایک پریس کانفرنس کی۔ اس میں انہوں نے ریاست کے گورنر سے ملاقات کے بعد اپنا استعفیٰ سونپنے کی جانکاری دی۔ ساتھ ہی یہ بھی بتایا کہ ریاست کے وزیر اعلیٰ عہدے کی ذمہ داری اب دھن سنگھ راوت کو سونپ دی گئی ہے۔ اس پریس کانفرنس میں وزیراعلیٰ راوت کے علاوہ حکومت کے سینئر وزیر مدن سنگھ کوشک، دھن سنگھ راوت اور بنشی دھر بھگت موجود تھے۔


اس سے پہلے بی جے پی لیڈر دھن سنگھ راوت کو آج دوپہر آناً فاناً میں دہرہ دون بلایا گیا۔ ہیلی کاپٹر بھیج کر انہیں شری نگر سے دہرہ دون بلایا گیا۔ اس کے علاوہ پشکر سنگھ دھامی کو بھی دہرہ دون لایا گیا۔ دہرہ دون پہنچنے کے بعد دھن سنگھ راوت نے وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت سے ملاقات کی۔ ان کے ساتھ حکومت کے سینئر وزیر مدن کوشک بھی تھے۔


واضح رہے کہ حکومت میں جاری بحران کے درمیان آج صبح تک کہا جا رہا تھا کہ موجودہ وزیر اعلیٰ ترویندر سنگھ راوت کو کرسی نہیں چھوڑنی پڑے گی، لیکن پل پل بدلتے سیاسی حالات کے درمیان دوپہر بعد وزیر اعلیٰ راوت کے گورنر سے ملنے کے بعد استعفیٰ دینے کی باتیں سامنے آنے لگیں۔ اس کے ساتھ ہی دھن سنگھ راوت کے وزیر اعلیٰ بننے اور پشکر دھامی کو نائب وزیر اعلیٰ کے عہدے پر بٹھانے کی قیاس آرائیاں بھی سیاسی گلیاروں میں تیرنے لگی تھیں۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Mar 09, 2021 04:30 PM IST