ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

دہلی اناج منڈی آتش زدگی حادثہ : 2 ماہ کے بعد بھی مہلوکین کا ویریفکیشن نہیں ہوسکا مکمل ، معاوضہ کیلئے بھٹک رہے ہیں اہل خانہ

مونو اگروال اور مشرف کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ وہ 5 سے 6 بار دہلی آ چکے ہیں ، لیکن اب تک نہ تو پوسٹ مارٹم کی رپورٹ موصول ہوئی ہے اور نہ ہی معاوضے کی کوئی رقم مل سکی ہے۔

  • Share this:
دہلی اناج منڈی آتش زدگی حادثہ : 2 ماہ کے بعد بھی مہلوکین کا ویریفکیشن نہیں ہوسکا مکمل ، معاوضہ کیلئے بھٹک رہے ہیں اہل خانہ
دہلی اناج منڈی آگ حادثہ : 2 ماہ کے بعد بھی مہلوکین کا ویریفکیشن نہیں ہوسکا مکمل

نئی دہلی : 8 دسمبر 2019 کو دہلی کے اناج منڈی حادثے میں بجنور کے پرویز مشرف علی نے اپنی زندگی ہاردی تھی ، لیکن مشرف علی نے آخری وقت میں جس طرح سے اپنے دوست مونو اگروال سے بات کی تھی ، اس کے بعد اشرف علی اور مونو اگروال کی دوستی نہ صرف ملک بلکہ بیرون ملک بھی مشہور ہوگئی تھی ۔ مشرف علی اور مونو اگروال کی آڈیو کلپ سامنے آنے کے بعد ہر شخص لرز گیا تھا ۔ دہلی سرکار سے لے کر بی جے پی دہلی ریاستی صدر منوج تیواری کے ذریعہ اس وقت اس حادثہ میں اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھنے والوں کو معاوضہ دینے کا وعدہ کیا گیا تھا ، لیکن آج تک یہ وعدہ پورا نہیں ہوا ہے۔ آج بھی مونواگروال مشرف کے اہل خانہ کو ریلیف اور معاوضہ دلانے کے لیے بار بار دہلی کا سفر کررہے ہیں اور سرکاری دفاتر کے چکر لگا رہے ہیں۔


دراصل مشرف علی نے اپنی زندگی کے آخری سات منٹ اپنے قریبی دوست مونو اگروال سے بات کرتے ہوئے گزارے تھے ۔ مونو اگروال اور مشرف کے کنبہ کے افراد معاوضے کی رقم کے لئے این بی سی سی بلڈنگ میں اترپردیش کے ریزیڈنٹ کمشنر سے ملنے پہنچے ۔ تاکہ معاوضہ ملنے کے لئے دستاویز اور کاغذی کارروائی کا کام پورا ہو سکے۔ مونو اگروال اور گاؤں کے پردھان کے علاوہ مشرف علی کے خاندان کے لوگ بھی آئے ہیں اور ان کے ہاتھ میں ایک ای میل کی کاپی ہے۔


گاؤں کے پردھان کا کہنا ہے کہ وہ دراصل کاغذی کارروائی مکمل کررہے ہیں ۔ کاغذ دیکھ کر پتہ چلا کہ اتر پردیش کے چار افراد اناج منڈی کے حادثے میں اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھے تھے، اس میں مشرف علی کے علاوہ مراد آباد کے دو بھائی محمد اکرام اور عمران اور سنت کبیر کے راہل بھی تھے۔ حالانکہ ای میل کی کاپی میں لکھا گیا ہے کہ ان چاروں مہلوکین کی ویریفکیشن کا کام ترجیحی بنیاد پر کیا جائے۔


مونو اگروال اور مشرف کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ وہ 5 سے 6 بار دہلی آ چکے ہیں ، لیکن اب تک نہ تو پوسٹ مارٹم کی رپورٹ موصول ہوئی ہے اور نہ ہی معاوضے کی کوئی رقم مل سکی ہے۔ آخری بار 14 جنوری کو دہلی بی جے پی کے ریاستی صدر منوج تیواری سے ملاقات کرنے کے لئے گئے تھے ، کیونکہ انہوں نے بھی پانچ لاکھ کی مدد دینے کا اعلان کیا تھا ، لیکن نہ تو ملاقات ہو سکی اور نہ ہی ان کے دفتر سے کوئی مدد مل سکی کی ۔ مونو اگروال اور مشرف علی کی فیملی کے لوگ بتاتے ہیں کہ دہلی حکومت نے بھی دس لاکھ روپے کا معاوضہ دینے کا اعلان کیا تھا ، لیکن اب تک اس سلسلے میں کچھ بھی نہیں مل سکا ہے ۔ مدد کا اعلان کرنے والی دہلی حکومت ہو یا پھر بی جے پی کے ریاستی صدر منوج تیواری ہوں کسی نے بھی اپنا وعدہ وفا نہیں کیا ہے ۔

کنبہ کے افراد کا کہنا ہے کہ پوسٹ مارٹم رپورٹ ابھی تک موصول نہیں ہوئی ہے ۔ آج بھی ہم پوسٹ مارٹم رپورٹ لینے گئے تھے ، لیکن ہم سے پھر 12 فروری کو آنے کیلئے کہا گیا ۔ اب تک صرف 27 افراد کی پوسٹ مارٹم رپورٹ آئی ہے ۔ مونو اگروال کا کہنا ہے کہ اس نے اپنے دوست سے جو وعدہ کیا تھا ، وہ اب بھی اسے پورا کررہے ہیں اور جب تک ممکن ہوگا اسے برقرار رکھے گا ۔

قابل غور بات یہ ہے کہ جب مشرف اناج منڈی میں ہونے والے حادثے میں آگ سے مکمل طور پر گھر پڑے تو انہوں نے اپنے گھر کی بجائے اپنے دوست مونو اگروال کو فون کیا تھا ۔ مشرف نے اپنی زندگی کے آخری 7 منٹ میں مونو سے کنبہ کی دیکھ بھال کرنے کیلئے کہا تھا ۔ دہلی اناج منڈی میں  8 دسمبر 2019 کو کو ہوئےالمناک حادثے میں  45 افراد نے اپنی جان گنوا دی تھیں جبکہ 17 افراد زخمی ہوئے تھے ۔ ہلاک ہونے والوں میں سے 43 افراد نے موقع پر ہی دم توڑ دیا تھا ۔

 
First published: Feb 07, 2020 10:07 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading