உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Delhi Free Electricity: مفت بجلی پر بڑا فیصلہ، یکم اکتوبر سے سبھی کو نہیں ملے گی سبسڈی، جانئے پورا معاملہ

    Delhi Free Electricity: مفت بجلی پر بڑا فیصلہ، یکم اکتوبر سے سبھی کو نہیں ملے گی سبسڈی، جانئے پورا معاملہ

    Delhi Free Electricity: مفت بجلی پر بڑا فیصلہ، یکم اکتوبر سے سبھی کو نہیں ملے گی سبسڈی، جانئے پورا معاملہ

    Delhi Free Electricity Scheme: دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ کابینہ نے ایک اہم فیصلہ کیا ہے کہ ہم دہلی میں بجلی پر مفت سبسڈی دیتے ہیں، اب ہم لوگوں کو آپشن دیں گے کہ اگر وہ سبسڈی نہیں لینا چاہتے ہیں تو ان کو سبسڈی نہیں دی جائے گی ۔

    • Share this:
      نئی دہلی : دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال کی صدارت میں آج کابینہ کی میٹنگ ہوئی۔ میٹنگ میں کئی اہم فیصلوں کو منظوری دی گئی۔ جہاں دہلی حکومت نے اپنی اہم 'دہلی اسٹارٹ اپ پالیسی' کو منظوری دی تو وہیں مفت بجلی پر سبسڈی حاصل کرنے والے بجلی صارفین کیلئے بھی اہم فیصلہ کیا گیا ۔ اگر کوئی صارف بجلی پر سبسڈی چھوڑنا چاہتا ہے تو اسے یہ اختیار دیا جائے گا۔

      میٹنگ کے بعد جانکاری دیتے ہوئے دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال نے کہا کہ کابینہ نے ایک اہم فیصلہ کیا ہے کہ ہم دہلی میں بجلی پر مفت سبسڈی دیتے ہیں، اب ہم لوگوں کو آپشن دیں گے کہ اگر وہ سبسڈی نہیں لینا چاہتے ہیں تو ان کو سبسڈی نہیں دی جائے گی ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: پوری تھی تیاری، افسر بھی تھے موجود، پھر شاہین باغ میں اچانک کیوں نہیں چل پایا بلڈوزر،یہ ہے وجہ


      کابینہ کی طرف سے منظور کی گئی دہلی اسٹارٹ اپ پالیسی پر وزیر اعلی کیجریوال نے کہا کہ بچوں کی مدد کی جائے گی۔ بچوں کو کرائے کی جگہ، تنخواہ، پیٹنٹ اور دیگر اخراجات میں مدد کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ انکیوبیشن سینٹرز شروع کیے جائیں گے اور بغیر گارنٹی کے قرضے دئے جائیں گے۔ ایک چیز یہ دیکھی گئی ہے کہ اسٹارٹ اپ کا 90 فیصد وقت منظوری کے کاموں میں چلا جاتا ہوتا ہے۔ دہلی حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ ہم کچھ ایجنسیوں کی خدمات حاصل کریں گے، جو ان کی مدد کریں گی۔

       

      یہ بھی پڑھئے : شاہین باغ کی کن کن گلیوں میں چلے گا ایم سی ڈی کا بلڈور، ایکشن سے پہلے جانئے پوری تفصیل


      وزیر اعلی نے کہا کہ فرض کریں ہم چارٹرڈ اکاؤنٹنٹس کا ایک پینل بنائیں تو وہ ان کی مدد کرے گا، پیسہ دہلی حکومت دے گی۔ اسٹارٹ اپ کرنے والے نوجوانوں کو سبھی مدد مفت میں دی جائے گی۔ دہلی حکومت جو سامان خریدتی ہے، اس میں ہم ان نوجوانوں کیلئے قوانین میں نرمی کریں گے۔ لیکن سامان کے معیار پر سمجھوتہ نہیں کیا جائے گا۔

      نیز اگر کوئی طالب علم کالج کی تعلیم کے دوران کوئی پروڈکٹ بناتا ہے تو اسے 2 سال تک کی چھٹی بھی دی جا سکتی ہے۔ 20 افراد پر مشتمل ٹاسک فورس بنائی جا رہی ہے۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: